کانپور میں مہا یگیہ میں شامل ہوئیں مسلم خواتین ، ہندو- مسلم بھائی چارہ کے فروغ کیلئے شرکت کا دعوی

Nov 04, 2017 08:17 PM IST
1 of 10
  • ایک دوسرے کے مذہبی روایات میں عقیدت کا اظہار کرکے ملک میں ہندو مسلم اتحاد کی تصویر پیش کرنے کی ہمیشہ ہی كوششیں کی جاتی رہی ہیں۔ کبھی مسلم ہندو دیوی دیوتاؤں کی پوجا کر یکجہتی کا پیغام دیا جاتا ہے ، تو کبھی ہندو مسلمانوں کے مذہبی پروگراموں میں شرکت کر کے اتحاد کا پیغام دینے کی کوشش کرتے ہیں ۔ ایسی ہی ایک تصویر کانپور شہر میں دیکھنے کو ملی جہاں ایک گاؤں میں ہو رہے سیتا رام یگیہ میں مسلم خواتین پریکرما میں شامل ہو رہی ہیں ۔

    ایک دوسرے کے مذہبی روایات میں عقیدت کا اظہار کرکے ملک میں ہندو مسلم اتحاد کی تصویر پیش کرنے کی ہمیشہ ہی كوششیں کی جاتی رہی ہیں۔ کبھی مسلم ہندو دیوی دیوتاؤں کی پوجا کر یکجہتی کا پیغام دیا جاتا ہے ، تو کبھی ہندو مسلمانوں کے مذہبی پروگراموں میں شرکت کر کے اتحاد کا پیغام دینے کی کوشش کرتے ہیں ۔ ایسی ہی ایک تصویر کانپور شہر میں دیکھنے کو ملی جہاں ایک گاؤں میں ہو رہے سیتا رام یگیہ میں مسلم خواتین پریکرما میں شامل ہو رہی ہیں ۔

  • تاہم اس عمل کی تنقید بھی شروع ہوگئی ہے۔ کہا جارہا ہے کہ مسلمانوں کو دوسروں کی پوجا میں شامل ہوکر ان کے عمل میں شریک نہیں ہونا چاہئے ۔ اگر مذہبی پروگرام میں جایا بھی جائے تو صرف شرکت کی غرض سے نہ کہ اس کی پوجا کے عمل میں شامل ہوا جائے ۔

    تاہم اس عمل کی تنقید بھی شروع ہوگئی ہے۔ کہا جارہا ہے کہ مسلمانوں کو دوسروں کی پوجا میں شامل ہوکر ان کے عمل میں شریک نہیں ہونا چاہئے ۔ اگر مذہبی پروگرام میں جایا بھی جائے تو صرف شرکت کی غرض سے نہ کہ اس کی پوجا کے عمل میں شامل ہوا جائے ۔

  •  کانپور کے سچینڈی تھانہ کے پلرا گاؤں میں 25 اکتوبر سے 4 نومبر تک سیتا رام مہا یگیہ کیا گیا ، لیکن یہاں کے پروگرام کی خاص بات یہ رہی کہ یہاں مسلم خواتین یگیہ میں شریک ہو یگیہ ستھل کی پریکرما کرتی نظر آئیں ۔

    کانپور کے سچینڈی تھانہ کے پلرا گاؤں میں 25 اکتوبر سے 4 نومبر تک سیتا رام مہا یگیہ کیا گیا ، لیکن یہاں کے پروگرام کی خاص بات یہ رہی کہ یہاں مسلم خواتین یگیہ میں شریک ہو یگیہ ستھل کی پریکرما کرتی نظر آئیں ۔

  • ان خواتین کا کہنا ہے کہ تمام مذاہب میں لوگوں کو عقیدت رکھنی چاہیے اور اسی لئے وہ اس یگیہ میں میں شامل ہوئی ہیں اور رسم کے مطابق چکر لگایا  ہے ۔

    ان خواتین کا کہنا ہے کہ تمام مذاہب میں لوگوں کو عقیدت رکھنی چاہیے اور اسی لئے وہ اس یگیہ میں میں شامل ہوئی ہیں اور رسم کے مطابق چکر لگایا ہے ۔

  • ان کا کہنا ہے کہ ہندو مسلم سب جب ایک ساتھ رہتے ہیں ،  تو ان کے مذہبی عبادتوں میں شرکت میں کیا حرج ہے۔ وہ روزانہ یہاں شرکت کرتی ہیں ۔

    ان کا کہنا ہے کہ ہندو مسلم سب جب ایک ساتھ رہتے ہیں ، تو ان کے مذہبی عبادتوں میں شرکت میں کیا حرج ہے۔ وہ روزانہ یہاں شرکت کرتی ہیں ۔

