مالیگاؤں شہر میں بغیر کسی سرکاری مدد کے ہوگا اُردو کتاب میلے کا انعقاد

Oct 13, 2017 05:33 PM IST | Updated on: Oct 13, 2017 05:33 PM IST

 مالیگاؤں۔ اگر دیکھا جائے تو اردو زبان اس وقت اپنے سب سے نازک دور سے گزر رہی ہے ۔ اس کی سب سے بڑی وجہ اس کا عام بول چال کی زبان ہوتے ہوئے بھی اردو داں علاقوں کی نو جوان نسل سے  مسلسل دوری بنتے جانا ہے۔ 21 ویں صدی نے نئی نسل کے ہاتھوں سے کہانیوں، قصوں اوراسلامی واقعات کی کتابیں چھین کراسکرین ٹچ موبائیل تھما دیے ہیں۔ ایسے  نازک ماحول میں نئی نسل کا رشتہ اچھی کتابوں سے جوڑنے کے لئے اُردو میڈیا سینٹر مالیگاؤں کی جانب سے اُردو کتاب میلے کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔

مقامی سطح پر منعقد کئے جانے والے اس میلے میں مرکزی یا ریاستی حکومت یا پھر کارپوریشن کی جانب سے کسی بھی طرح کی مدد یا تعاون نہ لیتے ہوئے اس کتاب میلے کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ شہر کے اُردو اسکولوں کے ہیڈ ماسٹران کی میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ مالیگاؤں شہر کی سبھی ہائی اسکول اور جونیئر کالج اس اُردو کتاب میلے کو کامیاب بنانے کی کوشش کریں گے۔ مالیگاؤں شہر کے کتب فروش اور پبلیشر اس میلے میں اپنے اسٹال سجائیں گے۔ یہ میلہ 10؍ نومبر تا 14؍ نومبر کے درمیان اے ٹی ٹی ہائی اسکول گراؤںڈ مالیگاؤں میں منعقد ہوگا۔

مالیگاؤں شہر میں بغیر کسی سرکاری مدد کے ہوگا اُردو کتاب میلے کا انعقاد

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز