امریکہ میں اب باحجاب خاتون کو بینک سے نکالا گیا باہر، کہا گیا : کپڑے نہیں اتارے تو ...۔

May 14, 2017 05:52 PM IST | Updated on: May 14, 2017 05:52 PM IST

واشنگٹن : امریکہ میں ایک مسلمان خاتون کو حجاب پہننے کی وجہ سے بینک سے باہر نکال دیا گیا اور بینک ملازمین نے اسے دھمکی دی کہ اگر اس نے اپنے سر پر پہنا کپڑا نہیں اتارا تو پولیس کو بلایا جائے گا۔یہ واقعہ واشنگٹن کی ساونڈ کریڈٹ یونین برانچ میں پیش آیا۔ گزشتہ جمعہ کو جمیلہ محمود کار کی ادائیگی کرنے کے لئے بینک پہنچی تھیں، کریڈٹ یونین کی رکن جمیلہ نے اپنے ساتھ ہوئے واقعہ کے ایک حصے کو اپنے موبائل فون سے ریکارڈ کیا اور دعوی کیا کہ یہ تعصب کو ظاہر کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وہ سویٹر پہنے ہوئی تھیں اور ان کے سر پر حجاب تھا ،کیونکہ اس دن جمعہ تھا۔ بینک میں ایک شخص نے ان سے حجاب اتارنے کیلئے کہا۔جمیلہ نے کہا کہ انتظار کرنے کے وقت انہوں نے سائن بورڈ کے ساتھ ان دو مردوں کی ویڈیو بھی بنائی ،جنہوں نے ٹوپیاں پہن رکھیں تھیں۔ انہوں نے کہا کہ '' ایک آدمی کو ہیٹ کے ساتھ خدمت مہیا کیوں کرائی جا رہی ہے اور مجھ سے کہا جا رہا ہے کہ میں اپنا حجاب اتار دوں۔

امریکہ میں اب باحجاب خاتون کو بینک سے نکالا گیا باہر، کہا گیا : کپڑے نہیں اتارے تو ...۔

جمیلہ نے بینک کے لوگوں سے اس بارے میں بات کی، لیکن ان سے کہا گیا کہ وہ اپنا حجاب اتاریں ۔ بینک سے مبینہ طور پر باہر نکالے جانے پر جمیلہ روکنے لگیں۔ انہوں نے ویڈیو فیس بک پر شیئر کیا ہے۔

خیال رہے کہ قبل ازیں 10 مئی کو امریکہ میں ایک اسکول کی آٹھ سالہ ایک لڑکی کے سر سے مبینہ طور پر حجاب کھینچنے کے الزام میں ٹیچر کو معطل کر دیا گیا تھا۔ 'نیو یارک پوسٹ کی خبر کے مطابق لڑکی کلاس میں زیادتی کر رہی تھی اور استاد کی اجازت کے بغیر اس کی کرسی پر بیٹھی ہوئی تھی۔ استاد نے اسے وہاں سے ہٹنے کیلئے کہا اور جب اس نے ان کی بات نہیں مانی ، تو اس نے اس کا حجاب نکالنے کی دھمکی دی۔ پولیس کے مطابق حجاب نکالتے اس نے کہا کہ میں اسے ختم کررہا ہوں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز