یہاں کا شندے کنبہ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی ہے انوکھی مثال ، برسوں سے کرتا آرہا ہے افطار کی دعوت

Jun 16, 2017 10:14 AM IST
1 of 7
  • کرناٹک میں ایک ہندو کنبہ برسوں سے گنگا جمنی تہذیب اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی انوکھی مثال پیش کرتا ہوا آرہا ہے ۔رائچورمیں یہ کنبہ مسلمانوں کے لئے برسوں سے افطار کا اہتمام کرتا چلا آرہا ہے ۔

    کرناٹک میں ایک ہندو کنبہ برسوں سے گنگا جمنی تہذیب اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی انوکھی مثال پیش کرتا ہوا آرہا ہے ۔رائچورمیں یہ کنبہ مسلمانوں کے لئے برسوں سے افطار کا اہتمام کرتا چلا آرہا ہے ۔

  • حیدرآباد کرناٹک علاقہ کارائچورشہر ہمیشہ سے ہی گنگا جمنی تہذیب کا گہوارہ رہا ہے۔ ماہ رمضان میں یہاں اتحاد وبھائی چارے کا کلچر دوبالا ہوجاتا ہے ۔ جگہ جگہ بلالحاظ مذہب وملت دعوت افطار کا اہتمام کیا جاتا ہے ۔

    حیدرآباد کرناٹک علاقہ کارائچورشہر ہمیشہ سے ہی گنگا جمنی تہذیب کا گہوارہ رہا ہے۔ ماہ رمضان میں یہاں اتحاد وبھائی چارے کا کلچر دوبالا ہوجاتا ہے ۔ جگہ جگہ بلالحاظ مذہب وملت دعوت افطار کا اہتمام کیا جاتا ہے ۔

  • اسی طرح گذشتہ کئی برسوں سے شہر کے شندے خاندان کی جانب سے روزے داروں کے لئے طعام کا انتظام ہوتا ہے۔

    اسی طرح گذشتہ کئی برسوں سے شہر کے شندے خاندان کی جانب سے روزے داروں کے لئے طعام کا انتظام ہوتا ہے۔

  • رواں رمضان کے مہینے بھی شندے خاندان کی جانب سے بڑے پیمانے دعوت افطارانتظام کیا گیا تھا۔ شندے کنبہ کی دعوت افطارمیں کثیرتعداد میں روزے دار شرکت کرتے ہیں ۔

    رواں رمضان کے مہینے بھی شندے خاندان کی جانب سے بڑے پیمانے دعوت افطارانتظام کیا گیا تھا۔ شندے کنبہ کی دعوت افطارمیں کثیرتعداد میں روزے دار شرکت کرتے ہیں ۔

  • شندے خاندان کے فرد پرسنا کمار کا کہنا ہے کہ روزے داروں کے لئے ہرسال افطار اور طعام کا انتظام کرنے سے انہیں اوران کے افراد خاندان کو کافی روحانی سکون حاصل ہوتا ہے ۔

    شندے خاندان کے فرد پرسنا کمار کا کہنا ہے کہ روزے داروں کے لئے ہرسال افطار اور طعام کا انتظام کرنے سے انہیں اوران کے افراد خاندان کو کافی روحانی سکون حاصل ہوتا ہے ۔

  • افطار کے موقع پررفاعی فقراء بھی حصہ لیتے ہیں اور اپنے منفرد انتظام میں دف کے ذریعے قوالی پیش کرتے ہیں ۔ خاص بات یہ ہے شندے خاندان کی جانب سے رفاعی فقراء اور مستحق افراد میں خیرات بھی تقسیم کی جاتی ہے ۔

    افطار کے موقع پررفاعی فقراء بھی حصہ لیتے ہیں اور اپنے منفرد انتظام میں دف کے ذریعے قوالی پیش کرتے ہیں ۔ خاص بات یہ ہے شندے خاندان کی جانب سے رفاعی فقراء اور مستحق افراد میں خیرات بھی تقسیم کی جاتی ہے ۔

  • واضح رہے کہ شندے خاندان درگاہ حضرت غریب نواز ؒ اجمیر شریف کے علاوہ دیگر آستانوں سے کافی عقیدت رکھتا ہے ۔ یہ لوگ عرس غریب نواز کے موقع پر ہر سال درگاہ اجمیر شریف میں حاضری دیتے ہیں ۔

    واضح رہے کہ شندے خاندان درگاہ حضرت غریب نواز ؒ اجمیر شریف کے علاوہ دیگر آستانوں سے کافی عقیدت رکھتا ہے ۔ یہ لوگ عرس غریب نواز کے موقع پر ہر سال درگاہ اجمیر شریف میں حاضری دیتے ہیں ۔

  • حیدرآباد کرناٹک علاقہ کارائچورشہر ہمیشہ سے ہی گنگا جمنی تہذیب کا گہوارہ رہا ہے۔ ماہ رمضان میں یہاں اتحاد وبھائی چارے کا کلچر دوبالا ہوجاتا ہے ۔ جگہ جگہ بلالحاظ مذہب وملت دعوت افطار کا اہتمام کیا جاتا ہے ۔
  • اسی طرح گذشتہ کئی برسوں سے شہر کے شندے خاندان کی جانب سے روزے داروں کے لئے طعام کا انتظام ہوتا ہے۔
  • رواں رمضان کے مہینے بھی شندے خاندان کی جانب سے بڑے پیمانے دعوت افطارانتظام کیا گیا تھا۔ شندے کنبہ کی دعوت افطارمیں کثیرتعداد میں روزے دار شرکت کرتے ہیں ۔
  • شندے خاندان کے فرد پرسنا کمار کا کہنا ہے کہ روزے داروں کے لئے ہرسال افطار اور طعام کا انتظام کرنے سے انہیں اوران کے افراد خاندان کو کافی روحانی سکون حاصل ہوتا ہے ۔
  • افطار کے موقع پررفاعی فقراء بھی حصہ لیتے ہیں اور اپنے منفرد انتظام میں دف کے ذریعے قوالی پیش کرتے ہیں ۔ خاص بات یہ ہے شندے خاندان کی جانب سے رفاعی فقراء اور مستحق افراد میں خیرات بھی تقسیم کی جاتی ہے ۔
  • واضح رہے کہ شندے خاندان درگاہ حضرت غریب نواز ؒ اجمیر شریف کے علاوہ دیگر آستانوں سے کافی عقیدت رکھتا ہے ۔ یہ لوگ عرس غریب نواز کے موقع پر ہر سال درگاہ اجمیر شریف میں حاضری دیتے ہیں ۔

تازہ ترین تصاویر