بیوی دن بھر کھینچتی تھی سیلفی ، شوہر نے مانگا طلاق تو عدالت نے سنائی یہ سزا

Jan 20, 2019 05:14 PM IST
1 of 6
  • بھوپال کے فیملی کورٹ میں ایک ایسا معاملہ سامنے آیا ، جس میں اسمارٹ فون کی وجہ سے میاں بیوی کے درمیان لڑائی اتنی بڑھ گئی کہ دونوں کے درمیان طلاق تک کی نوبت آگئی۔ عدالت نے معاملہ کی سماعت کے بعد کاونسلنگ کا حکم دیا۔ کاونسلر نے جب تنازع کی وجہ کا پتہ لگانا شروع کیا تو اصلی سبب موبائل فون نکلا۔

    بھوپال کے فیملی کورٹ میں ایک ایسا معاملہ سامنے آیا ، جس میں اسمارٹ فون کی وجہ سے میاں بیوی کے درمیان لڑائی اتنی بڑھ گئی کہ دونوں کے درمیان طلاق تک کی نوبت آگئی۔ عدالت نے معاملہ کی سماعت کے بعد کاونسلنگ کا حکم دیا۔ کاونسلر نے جب تنازع کی وجہ کا پتہ لگانا شروع کیا تو اصلی سبب موبائل فون نکلا۔

  • کاونسلر سنگیتا نے بتایا کہ کاونسلنگ کے دوران بیوی نے بتایا کہ شوہر خود اسمارٹ فون رکھتا ہے اور اسے فیچر فون دے رکھا ہے۔ اسے گھر والوں سے بات بھی نہیں کرنے دیتا ہے۔ اس پر شوہر نے اپنی صفائی دیتے ہوئے کہا کہ بیوی گھر سے اسمارٹ فون لے کر آئی تھی اور ہر وقت سیلفی ، وہاٹس ایپ اور فیس بک پر لگی رہتی تھی۔ اس کی وجہ سے کئی مرتبہ تو اس کو کھانا بھی نہیں دیتی تھی۔ پریشان ہو کر اس نے بیوی سے اسمارٹ فون چھین لیا ۔

    کاونسلر سنگیتا نے بتایا کہ کاونسلنگ کے دوران بیوی نے بتایا کہ شوہر خود اسمارٹ فون رکھتا ہے اور اسے فیچر فون دے رکھا ہے۔ اسے گھر والوں سے بات بھی نہیں کرنے دیتا ہے۔ اس پر شوہر نے اپنی صفائی دیتے ہوئے کہا کہ بیوی گھر سے اسمارٹ فون لے کر آئی تھی اور ہر وقت سیلفی ، وہاٹس ایپ اور فیس بک پر لگی رہتی تھی۔ اس کی وجہ سے کئی مرتبہ تو اس کو کھانا بھی نہیں دیتی تھی۔ پریشان ہو کر اس نے بیوی سے اسمارٹ فون چھین لیا ۔

  • عدالت نے میاں بیوی کی سبھی باتیں سننے کے بعد حکم دیا کہ خاتون جب اپنے گھر کا سارا کام ختم کرلے گی ، تبھی موبائل ہاتھ میں لے گی ۔ ساتھ ہی ساتھ شوہر کو شادی کی سالگرہ پر اہلیہ کو اسمارٹ فون خریدکر دینا ہوگا ۔ 11 جنوری کو سالگرہ پر شوہر نے بیوی کو اسمارٹ فون خرید کر دیدیا ہے اور اس کی رسید عدالت میں بھی جمع کرادی ہے ۔

    عدالت نے میاں بیوی کی سبھی باتیں سننے کے بعد حکم دیا کہ خاتون جب اپنے گھر کا سارا کام ختم کرلے گی ، تبھی موبائل ہاتھ میں لے گی ۔ ساتھ ہی ساتھ شوہر کو شادی کی سالگرہ پر اہلیہ کو اسمارٹ فون خریدکر دینا ہوگا ۔ 11 جنوری کو سالگرہ پر شوہر نے بیوی کو اسمارٹ فون خرید کر دیدیا ہے اور اس کی رسید عدالت میں بھی جمع کرادی ہے ۔

  • دونوں کی باتیں سننے کے بعد جب عدالت میں دونوں کے درمیان سمجھوتہ ہوا ، تو بیوی نے سات شرائط رکھیں، جس کو شوہر ماننے کیلئے  تیار ہو گیا اور ان کی زندگی کی گاڑی ایک بار پھر پٹری پر لوٹ آئی۔بیوی کی سات شرائط میں سب سے پہلی شرط تھی کہ شوہر کو ہر 15دن میں ایک مرتبہ فلم دکھانی ہوگی ۔ مہینے میں ایک مرتبہ ڈنر پر لے جانا ہوگا ، سال میں ایک مرتبہ اہلیہ کو گھمانے کیلئے شہر سے باہر لے جانا ہوگا۔

