یوگی راج میں ہندو یوا واہنی کی غنڈہ گردی: مسلم بزرگ کو پیٹ پیٹ کر مار ڈالا

May 03, 2017 12:55 PM IST
1 of 7
  • یوپی میں یوگی حکومت کے آنے کے بعد سے ہی شرپسندوں اور خاص طور پر یوگی کی تنظیم ہندو یوا واہنی کے لوگوں کے حوصلے بلند ہیں۔ قانون کو خود اپنے ہاتھ میں لے کر یہ لوگ اقلیتی فرقہ کو نشانہ بنانے لگے ہیں۔ تازہ معاملہ بلند شہر کا ہے جہاں کچھ لوگوں نے ایک بزرگ مسلمان کو پیٹ پیٹ کر اس کا قتل کردیا ۔ مقتول کے اہل خانہ کا الزام ہے کے  قتل کی اس واردات کو ہندو یوا واہنی کے کارکنوں نے انجام دیا ہے۔

    یوپی میں یوگی حکومت کے آنے کے بعد سے ہی شرپسندوں اور خاص طور پر یوگی کی تنظیم ہندو یوا واہنی کے لوگوں کے حوصلے بلند ہیں۔ قانون کو خود اپنے ہاتھ میں لے کر یہ لوگ اقلیتی فرقہ کو نشانہ بنانے لگے ہیں۔ تازہ معاملہ بلند شہر کا ہے جہاں کچھ لوگوں نے ایک بزرگ مسلمان کو پیٹ پیٹ کر اس کا قتل کردیا ۔ مقتول کے اہل خانہ کا الزام ہے کے قتل کی اس واردات کو ہندو یوا واہنی کے کارکنوں نے انجام دیا ہے۔

  •   واقعہ کے بعد دہشت زدہ خاندان اب گاؤں سے ہجرت کی بات کر رہا ہے کیوں کہ گاوں میں ان لوگوں کے صرف چار ہی خاندان ہیں اوران کو خدشہ ہے کہ ملزمان ایک بار پھر کبھی بھی ان کو اپنا نشانہ بنا سکتے ہیں ۔

    واقعہ کے بعد دہشت زدہ خاندان اب گاؤں سے ہجرت کی بات کر رہا ہے کیوں کہ گاوں میں ان لوگوں کے صرف چار ہی خاندان ہیں اوران کو خدشہ ہے کہ ملزمان ایک بار پھر کبھی بھی ان کو اپنا نشانہ بنا سکتے ہیں ۔

  • تفصیلات کے مطابق، معاملہ بلند شہر کے پہاسو علاقے کا ہے ۔ یہاں ایک مسلم نوجوان کے ذریعہ ایک غیر مسلم لڑکی کو بھگانے کا معاملہ قتل میں تبدیل ہو گیا۔ لڑکی کے فریق اور ہندو یوا واہنی کے لوگوں نے لڑکے کے گھر میں گھس کر توڑ پھوڑ کی اور آگ لگا دیا۔ اتنا ہی نہیں ایک مسلم بزرگ کی بھی بے رحمی سے پٹائی کی گئی جس سے اس کی موت ہو گئی.

    تفصیلات کے مطابق، معاملہ بلند شہر کے پہاسو علاقے کا ہے ۔ یہاں ایک مسلم نوجوان کے ذریعہ ایک غیر مسلم لڑکی کو بھگانے کا معاملہ قتل میں تبدیل ہو گیا۔ لڑکی کے فریق اور ہندو یوا واہنی کے لوگوں نے لڑکے کے گھر میں گھس کر توڑ پھوڑ کی اور آگ لگا دیا۔ اتنا ہی نہیں ایک مسلم بزرگ کی بھی بے رحمی سے پٹائی کی گئی جس سے اس کی موت ہو گئی.

  • ملزمان نے اس خاندان کو لڑکی کو لے جانے والے نوجوان کا رشتہ دار سمجھتے ہوئے اس پر حملہ کر دیا۔ انہوں نے اس گھر کے سربراہ غلام احمد کو دن دہاڑے اٹھا لیا اور پھر گاؤں کے ہی باغ میں دن کے اجالے میں سرعام پیٹ پیٹ کر اسے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔

    ملزمان نے اس خاندان کو لڑکی کو لے جانے والے نوجوان کا رشتہ دار سمجھتے ہوئے اس پر حملہ کر دیا۔ انہوں نے اس گھر کے سربراہ غلام احمد کو دن دہاڑے اٹھا لیا اور پھر گاؤں کے ہی باغ میں دن کے اجالے میں سرعام پیٹ پیٹ کر اسے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔

