نیوزی لینڈ کے خلاف ٹی-20 سیریز اور سری لنکا کے خلاف پہلے 2 ٹیسٹ کے لئے ٹیم انڈیا کا اعلان

ممبئی۔ ممبئی کے بلے باز شريس ایر اور حیدرآباد کے تیز گیند باز محمد سراج کو نیوزی لینڈ کے خلاف یکم نومبر سے شروع ہونے والی تین میچوں کی ٹوئنٹی 20 سیریز کے لئے ہندستانی کرکٹ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

Oct 23, 2017 03:24 PM IST | Updated on: Oct 23, 2017 03:24 PM IST

ممبئی۔ ممبئی کے بلے باز شريس ایر اور حیدرآباد کے تیز گیند باز محمد سراج کو نیوزی لینڈ کے خلاف یکم نومبر سے شروع ہونے والی تین میچوں کی ٹوئنٹی 20 سیریز کے لئے ہندستانی کرکٹ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ تیز گیند باز اشیش نہرا کو دہلی کے فیروز شاہ کوٹلہ میدان میں کھیلے جانے والے پہلے ٹوئنٹی 20 میچ کیلئے ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جو 38 سالہ دہلی کے کھلاڑی کا شاید آخری بین الاقوامی میچ ہوگا۔ کرکٹ کنٹرول بورڈ آف انڈیا (بی سی سی آئی) نے نہرا کو اپنے گھر یلو میدان سے وداع ہونے کا موقع دیا ہے۔ ممبئی میں واقع بی سی سی آئی کے ہیڈ کوارٹر میں پیر کو ایم ایس کے پرساد کی سربراہی میں سلیکٹرز کے میٹنگ کے دوران ہندستانی ٹیم کا انتخاب کیا گیا ہے۔ پرساد نے انتخاب کے بعد کہا ’’ایر نے اول درجہ کے علاوہ یک روزہ اور ٹوئنٹی 20 سمیت تینوں ہی فارمیٹس میں شاندار مظاہرہ کیا ہے اور ان کے کھیل میں تسلسل بھی دکھائی دیتاہے۔ اگر ہم کسی کھلاڑی کا انتخاب کرتے ہیں، تو وہ اسے طویل عرصہ تک موقع دیتے ہیں یہی بات سراج کے ساتھ بھی لاگو ہوتی ہے۔

گزشتہ چند ماہ میں ایر نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ وہ جنوبی افریقہ اے اور افغانستان اے کے ساتھ انڈیا اے کے درمیان سہ رخی سیریز میں تیسرے بہترین اسکورر بھی رہے تھے اور پانچ میچوں میں 213 رن بنائے تھے۔ انہوں نے اس سیریز کے فائنل میں ناٹ آؤٹ 140 بناکر ٹیم کوخطاب دلانے میں بھی ایک اہم کردار ادا کیا تھا۔ حال ہی میں نیوزی لینڈ اے بمقابلہ انڈیا اے سیریز میں بھی ایر نے چار اننگز میں تین نصف سنچریاں اور ایک سنچری بنا ئی تھی۔ دوسری جانب 23 سالہ سراج نے17۔2016 کے گھریلو سیشن میں لاجواب کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور رنجی ٹرافی میں تیسرے بہترین وکٹ لینے والے گیندباز رہے۔ سراج کی زبردست بولنگ اور 41 وکٹوں کی بدولت حیدرآباد رنجی ٹرافی ناک آؤٹ کے لئے کوالیفائی کرسکی ۔ انہیں اپنی لگاتار شاندار کارکردگی کی وجہ سےآئی پی ایل 2017 میں کھیلنے کا موقع ملا اور سنرائزرس حیدرآباد نے انہیں 2.6 کروڑ رو پے خرچ کرکے اپنی ٹیم میں شامل کیا ہے۔ اس گیندباز نے اس سال آئی پی ایل کے پہلے چھ میچوں میں 10 وکٹ حاصل کئے اور گجرات لائنس کے خلاف چار وکٹ بھی لئے ۔

نیوزی لینڈ کے خلاف ٹی-20 سیریز اور سری لنکا کے خلاف پہلے 2 ٹیسٹ کے لئے ٹیم انڈیا کا اعلان

ممبئی میں واقع بی سی سی آئی کے ہیڈ کوارٹر میں پیر کو ایم ایس کے پرساد کی سربراہی میں سلیکٹرز کے میٹنگ کے دوران ہندستانی ٹیم کا انتخاب کیا گیا ہے۔

ایر اور سراج ہندستانی ٹی ۔ 20 میں شامل کئے جانے والے دو نئے چہرے ہیں حالانکہ نہرا کے انتخاب کو لے کر سیلیکٹرز نے اس بات سے انکار کیا کہ تجربہ کار تیز گیند باز کو میدان سے وداعی کا موقع دینے کے لئے پہلے میچ کے لئے ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ پرساد نے کہا کہ انہیں آخری الیون میں شامل کرنے کا فیصلہ ٹیم انتظامیہ کا ہوگا۔ نہرا نے اس ماہ کے آغاز میں ہی تینوں فارمیٹس سے سے ریٹائرمنٹ لینے کا اعلان کردیا تھا اور اشارہ دیا تھا کہ کوٹلہ گراؤنڈ پر نیوزی لینڈ کے خلاف ان کے کیرئیر کا آخری میچ ہوگا۔ نہرا کو آسٹریلیا کے خلاف ٹوئنٹی 20 انٹرنیشنل سیریز کے لئے ٹیم میں شامل کیا گیا تھا لیکن انہیں میچ کھیلنے کا موقع نہیں مل سکا۔ پرساد نے کہا ’’ہم یہ نہیں کہہ سکتے کہ نہرا کوٹلہ میں کھیل پائیں گے کیونکہ یہ پوری طرح ٹیم انتظامیہ پر منحصر ہوگا کہ انہیں آخری الیون میں جگہ دی جائے یا نہیں۔ ٹیم کے پالیسی ساز ہی فیصلہ کریں گے لیکن ہماری جانب سے کچھ بھی مقرر نہیں ہے یہ اسی دن طے کیا جائے گا۔