  • خیال رہے کہ کچھ دن قبل ہی بنارس میں کچھ مسلم خواتین کے جانب سے ایک پوجا میں شرکت کرنے کے بعد ان کے فتوی جاری کیا گیا تھا ،  انہیں اسلام سے خارج کر دیا گیا ہے ۔

    خیال رہے کہ کچھ دن قبل ہی بنارس میں کچھ مسلم خواتین کے جانب سے ایک پوجا میں شرکت کرنے کے بعد ان کے فتوی جاری کیا گیا تھا ، انہیں اسلام سے خارج کر دیا گیا ہے ۔

  • لیکن کانپور کی یہ خواتین اس سے بے پرواہ ہیں ۔

    لیکن کانپور کی یہ خواتین اس سے بے پرواہ ہیں ۔

  • یہاں کے مسلمانوں کا کہنا ہے کہ جب ہندو بھائی ہمارے مذہبی عبادت گاہوں میں جا کرعبادت کرسکتے ہیں ،  تو ہمیں کیا حرج ہے ۔

    یہاں کے مسلمانوں کا کہنا ہے کہ جب ہندو بھائی ہمارے مذہبی عبادت گاہوں میں جا کرعبادت کرسکتے ہیں ، تو ہمیں کیا حرج ہے ۔

  • ادھر یگیہ کرانے آئے گیانی داس تیاگی کا کہنا ہے کہ مذہبوں کو ایک دوسرے سے جوڑ کر رکھنا چا ہیے، جس سے یکجہتی برقرار رہے۔

    ادھر یگیہ کرانے آئے گیانی داس تیاگی کا کہنا ہے کہ مذہبوں کو ایک دوسرے سے جوڑ کر رکھنا چا ہیے، جس سے یکجہتی برقرار رہے۔

  • چند لوگ صرف سیاسی فوائد کے لیے لوگوں کو مذہبوں میں تقسیم کرنے کا کام کرتے  ہیں۔

    چند لوگ صرف سیاسی فوائد کے لیے لوگوں کو مذہبوں میں تقسیم کرنے کا کام کرتے ہیں۔

  • تاہم اس عمل کی تنقید بھی شروع ہوگئی ہے۔ کہا جارہا ہے کہ مسلمانوں کو دوسروں کی پوجا میں شامل ہوکر ان کے عمل میں شریک نہیں ہونا چاہئے ۔ اگر مذہبی پروگرام میں جایا بھی جائے تو صرف شرکت کی غرض سے نہ کہ اس کی پوجا کے عمل میں شامل ہوا جائے ۔
  •  کانپور کے سچینڈی تھانہ کے پلرا گاؤں میں 25 اکتوبر سے 4 نومبر تک سیتا رام مہا یگیہ کیا گیا ، لیکن یہاں کے پروگرام کی خاص بات یہ رہی کہ یہاں مسلم خواتین یگیہ میں شریک ہو یگیہ ستھل کی پریکرما کرتی نظر آئیں ۔
  • ان خواتین کا کہنا ہے کہ تمام مذاہب میں لوگوں کو عقیدت رکھنی چاہیے اور اسی لئے وہ اس یگیہ میں میں شامل ہوئی ہیں اور رسم کے مطابق چکر لگایا  ہے ۔
  • ان کا کہنا ہے کہ ہندو مسلم سب جب ایک ساتھ رہتے ہیں ،  تو ان کے مذہبی عبادتوں میں شرکت میں کیا حرج ہے۔ وہ روزانہ یہاں شرکت کرتی ہیں ۔
  • خیال رہے کہ کچھ دن قبل ہی بنارس میں کچھ مسلم خواتین کے جانب سے ایک پوجا میں شرکت کرنے کے بعد ان کے فتوی جاری کیا گیا تھا ،  انہیں اسلام سے خارج کر دیا گیا ہے ۔
  • لیکن کانپور کی یہ خواتین اس سے بے پرواہ ہیں ۔
  • یہاں کے مسلمانوں کا کہنا ہے کہ جب ہندو بھائی ہمارے مذہبی عبادت گاہوں میں جا کرعبادت کرسکتے ہیں ،  تو ہمیں کیا حرج ہے ۔
  • ادھر یگیہ کرانے آئے گیانی داس تیاگی کا کہنا ہے کہ مذہبوں کو ایک دوسرے سے جوڑ کر رکھنا چا ہیے، جس سے یکجہتی برقرار رہے۔
  • چند لوگ صرف سیاسی فوائد کے لیے لوگوں کو مذہبوں میں تقسیم کرنے کا کام کرتے  ہیں۔

تازہ ترین تصاویر