ممبرا میں امید فاؤنڈیشن کا انوکھا قدم، غریبوں کے لئے مفت کپڑوں کے اسٹال کا اہتمام

May 30, 2017 11:48 AM IST
1 of 10
  • کہتے ہیں کہ زکوۃ ، صدقات و امداد اس طرح سے کرنی چاہئے کہ ایک ہاتھ سے دیں تو دوسرے ہاتھ کو خبر نہ ہو ۔  کیوں کہ بہت سے خوددار قسم کے ایسے لوگ بھی معاشرہ میں موجود ہیں جو انتہائی کسمپرسی کی زندگی گزارنا تو پسند کرتے ہیں لیکن کسی سے مدد لینا یا کسی کے آگے ہاتھ پھیلانا انہیں قطعاً گوارہ نہیں۔ اسی کو  مد نظر رکھ کر ممبرا میں معروف سماجی تنظیم ’ امید فاؤنڈیشن ‘ کی جانب سے  پرانے کپڑوں، کھلونوں اور دیگر اشیا کو ایک ہال میں اسٹال نما سجا دیا گیا ہے۔ جہاں سے ضرورت مند حضرات اپنی پسند اور ضرورت کی چیزیں تلاش کر کے لے جا رہے ہیں۔ دیکھیں تصویریں۔

    کہتے ہیں کہ زکوۃ ، صدقات و امداد اس طرح سے کرنی چاہئے کہ ایک ہاتھ سے دیں تو دوسرے ہاتھ کو خبر نہ ہو ۔ کیوں کہ بہت سے خوددار قسم کے ایسے لوگ بھی معاشرہ میں موجود ہیں جو انتہائی کسمپرسی کی زندگی گزارنا تو پسند کرتے ہیں لیکن کسی سے مدد لینا یا کسی کے آگے ہاتھ پھیلانا انہیں قطعاً گوارہ نہیں۔ اسی کو مد نظر رکھ کر ممبرا میں معروف سماجی تنظیم ’ امید فاؤنڈیشن ‘ کی جانب سے پرانے کپڑوں، کھلونوں اور دیگر اشیا کو ایک ہال میں اسٹال نما سجا دیا گیا ہے۔ جہاں سے ضرورت مند حضرات اپنی پسند اور ضرورت کی چیزیں تلاش کر کے لے جا رہے ہیں۔ دیکھیں تصویریں۔

  •  اس کے علاوہ، جنھیں جو کچھ دینا ہے وہ یہاں خاموشی سے امداد کا سامان رکھ جاتے ہیں۔

    اس کے علاوہ، جنھیں جو کچھ دینا ہے وہ یہاں خاموشی سے امداد کا سامان رکھ جاتے ہیں۔

  • اس میں کھجور اور شربت بھی شامل ہے ۔

    اس میں کھجور اور شربت بھی شامل ہے ۔

  • یہاں پر جو لوگ عطیات و صدقات دیتے ہیں ان سے مال جمع کر کے انھیں ترتیب دے کر دکانوں کی طرح سجا دیا جاتا ہے۔

    یہاں پر جو لوگ عطیات و صدقات دیتے ہیں ان سے مال جمع کر کے انھیں ترتیب دے کر دکانوں کی طرح سجا دیا جاتا ہے۔

  • اس کے بعد جو حضرات لینا چاہتے ہیں انھیں بالکل مفت بغیر کوئی شناخت معلوم کیے انکی ضروت کی چیزیں دے دی جاتی ہیں ۔

    اس کے بعد جو حضرات لینا چاہتے ہیں انھیں بالکل مفت بغیر کوئی شناخت معلوم کیے انکی ضروت کی چیزیں دے دی جاتی ہیں ۔

  • اس طرح کا منظر ممبرا میں پہلی مرتبہ دیکھنے کو ملا ہے جس کی مسلم حلقوں کی طرف سے خوب ستائش کی جا رہی ہے۔

    اس طرح کا منظر ممبرا میں پہلی مرتبہ دیکھنے کو ملا ہے جس کی مسلم حلقوں کی طرف سے خوب ستائش کی جا رہی ہے۔

  •  لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ ایک اچھا قدم ہے اورآئندہ دیگر مسلم شہروں میں بھی اسی طرح کا اسٹال لگایا جائے جہاں دینے والوں اور لینے والوں کا نام مخفی رکھا جائے۔

    لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ ایک اچھا قدم ہے اورآئندہ دیگر مسلم شہروں میں بھی اسی طرح کا اسٹال لگایا جائے جہاں دینے والوں اور لینے والوں کا نام مخفی رکھا جائے۔

  • دیکھیں تصویریں۔

    دیکھیں تصویریں۔

  • دیکھیں تصویریں۔

    دیکھیں تصویریں۔

  • دیکھیں تصویریں۔

    دیکھیں تصویریں۔

  •  اس کے علاوہ، جنھیں جو کچھ دینا ہے وہ یہاں خاموشی سے امداد کا سامان رکھ جاتے ہیں۔
  • اس میں کھجور اور شربت بھی شامل ہے ۔
  • یہاں پر جو لوگ عطیات و صدقات دیتے ہیں ان سے مال جمع کر کے انھیں ترتیب دے کر دکانوں کی طرح سجا دیا جاتا ہے۔
  • اس کے بعد جو حضرات لینا چاہتے ہیں انھیں بالکل مفت بغیر کوئی شناخت معلوم کیے انکی ضروت کی چیزیں دے دی جاتی ہیں ۔
  • اس طرح کا منظر ممبرا میں پہلی مرتبہ دیکھنے کو ملا ہے جس کی مسلم حلقوں کی طرف سے خوب ستائش کی جا رہی ہے۔
  •  لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ ایک اچھا قدم ہے اورآئندہ دیگر مسلم شہروں میں بھی اسی طرح کا اسٹال لگایا جائے جہاں دینے والوں اور لینے والوں کا نام مخفی رکھا جائے۔
  • دیکھیں تصویریں۔
  • دیکھیں تصویریں۔
  • دیکھیں تصویریں۔

تازہ ترین تصاویر