ادھو ٹھاکرے نے الیکشن کمیشن سے کہا، وزیر اعظم کی ریلی پر لگائے پابندی!۔

May 22, 2017 09:54 AM IST | Updated on: May 22, 2017 09:54 AM IST

ممبئی۔ شیو سینا سربراہ ادھو ٹھاکرے نے الیکشن کمیشن سے مختلف سیاسی پارٹیوں کو ایک ہی موقع یقینی بنانے کے لئے وزیر اعظم اور وزرائے اعلی کو الیکشن ریلی کرنے پر پابندی لگانے کی درخواست کی۔ پنویل میونسپل انتخابات کی تیاری کو لے کر منعقد پارٹی کی ایک ریلی میں ٹھاکرے نے کہا، 'انتخابی ریلیوں میں وزیر اعظم اور وزیر اعلی تمام طرح کے اعلانات کرتے ہیں۔ جب حکمران پارٹی وعدے کرتی ہے تب یہ دیگر جماعتوں کے رہنماؤں کے ذریعہ کرائی گئی یقین دہانی کے مقابلے میں لوگوں کے ذہنوں پر کہیں زیادہ اثر ڈالتی ہے۔

ٹھاکرے نے حکمراں جماعتوں کے عہدیداروں پر بعد میں انتخابی وعدوں کو پورا نہ کرنے کا الزام لگایا۔ انہوں نے کہا کہ کلیان-ڈونبولی میونسپل کے لئے مہاراشٹر کے وزیر اعلی دیویندر فڑنويس نے 6500 کروڑ روپے اور وزیر اعظم نریندر مودی نے بہار کے لئے 1.25 لاکھ کروڑ روپے کے پیکیج کا اعلان کیا تھا، لیکن انتخابات کے بعد ایک بھی روپیہ نہیں دیا گیا۔ ٹھاکرے نے کہا کہ وزیر اعظم کو اپنی پارٹی کو مضبوط کرنے کی جگہ ملک کو مضبوط بنانے کے بارے میں سوچنا چاہئے۔

ادھو ٹھاکرے نے الیکشن کمیشن سے کہا، وزیر اعظم کی ریلی پر لگائے پابندی!۔

ادھو ٹھاکرے: فائل فوٹو

انہوں نے کہا کہ اسی طرح وزیر اعلی کو ہر چوک-چوراہوں پر جاکر انتخابی ریلی کرنے کی بجائے کسانوں کی حیثیت اور صوبے کے قانون و انتظام کو بہتر بنانے کے بارے میں غور کرنا چاہئے۔ ای وی ایم کو ہیک کرنے کے لئے پارٹیوں کو چیلنج دیئے جانے کو لے کر الیکشن کمیشن کو آڑے ہاتھ لیتے ہوئے ٹھاکرے نے کہا کہ اگر پارٹیاں ای وی ایم ہیک کرنے کے قابل ہوتیں تو وہ انتخابی مہم نہیں کرتیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز