عشرت جہاں انکاونٹر معاملہ کے ملزم گجرات کے ڈی جی پی پانڈے کی سروس میں تین ماہ کی توسیع

Jan 31, 2017 07:16 PM IST | Updated on: Jan 31, 2017 07:16 PM IST

گاندھی نگر۔  گجرات کے انچارج ڈی جی پی پی پی پانڈے کی سروس کی مدت میں آج ان کے مقررہ مدت کار کے آخری دن تین ماہ کی توسیع کردی گئی۔ عشرت جہاں فرضی انکاونٹر معاملے کے ملزم رہے  پانڈے 1980بیچ کے آئی پی ایس افسر ہیں اور وہ آج ہی ریٹائر ہونے والے تھے۔ مرکزی حکومت کی کابینہ کمیٹی نے ریاستی حکومت کی طرف سے انہیں تین ماہ کی توسیع دینے کی سفارش کو منظور کرلیا۔ اس سلسلے میں نوٹیفیکیشن آج ہی جاری کی گئی۔ انہیں انسداد بدعنوانی بیورو کے ڈائریکٹر کے ساتھ ہی انچارج ڈی جی پی کے عہدہ پر برقرار رکھا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی ریاست میں نئے ڈی جی پی کے سلسلے میں قیاس آرائیاں ختم ہوگئی ہیں۔

خیال رہے کہ ریاست کی سینئر آئی پی ایس افسر گیتاجوہری نے کل وزیر اعلی سے ملاقات کی تھی اور اس طرح کی قیاس آرائیاں تھیں کہ انہیں پی پی پانڈے کے ریٹائرمنٹ کی صورت میں ڈی جی پی کا عہدہ سونپا جاسکتا ہے۔  پانڈے عشرت جہاں انکاونٹر معاملے میں جولائی 2013 میں گرفتاری کے بعد انیس ماہ جیل میں بھی رہے تھے اور فروری 2015 میں ضمانت پر رہائی کے بعد انہیں پروموشن دے کر انچارج ڈی جی پی بنا دیا گیا تھا ۔ اسے سابق پولیس افسر جولیو ریبرو نے عدالت میں چیلنج کیا تھا لیکن عدالت نے اس پر روک لگانے سے انکار کردیا تھا ۔  پانڈے نے عشرت جہاں انکاونٹر معاملے میں الزامات سے بری کرنے کے لئے سی بی آئی کی خصوصی عدالت میں عرضی بھی دے رکھی ہے۔

عشرت جہاں انکاونٹر معاملہ کے ملزم گجرات کے ڈی جی پی پانڈے کی سروس میں تین ماہ کی توسیع

پی پی پانڈے۔ تصویر انڈین ایکسپریس

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز