تین طلاق پر فیصلہ کے بعد لکھنئو میں مسلم خواتین نے منایا جشن: دیکھیں تصویریں

Aug 22, 2017 08:32 PM IST
1 of 10
  •  طلاق بدعت (مسلسل تین بار طلاق) پر سپریم کورٹ کے فیصلے سے خوش اترپردیش کے دارالحکومت لکھنئو میں مسلم خواتین نے جشن منایا۔ دارالحکومت میں حکمراں بی جے پی کے ریاستی ہیڈ کوارٹر کے سامنے مسلم خواتین جمع ہوئیں اور ریاست کے اقلیتی وزیر محسن رضا کے ساتھ اس فیصلہ پر جشن منایا۔

    طلاق بدعت (مسلسل تین بار طلاق) پر سپریم کورٹ کے فیصلے سے خوش اترپردیش کے دارالحکومت لکھنئو میں مسلم خواتین نے جشن منایا۔ دارالحکومت میں حکمراں بی جے پی کے ریاستی ہیڈ کوارٹر کے سامنے مسلم خواتین جمع ہوئیں اور ریاست کے اقلیتی وزیر محسن رضا کے ساتھ اس فیصلہ پر جشن منایا۔

  •   سپریم کورٹ کے فیصلے سے سرشار مسلم خواتین نے اس موقع پر ایک دوسرے کا منہ میٹھا کیا۔

    سپریم کورٹ کے فیصلے سے سرشار مسلم خواتین نے اس موقع پر ایک دوسرے کا منہ میٹھا کیا۔

  • کئی خواتین نے دوسری خواتین کو پھولوں کا ہار پہنا کر جشن منایا۔

    کئی خواتین نے دوسری خواتین کو پھولوں کا ہار پہنا کر جشن منایا۔

  • انہوں نے فیصلے کو تاریخی دن قرار دیتے ہوئے کہا کہ آج مسلم سماج کی خواتین کی جیت ہوئی ہے۔

    انہوں نے فیصلے کو تاریخی دن قرار دیتے ہوئے کہا کہ آج مسلم سماج کی خواتین کی جیت ہوئی ہے۔

  •   مسلم خواتین نے امید ظاہر کی کہ اس فیصلہ سے طلاق کے معاملوں میں کمی آ سکتی ہے۔

    مسلم خواتین نے امید ظاہر کی کہ اس فیصلہ سے طلاق کے معاملوں میں کمی آ سکتی ہے۔

  •  انہوں نے یہ بھی کہا کہ واضح قانون اور اس کے تئیں سماج میں بیداری پھیلانے کی کوشش پر ٖفیصلے کی حقیقی کامیابی منحصر کرے گی۔

    انہوں نے یہ بھی کہا کہ واضح قانون اور اس کے تئیں سماج میں بیداری پھیلانے کی کوشش پر ٖفیصلے کی حقیقی کامیابی منحصر کرے گی۔

  •   ان کا کہنا ہے کہ خواتین کو استحصال سے بچانے کیلئے آئین نے پہلے سے ہی کئی حقوق دیئے ہیں، لیکن اسے عملی طور پر حاصل کرنا عام خواتین کیلئے ایک بڑا چیلنج ہے۔

    ان کا کہنا ہے کہ خواتین کو استحصال سے بچانے کیلئے آئین نے پہلے سے ہی کئی حقوق دیئے ہیں، لیکن اسے عملی طور پر حاصل کرنا عام خواتین کیلئے ایک بڑا چیلنج ہے۔

  •  تین طلاق کا نیا قانون بناتے وقت اس چیلنج کو دھیان میں رکھنا ہوگا۔

    تین طلاق کا نیا قانون بناتے وقت اس چیلنج کو دھیان میں رکھنا ہوگا۔

  • دیکھیں تصویریں۔

    دیکھیں تصویریں۔

  • دیکھیں تصویریں۔

    دیکھیں تصویریں۔

  •   سپریم کورٹ کے فیصلے سے سرشار مسلم خواتین نے اس موقع پر ایک دوسرے کا منہ میٹھا کیا۔
  • کئی خواتین نے دوسری خواتین کو پھولوں کا ہار پہنا کر جشن منایا۔
  • انہوں نے فیصلے کو تاریخی دن قرار دیتے ہوئے کہا کہ آج مسلم سماج کی خواتین کی جیت ہوئی ہے۔
  •   مسلم خواتین نے امید ظاہر کی کہ اس فیصلہ سے طلاق کے معاملوں میں کمی آ سکتی ہے۔
  •  انہوں نے یہ بھی کہا کہ واضح قانون اور اس کے تئیں سماج میں بیداری پھیلانے کی کوشش پر ٖفیصلے کی حقیقی کامیابی منحصر کرے گی۔
  •   ان کا کہنا ہے کہ خواتین کو استحصال سے بچانے کیلئے آئین نے پہلے سے ہی کئی حقوق دیئے ہیں، لیکن اسے عملی طور پر حاصل کرنا عام خواتین کیلئے ایک بڑا چیلنج ہے۔
  •  تین طلاق کا نیا قانون بناتے وقت اس چیلنج کو دھیان میں رکھنا ہوگا۔
  • دیکھیں تصویریں۔
  • دیکھیں تصویریں۔

تازہ ترین تصاویر