آج اور کل سرکاری بینکوں کی ہڑتال تنخواہ آنے میں ہو سکتی ہے تاخیر

May 30, 2018 08:33 AM IST
1 of 6
  • سرکاری بینکوں کے ہزاروں ملازمین اور افسران نے 30اور 31 مئی کو ملک بھر میں ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔اس سے ملک بھر میں بینکنگ سروسز بری طرح متاثر ہو سکتی ہیں۔بزنس اور انڈسٹری پر بھی اس کا برا اثر پڑنے کا اندیشہ ہے۔،لک کے سب سے بڑے بینک ایس بی آئی نے قبول کیا ہے کہ ہڑتال کا اثر بینکنگ خدمات پر ہوگا۔بینک یونینوں نے ہڑتال کا اعلان تنخواہ میں دو فیصدی کے اضافہ کی تجویز کی مخالفت میں کیا ہے۔

    سرکاری بینکوں کے ہزاروں ملازمین اور افسران نے 30اور 31 مئی کو ملک بھر میں ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔اس سے ملک بھر میں بینکنگ سروسز بری طرح متاثر ہو سکتی ہیں۔بزنس اور انڈسٹری پر بھی اس کا برا اثر پڑنے کا اندیشہ ہے۔،لک کے سب سے بڑے بینک ایس بی آئی نے قبول کیا ہے کہ ہڑتال کا اثر بینکنگ خدمات پر ہوگا۔بینک یونینوں نے ہڑتال کا اعلان تنخواہ میں دو فیصدی کے اضافہ کی تجویز کی مخالفت میں کیا ہے۔

  • بینک یونینوں کے مطابق ،انڈین بینک ایسو سی ایشن (آئی بی اے) نے ان کی تنخواہ میں محض 2 فیصدی اضافے کی تجویز رکھی ہے۔جسے 5 مئی کو ہوئی آئی بی اے کی میٹنگ میں لایا گیا تھا۔اس میں 31 مارچ 2017 تک ویج بلکاسٹ میں2 فیصد کے اضافے کی فراہمی ہے لیکنبینک یونین نے اس تجویز کی مکالفت کی ہے۔

    بینک یونینوں کے مطابق ،انڈین بینک ایسو سی ایشن (آئی بی اے) نے ان کی تنخواہ میں محض 2 فیصدی اضافے کی تجویز رکھی ہے۔جسے 5 مئی کو ہوئی آئی بی اے کی میٹنگ میں لایا گیا تھا۔اس میں 31 مارچ 2017 تک ویج بلکاسٹ میں2 فیصد کے اضافے کی فراہمی ہے لیکنبینک یونین نے اس تجویز کی مکالفت کی ہے۔

  • اس تجویز کی مکالفت کرتے ہوئے 'یونائٹڈ فارم آف بینک یونین 'کے کوآرڈینیٹردیوی داس تلجا پرکر نے کہا کہ بینکوں کو جو نقصان ہو رہا ہے ،اس کی وجہ این پی اے یعنی بیڈ لون اس نقصان کیلئے بینک ملازمین ذمہ دار نہیں ہیں۔

    اس تجویز کی مکالفت کرتے ہوئے 'یونائٹڈ فارم آف بینک یونین 'کے کوآرڈینیٹردیوی داس تلجا پرکر نے کہا کہ بینکوں کو جو نقصان ہو رہا ہے ،اس کی وجہ این پی اے یعنی بیڈ لون اس نقصان کیلئے بینک ملازمین ذمہ دار نہیں ہیں۔

  • انہوں نے کہا کہ گزشتہ دو۔تین سال سے بینک ملازمین نے جن ۔دھن ،نوٹ بندی ،منی اسکیم اور اٹ لپینشن اسکیم سمیت دیگر اسکیموں کو آسانی سے چلانے میں ایک بڑا کردار ادا کیا

    انہوں نے کہا کہ گزشتہ دو۔تین سال سے بینک ملازمین نے جن ۔دھن ،نوٹ بندی ،منی اسکیم اور اٹ لپینشن اسکیم سمیت دیگر اسکیموں کو آسانی سے چلانے میں ایک بڑا کردار ادا کیا

  • غور طلب ہے کہ گزشتہ تنخواہ فراہمی میں آئی بی اے نے 15 فیصدی کی تنخواہ اضافے کی تجویز دی تھی۔ای نومبر 1،2012 31 اکتوبر ،2017 کے درمیان کی مدت کے لئے تھا۔

    غور طلب ہے کہ گزشتہ تنخواہ فراہمی میں آئی بی اے نے 15 فیصدی کی تنخواہ اضافے کی تجویز دی تھی۔ای نومبر 1،2012 31 اکتوبر ،2017 کے درمیان کی مدت کے لئے تھا۔

  • یونائیٹڈ فارم آف بینک یونین میں بینک ملازمین کی نو یانینیں ۔آل انڈیا بینک آفیسرس کنفیڈریشن (اے آئی بی او سی) آل انڈیا بینک امپلائز ایسوسی ایشن (اے آئی بی ای اے ) اور آرگنائزیزیشن آف  بینک ورکرس (این او بی ڈبلیو ) شامل ہیں ۔

    یونائیٹڈ فارم آف بینک یونین میں بینک ملازمین کی نو یانینیں ۔آل انڈیا بینک آفیسرس کنفیڈریشن (اے آئی بی او سی) آل انڈیا بینک امپلائز ایسوسی ایشن (اے آئی بی ای اے ) اور آرگنائزیزیشن آف بینک ورکرس (این او بی ڈبلیو ) شامل ہیں ۔

  • بینک یونینوں کے مطابق ،انڈین بینک ایسو سی ایشن (آئی بی اے) نے ان کی تنخواہ میں محض 2 فیصدی اضافے کی تجویز رکھی ہے۔جسے 5 مئی کو ہوئی آئی بی اے کی میٹنگ میں لایا گیا تھا۔اس میں 31 مارچ 2017 تک ویج بلکاسٹ میں2 فیصد کے اضافے کی فراہمی ہے لیکنبینک یونین نے اس تجویز کی مکالفت کی ہے۔
  • اس تجویز کی مکالفت کرتے ہوئے 'یونائٹڈ فارم آف بینک یونین 'کے کوآرڈینیٹردیوی داس تلجا پرکر نے کہا کہ بینکوں کو جو نقصان ہو رہا ہے ،اس کی وجہ این پی اے یعنی بیڈ لون اس نقصان کیلئے بینک ملازمین ذمہ دار نہیں ہیں۔
  • انہوں نے کہا کہ گزشتہ دو۔تین سال سے بینک ملازمین نے جن ۔دھن ،نوٹ بندی ،منی اسکیم اور اٹ لپینشن اسکیم سمیت دیگر اسکیموں کو آسانی سے چلانے میں ایک بڑا کردار ادا کیا
  • غور طلب ہے کہ گزشتہ تنخواہ فراہمی میں آئی بی اے نے 15 فیصدی کی تنخواہ اضافے کی تجویز دی تھی۔ای نومبر 1،2012 31 اکتوبر ،2017 کے درمیان کی مدت کے لئے تھا۔
  • یونائیٹڈ فارم آف بینک یونین میں بینک ملازمین کی نو یانینیں ۔آل انڈیا بینک آفیسرس کنفیڈریشن (اے آئی بی او سی) آل انڈیا بینک امپلائز ایسوسی ایشن (اے آئی بی ای اے ) اور آرگنائزیزیشن آف  بینک ورکرس (این او بی ڈبلیو ) شامل ہیں ۔

تازہ ترین تصاویر