    دونوں کی باتیں سننے کے بعد جب عدالت میں دونوں کے درمیان سمجھوتہ ہوا ، تو بیوی نے سات شرائط رکھیں، جس کو شوہر ماننے کیلئے تیار ہو گیا اور ان کی زندگی کی گاڑی ایک بار پھر پٹری پر لوٹ آئی۔بیوی کی سات شرائط میں سب سے پہلی شرط تھی کہ شوہر کو ہر 15دن میں ایک مرتبہ فلم دکھانی ہوگی ۔ مہینے میں ایک مرتبہ ڈنر پر لے جانا ہوگا ، سال میں ایک مرتبہ اہلیہ کو گھمانے کیلئے شہر سے باہر لے جانا ہوگا۔

  • بیوی کی اگلی شرط تھی کہ شوہر کبھی بھی بیوی کو مائیکہ فون کرنے سے نہیں روکے گا۔ ساتھ ہی بیوی کے گھر والوں کے یہاں ہونے والے پروگراموں پر کوئی تبصرہ نہیں کرے گا ۔ مائیکہ والوں کے خلاف کوئی بھی نازیبا الفاظ نہیں بولے گا۔

    بیوی کی اگلی شرط تھی کہ شوہر کبھی بھی بیوی کو مائیکہ فون کرنے سے نہیں روکے گا۔ ساتھ ہی بیوی کے گھر والوں کے یہاں ہونے والے پروگراموں پر کوئی تبصرہ نہیں کرے گا ۔ مائیکہ والوں کے خلاف کوئی بھی نازیبا الفاظ نہیں بولے گا۔

  • بیوی کی ساتویں شرط تھی کہ شوہر اس کو ہر ماہ خرچ کیلئے دو ہزار روپے دے گا، لیکن اس کا حساب شوہر کبھی نہیں پوچھے گا۔

    بیوی کی ساتویں شرط تھی کہ شوہر اس کو ہر ماہ خرچ کیلئے دو ہزار روپے دے گا، لیکن اس کا حساب شوہر کبھی نہیں پوچھے گا۔

  • کاونسلر سنگیتا نے بتایا کہ کاونسلنگ کے دوران بیوی نے بتایا کہ شوہر خود اسمارٹ فون رکھتا ہے اور اسے فیچر فون دے رکھا ہے۔ اسے گھر والوں سے بات بھی نہیں کرنے دیتا ہے۔ اس پر شوہر نے اپنی صفائی دیتے ہوئے کہا کہ بیوی گھر سے اسمارٹ فون لے کر آئی تھی اور ہر وقت سیلفی ، وہاٹس ایپ اور فیس بک پر لگی رہتی تھی۔ اس کی وجہ سے کئی مرتبہ تو اس کو کھانا بھی نہیں دیتی تھی۔ پریشان ہو کر اس نے بیوی سے اسمارٹ فون چھین لیا ۔
  • عدالت نے میاں بیوی کی سبھی باتیں سننے کے بعد حکم دیا کہ خاتون جب اپنے گھر کا سارا کام ختم کرلے گی ، تبھی موبائل ہاتھ میں لے گی ۔ ساتھ ہی ساتھ شوہر کو شادی کی سالگرہ پر اہلیہ کو اسمارٹ فون خریدکر دینا ہوگا ۔ 11 جنوری کو سالگرہ پر شوہر نے بیوی کو اسمارٹ فون خرید کر دیدیا ہے اور اس کی رسید عدالت میں بھی جمع کرادی ہے ۔
  • دونوں کی باتیں سننے کے بعد جب عدالت میں دونوں کے درمیان سمجھوتہ ہوا ، تو بیوی نے سات شرائط رکھیں، جس کو شوہر ماننے کیلئے  تیار ہو گیا اور ان کی زندگی کی گاڑی ایک بار پھر پٹری پر لوٹ آئی۔بیوی کی سات شرائط میں سب سے پہلی شرط تھی کہ شوہر کو ہر 15دن میں ایک مرتبہ فلم دکھانی ہوگی ۔ مہینے میں ایک مرتبہ ڈنر پر لے جانا ہوگا ، سال میں ایک مرتبہ اہلیہ کو گھمانے کیلئے شہر سے باہر لے جانا ہوگا۔
  • بیوی کی اگلی شرط تھی کہ شوہر کبھی بھی بیوی کو مائیکہ فون کرنے سے نہیں روکے گا۔ ساتھ ہی بیوی کے گھر والوں کے یہاں ہونے والے پروگراموں پر کوئی تبصرہ نہیں کرے گا ۔ مائیکہ والوں کے خلاف کوئی بھی نازیبا الفاظ نہیں بولے گا۔
  • بیوی کی ساتویں شرط تھی کہ شوہر اس کو ہر ماہ خرچ کیلئے دو ہزار روپے دے گا، لیکن اس کا حساب شوہر کبھی نہیں پوچھے گا۔

تازہ ترین تصاویر