چیف سلیکٹر نے کہا ہم نے نہرا اور ٹیم انتظامیہ کو اس بارے میں مطلع کردیا ہے کہ وہ صرف نیوزی لینڈ سیریز تک کے لئے ہی نہرا پر غور کررہے ہیں۔اگر آپ دیکھا جائے کہ جس طرح سے ہم نے ہندوستان اے ٹیم کے کھلاڑیوں کا انتخاب کیا ہے، ہم انہیں گیند بازوں کو ایک ڈیڑھ برس سے ہندوستان اے دوروں کےلئے موقع دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کھلاڑیوں نے جنوبی افریقہ دورے اور نیوزی لینڈ کے خلاف گھریلو سیریز میں بھی بہترین کھیل کا مظاہرہ کیا ہے۔ یہ پیغام ہم نے سبھی کو دے دیا ہے کہ ہم ان کھلاڑیوں کی کارکردگی سے بہت خوش ہیں اور سینئر کھلاڑیوں کو سمجھ لینا چاہیے کہ نئے کھلاڑی تیار ہورہے ہیں۔

سلیکٹروں نےسری لنکا کے خلاف ٹسٹ سیریز کے لئے بھی ٹیم کا انتخاب کیا ہے جس میں وراٹ کوہلی کو کپتانی کی ذمہ داری دی گئی ہے جبکہ پہلے سمجھا جارہا تھا کہ لگاتار کھیل رہے وراٹ کو سری لنکا کے خلاف سیریز کے آخری ٹیسٹ اور محدود اووروں کی سیریز میں آرام دیا گیا ہے تاکہ وہ جنوبی افریقی دورے تک فٹ رہ سکیں۔

ٹسٹ ٹیم میں ابھینو مکند کی جگہ مرلی وجے کو موقع دیا گیا ہے جو، اب فٹ ہوگئے ہیں۔ وجے ہاتھ میں چوٹ کے سبب سری لنکا کے خلاف آخری ٹسٹ سیریز میں شامل نہیں ہوسکے تھے۔ ساتھ ہی آف اسپنر روی چندر اشون اور لیفٹ آرم اسپنر رویندر جڈیجہ بھی واپسی کررہے ہیں جبکہ تیسرے اسپن کے ماہر کے طور پر کلدیپ یادو کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

تجربہ کار گیند باز امیش یادو، محمد شمی اور ایشانت شرما کی بھی ٹیم میں واپسی ہورہی ہے جبکہ ٹیسٹ کے ماہر چتیشور پجارا اور وکٹ کیپر ردھیمان ساہا کو بھی سری لنکا کے خلاف ٹسٹ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ سلیکٹروں نے ساتھ ہی ٹسٹ سیریز سے قبل کولکاتا میں 11 اور 12 نومبر کو سری لنکا کے خلاف دو روزہ پریکٹس میچ کے لئے بورڈ ہریزیڈنٹ الیون کی ٹیم کا بھی اعلان کیا۔ وکٹ کیپر بلے باز نمن اوجھا کو بورڈ الیون ٹیم کا کپتان بنایا گیا ہے ۔ اس ٹیم میں ان کھلاڑیوں کو اتارا گیا ہے جن کی ٹیمیں رنجی ٹرافی میں نہیں کھیلیں گی۔ ٹیم میں سنجو سیمسن، جلج سکسینہ اور مدھیہ پردیش کے اویس خان کو بھی موقع دیا گیا ہے۔

ٹیم اس طرح ہے۔

ہندوستان بمقابلہ نیوزی لینڈ ٹونٹی۔ 20 ٹیم:۔ وراٹ کوہلی (کپتان) شکھر دھون، روہت شرما، لوکیش راہل، منیش پانڈے، شیریس ایر، دنیش کارتک، مہندر سنگھ دھونی، ہاردک پانڈیا، اکشر پٹیل، یجویندر چہل، کلدیپ یادو، بھونیشور کمار، جسپریت بمراہ، محمد سراج، آشیش نہرا (پہلے ٹونٹی۔ 20کے لئے)۔

ہندوستان بمقابلہ سری لنکا ٹسٹ ٹیم (دو میچ):۔ وراٹ کوہلی (کپتان)، مرلی وجے، لوکیش راہل، شکھر دھون، چتیشور پجارا، اجنکیا رہانے، روہت شرما، ردھیمان ساہا، روی چندرن اشون، کلدیپ یادو، ہاردک پانڈیا، محمد شمی، امیش یادو، ایشانت شرما، بھونیشور کمار۔

سری لنکا بمقابلہ بورڈ پریزیڈنٹ الیون:۔ نمن اوجھا (کپتان و وکٹ کیپر)، سنجو سیمسن، جیون جوت سنگھ، بی سندیپ، تنمے اگروال، ابھیشیک گپتا، روہن پریم، آکاش بھنڈاری، جلج سکسینہ، سی وی ملند، سندیپ واریئر، روی کرن۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز