ناندیڑ : جاں باز طالب علم اعجاز نداف کو ملے گا بہادری کا قومی ایوارڈ ، اہل خانہ اور علاقہ میں خوشی کی لہر

Dec 14, 2017 10:40 PM IST
1 of 9
  • بچوں میں بہادری کی مثال پیش کرنے والے ناندیڑ کے ایک طالب علم اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کی جانب سے دئے جانے والے قومی ایوارڈ کے لئے منتخب کیا گیا ہے ۔ یہ ایوارڈ ندی میں ڈوب رہے دو افراد کو بچانے کے لئے دیا جارہا ہے ۔ اگلے ماہ یوم جمہوریہ کے موقع پر وزیرا عظم مودی کے ہاتھوں یہ ایوارڈ دیا جائے گا ۔ ایوارڈ کے لئے نام کا اعلان ہونے پر ناندیڑ میں خوشی کاماحول پایا جاتا ہے ۔

    بچوں میں بہادری کی مثال پیش کرنے والے ناندیڑ کے ایک طالب علم اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کی جانب سے دئے جانے والے قومی ایوارڈ کے لئے منتخب کیا گیا ہے ۔ یہ ایوارڈ ندی میں ڈوب رہے دو افراد کو بچانے کے لئے دیا جارہا ہے ۔ اگلے ماہ یوم جمہوریہ کے موقع پر وزیرا عظم مودی کے ہاتھوں یہ ایوارڈ دیا جائے گا ۔ ایوارڈ کے لئے نام کا اعلان ہونے پر ناندیڑ میں خوشی کاماحول پایا جاتا ہے ۔

  •  اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کے انڈین چائلڈ ویلفیئر کونسل کی جانب سے دیئے جانے والے قومی سطح کے نیشنل براوری چائلڈ پرائز نامی ایوارڈ کیلئے منتخب کیا گیا ہے ۔

    اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کے انڈین چائلڈ ویلفیئر کونسل کی جانب سے دیئے جانے والے قومی سطح کے نیشنل براوری چائلڈ پرائز نامی ایوارڈ کیلئے منتخب کیا گیا ہے ۔

  •  نداف کا تعلق ناندیڑ سے قریب پارڈی نامی گاؤں سے ہے ۔ نداف کو یہ ایوارڈ اس بہادری کے لئے دیا جارہا ہے جو اس نے چند ماہ قبل دکھائی تھی ۔

    نداف کا تعلق ناندیڑ سے قریب پارڈی نامی گاؤں سے ہے ۔ نداف کو یہ ایوارڈ اس بہادری کے لئے دیا جارہا ہے جو اس نے چند ماہ قبل دکھائی تھی ۔

  • گاؤں کی چند خواتین ندی کنارے کپڑے دھو رہی تھیں کہ  اسی دوران ایک لڑکی کا پاوں پھسل گیا اور وہ پانی میں ڈوبنے لگی۔ اس کو بچانے کے لئے ایک اور لڑکی پانی میں اتر گئی۔ اسی طرح مزید دو عورتیں بھی انہیں بچانے کے لئے پانی میں اتر گئیں او ر پانی کا بہاؤ تیز ہونے سے سبھی غوطے کھانے اور ڈوبنے لگیں۔

    گاؤں کی چند خواتین ندی کنارے کپڑے دھو رہی تھیں کہ اسی دوران ایک لڑکی کا پاوں پھسل گیا اور وہ پانی میں ڈوبنے لگی۔ اس کو بچانے کے لئے ایک اور لڑکی پانی میں اتر گئی۔ اسی طرح مزید دو عورتیں بھی انہیں بچانے کے لئے پانی میں اتر گئیں او ر پانی کا بہاؤ تیز ہونے سے سبھی غوطے کھانے اور ڈوبنے لگیں۔

  • اس دوران وہاں موجوو کسی نے بھی انہیں بچانے کی ہمت نہیں دکھائی ۔ایسے میں اعجاز نداف نے اپنی جان کی پروا کئے بغیر پانی میں کود کر انہیں بچانے کی کوشش کی۔ اس کو دو لڑکیوں کو بچانے میں کامیابی ملی ،  لیکن دیگر دو عورتیں نہیں بچ پائیں ۔ دو لڑکیوں کو بچانے کیلئے  جان کی بازی لگانے پر اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کی جانب سے ایواڑ دینےکا فیصلہ کیا گیا ہے۔

    اس دوران وہاں موجوو کسی نے بھی انہیں بچانے کی ہمت نہیں دکھائی ۔ایسے میں اعجاز نداف نے اپنی جان کی پروا کئے بغیر پانی میں کود کر انہیں بچانے کی کوشش کی۔ اس کو دو لڑکیوں کو بچانے میں کامیابی ملی ، لیکن دیگر دو عورتیں نہیں بچ پائیں ۔ دو لڑکیوں کو بچانے کیلئے جان کی بازی لگانے پر اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کی جانب سے ایواڑ دینےکا فیصلہ کیا گیا ہے۔

  • قومی سطح کے ایوارڈ کے لئےاعجاز نداف کےنام کا اعلان ہونے پر پورے گاؤں میں خوشی کا ماحول ہے۔ لوگ اعجاز کو اور اس کے والدین کو مبارکباد پیش کررہے ہیں ۔

    قومی سطح کے ایوارڈ کے لئےاعجاز نداف کےنام کا اعلان ہونے پر پورے گاؤں میں خوشی کا ماحول ہے۔ لوگ اعجاز کو اور اس کے والدین کو مبارکباد پیش کررہے ہیں ۔

  •  ساتھ ہی ساتھ اسکول میں بھی اس کی پھرپور ستائش کی جارہی ہے ۔ اعجاز پارڈی کے مقامی سرکاری اسکول میں زیر تعلیم ہے ۔ پچپن سے ہی اسے لوگوں کی مدد کرنے کا شوق رہا ہے۔ اسکول میں بھی وہ دیگر طلبہ میں ایک ذہین طالب علم کی حیثیت سے پہنچانا جاتا ہے ۔

    ساتھ ہی ساتھ اسکول میں بھی اس کی پھرپور ستائش کی جارہی ہے ۔ اعجاز پارڈی کے مقامی سرکاری اسکول میں زیر تعلیم ہے ۔ پچپن سے ہی اسے لوگوں کی مدد کرنے کا شوق رہا ہے۔ اسکول میں بھی وہ دیگر طلبہ میں ایک ذہین طالب علم کی حیثیت سے پہنچانا جاتا ہے ۔

  •  گاؤں میں اس کے والدین کھیتی کا کام کرتے ہیں ۔ بچوں کو قومی سطح کا ایوارڈ کے لئے منتخب کیا گیا ہے لیکن ایسا انہوں نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا۔

    گاؤں میں اس کے والدین کھیتی کا کام کرتے ہیں ۔ بچوں کو قومی سطح کا ایوارڈ کے لئے منتخب کیا گیا ہے لیکن ایسا انہوں نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا۔

  • مرکزی حکومت کی جانب سے ایوارڈ کے لئے منتخب ہونے پراعجاز کے اہل خانہ کی خوشی کا کوئی ٹھکانا نہیں ہے۔ دہلی میں ہونے والی تقریب میں شریک ہونے کے لئے وہ تیاریوں میں جٹ گئے ہیں ۔

    مرکزی حکومت کی جانب سے ایوارڈ کے لئے منتخب ہونے پراعجاز کے اہل خانہ کی خوشی کا کوئی ٹھکانا نہیں ہے۔ دہلی میں ہونے والی تقریب میں شریک ہونے کے لئے وہ تیاریوں میں جٹ گئے ہیں ۔

  •  اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کے انڈین چائلڈ ویلفیئر کونسل کی جانب سے دیئے جانے والے قومی سطح کے نیشنل براوری چائلڈ پرائز نامی ایوارڈ کیلئے منتخب کیا گیا ہے ۔
  •  نداف کا تعلق ناندیڑ سے قریب پارڈی نامی گاؤں سے ہے ۔ نداف کو یہ ایوارڈ اس بہادری کے لئے دیا جارہا ہے جو اس نے چند ماہ قبل دکھائی تھی ۔
  • گاؤں کی چند خواتین ندی کنارے کپڑے دھو رہی تھیں کہ  اسی دوران ایک لڑکی کا پاوں پھسل گیا اور وہ پانی میں ڈوبنے لگی۔ اس کو بچانے کے لئے ایک اور لڑکی پانی میں اتر گئی۔ اسی طرح مزید دو عورتیں بھی انہیں بچانے کے لئے پانی میں اتر گئیں او ر پانی کا بہاؤ تیز ہونے سے سبھی غوطے کھانے اور ڈوبنے لگیں۔
  • اس دوران وہاں موجوو کسی نے بھی انہیں بچانے کی ہمت نہیں دکھائی ۔ایسے میں اعجاز نداف نے اپنی جان کی پروا کئے بغیر پانی میں کود کر انہیں بچانے کی کوشش کی۔ اس کو دو لڑکیوں کو بچانے میں کامیابی ملی ،  لیکن دیگر دو عورتیں نہیں بچ پائیں ۔ دو لڑکیوں کو بچانے کیلئے  جان کی بازی لگانے پر اعجاز نداف کو مرکزی حکومت کی جانب سے ایواڑ دینےکا فیصلہ کیا گیا ہے۔
  • قومی سطح کے ایوارڈ کے لئےاعجاز نداف کےنام کا اعلان ہونے پر پورے گاؤں میں خوشی کا ماحول ہے۔ لوگ اعجاز کو اور اس کے والدین کو مبارکباد پیش کررہے ہیں ۔
  •  ساتھ ہی ساتھ اسکول میں بھی اس کی پھرپور ستائش کی جارہی ہے ۔ اعجاز پارڈی کے مقامی سرکاری اسکول میں زیر تعلیم ہے ۔ پچپن سے ہی اسے لوگوں کی مدد کرنے کا شوق رہا ہے۔ اسکول میں بھی وہ دیگر طلبہ میں ایک ذہین طالب علم کی حیثیت سے پہنچانا جاتا ہے ۔
  •  گاؤں میں اس کے والدین کھیتی کا کام کرتے ہیں ۔ بچوں کو قومی سطح کا ایوارڈ کے لئے منتخب کیا گیا ہے لیکن ایسا انہوں نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا۔
  • مرکزی حکومت کی جانب سے ایوارڈ کے لئے منتخب ہونے پراعجاز کے اہل خانہ کی خوشی کا کوئی ٹھکانا نہیں ہے۔ دہلی میں ہونے والی تقریب میں شریک ہونے کے لئے وہ تیاریوں میں جٹ گئے ہیں ۔

تازہ ترین تصاویر