  •   قتل کی خبر جیسے جیسے پھیلی علاقے میں کشیدگی بڑھتی گئی۔ واقعہ کی جانکاری ملنے پر ڈی ایم، ایس ایس پی سمیت تمام اعلی افسران بڑی تعداد میں پولیس فورس کے ساتھ موقع پر پہنچ گئے۔

    قتل کی خبر جیسے جیسے پھیلی علاقے میں کشیدگی بڑھتی گئی۔ واقعہ کی جانکاری ملنے پر ڈی ایم، ایس ایس پی سمیت تمام اعلی افسران بڑی تعداد میں پولیس فورس کے ساتھ موقع پر پہنچ گئے۔

  •   حالات کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے آس پاس کے علاقے میں بھی بھاری پولیس فورس تعینات کر دی گئی ہے۔

    حالات کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے آس پاس کے علاقے میں بھی بھاری پولیس فورس تعینات کر دی گئی ہے۔

  • اپنے باپ کے قتل سے بیحد دکھی مرحوم کے بیٹے وکیل نے صوبے کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ سے انصاف کی اپیل کی ہے ۔  اب دیکھنا یہ ہوگا کہ کیا ہندو یوا واہنی کے لوگوں پر وزیر اعلی کوئی کارروائی کرتے ہیں یا نہیں۔ فی الحال متاثرہ خاندان گاؤں چھوڑنے کا من بنا چکا ہے۔

    اپنے باپ کے قتل سے بیحد دکھی مرحوم کے بیٹے وکیل نے صوبے کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ سے انصاف کی اپیل کی ہے ۔ اب دیکھنا یہ ہوگا کہ کیا ہندو یوا واہنی کے لوگوں پر وزیر اعلی کوئی کارروائی کرتے ہیں یا نہیں۔ فی الحال متاثرہ خاندان گاؤں چھوڑنے کا من بنا چکا ہے۔

  •   واقعہ کے بعد دہشت زدہ خاندان اب گاؤں سے ہجرت کی بات کر رہا ہے کیوں کہ گاوں میں ان لوگوں کے صرف چار ہی خاندان ہیں اوران کو خدشہ ہے کہ ملزمان ایک بار پھر کبھی بھی ان کو اپنا نشانہ بنا سکتے ہیں ۔
  • تفصیلات کے مطابق، معاملہ بلند شہر کے پہاسو علاقے کا ہے ۔ یہاں ایک مسلم نوجوان کے ذریعہ ایک غیر مسلم لڑکی کو بھگانے کا معاملہ قتل میں تبدیل ہو گیا۔ لڑکی کے فریق اور ہندو یوا واہنی کے لوگوں نے لڑکے کے گھر میں گھس کر توڑ پھوڑ کی اور آگ لگا دیا۔ اتنا ہی نہیں ایک مسلم بزرگ کی بھی بے رحمی سے پٹائی کی گئی جس سے اس کی موت ہو گئی.
  • ملزمان نے اس خاندان کو لڑکی کو لے جانے والے نوجوان کا رشتہ دار سمجھتے ہوئے اس پر حملہ کر دیا۔ انہوں نے اس گھر کے سربراہ غلام احمد کو دن دہاڑے اٹھا لیا اور پھر گاؤں کے ہی باغ میں دن کے اجالے میں سرعام پیٹ پیٹ کر اسے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔
  •   قتل کی خبر جیسے جیسے پھیلی علاقے میں کشیدگی بڑھتی گئی۔ واقعہ کی جانکاری ملنے پر ڈی ایم، ایس ایس پی سمیت تمام اعلی افسران بڑی تعداد میں پولیس فورس کے ساتھ موقع پر پہنچ گئے۔
  •   حالات کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے آس پاس کے علاقے میں بھی بھاری پولیس فورس تعینات کر دی گئی ہے۔
  • اپنے باپ کے قتل سے بیحد دکھی مرحوم کے بیٹے وکیل نے صوبے کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ سے انصاف کی اپیل کی ہے ۔  اب دیکھنا یہ ہوگا کہ کیا ہندو یوا واہنی کے لوگوں پر وزیر اعلی کوئی کارروائی کرتے ہیں یا نہیں۔ فی الحال متاثرہ خاندان گاؤں چھوڑنے کا من بنا چکا ہے۔

تازہ ترین تصاویر