سری نگرپارلیمانی ضمنی انتخابات میں محض 6.5 فیصد پولنگ ، بڈگام میں ووٹنگ کے دوران پُرتشدد جھڑپیں ، 8 ہلاک

Apr 09, 2017 05:58 PM IST
1 of 16
  • وسطی کشمیر کے ضلع بڈگام میں اتوار کو سری نگر کی پارلیمانی نشست کے لئے ضمنی انتخابات کے تحت پولنگ کے دوران آزادی حامی احتجاجی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے مابین بدترین جھڑپوں میں 8 نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔ سری نگر کی پارلیمانی نشست وسطی کشمیر کے تین اضلاع سری نگر، بڈگام اور گاندربل پر محیط ہے۔ یہاں آج محض 6.5 فیصد ووٹ ڈالے گئے ۔

    وسطی کشمیر کے ضلع بڈگام میں اتوار کو سری نگر کی پارلیمانی نشست کے لئے ضمنی انتخابات کے تحت پولنگ کے دوران آزادی حامی احتجاجی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے مابین بدترین جھڑپوں میں 8 نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔ سری نگر کی پارلیمانی نشست وسطی کشمیر کے تین اضلاع سری نگر، بڈگام اور گاندربل پر محیط ہے۔ یہاں آج محض 6.5 فیصد ووٹ ڈالے گئے ۔

  • ضلع بڈگام کے علاوہ سری نگر اور گاندربل اضلاع میں بھی کم از کم ایک درجن مقامات پر آزادی حامی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئیں جن میں متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔

    ضلع بڈگام کے علاوہ سری نگر اور گاندربل اضلاع میں بھی کم از کم ایک درجن مقامات پر آزادی حامی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئیں جن میں متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔

  • تاہم تشدد کے سب سے زیادہ واقعات ضلع بڈگام میں رونما ہوئے جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں کم از کم8 نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔

    تاہم تشدد کے سب سے زیادہ واقعات ضلع بڈگام میں رونما ہوئے جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں کم از کم8 نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔

  • متعدد زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جارہی ہے۔ شدید زخمی نوجوان گولیاں، چھرے یا آنسو گیس کے شیل لگنے سے زخمی ہوئے ہیں۔

    متعدد زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جارہی ہے۔ شدید زخمی نوجوان گولیاں، چھرے یا آنسو گیس کے شیل لگنے سے زخمی ہوئے ہیں۔

  • موصولہ اطلاعات کے مطابق ضلع بڈگام میں پولنگ کے آغاز کے ساتھ احتجاجی مظاہرین نے کم از کم ایک درجن مقامات پر سیکورٹی فورسز پر سنگبازی کرنا شروع کی۔

    موصولہ اطلاعات کے مطابق ضلع بڈگام میں پولنگ کے آغاز کے ساتھ احتجاجی مظاہرین نے کم از کم ایک درجن مقامات پر سیکورٹی فورسز پر سنگبازی کرنا شروع کی۔

  • تاہم سیکورٹی فورسز کی جانب سے طاقت کے استعمال کے بعد جھڑپوں کا سلسلہ مزید علاقوں تک پھیل گیا اور عام شہریوں کے جاں بحق یا زخمی ہونے کی تعداد ہر گذرتے گھنٹے کے ساتھ بڑھتے گئی۔

    تاہم سیکورٹی فورسز کی جانب سے طاقت کے استعمال کے بعد جھڑپوں کا سلسلہ مزید علاقوں تک پھیل گیا اور عام شہریوں کے جاں بحق یا زخمی ہونے کی تعداد ہر گذرتے گھنٹے کے ساتھ بڑھتے گئی۔

  • ضلع بڈگام میں دو جواں سال نوجوانوں کے ہلاک ہونے کا پہلا واقعہ دلوان پورہ چرار شریف میں اُس وقت پیش آیا جب سیکورٹی فورسز نے پولنگ مرکز کی حفاظت پر مامور سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا اور انہوں نے ردعمل میں پہلے آنسو گیس کی شیلنگ اور پھر مبینہ طور پر براہ راست فائرنگ کی۔

    ضلع بڈگام میں دو جواں سال نوجوانوں کے ہلاک ہونے کا پہلا واقعہ دلوان پورہ چرار شریف میں اُس وقت پیش آیا جب سیکورٹی فورسز نے پولنگ مرکز کی حفاظت پر مامور سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا اور انہوں نے ردعمل میں پہلے آنسو گیس کی شیلنگ اور پھر مبینہ طور پر براہ راست فائرنگ کی۔

  • مہلوک نوجوانوں کی شناخت 15 سالہ فیضان احمد اور 20 سالہ محمد عباس کے بطور کی گئی ہے۔

    مہلوک نوجوانوں کی شناخت 15 سالہ فیضان احمد اور 20 سالہ محمد عباس کے بطور کی گئی ہے۔

  • ہلاکت کا دوسرا واقعہ ضلع کے رٹھسن بیروہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں نثار احمد نامی ایک نوجوان ہلاک ہوا۔ ہلاکت کا تیسرا واقعہ ضلع کے دولت پورہ چاڈورہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک 24 سالہ نوجوان شبیر احمد ہلاک ہوا ۔ ضلع کے کاووسہ ناربل میں عادل فاروق نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں پیلٹ لگنے سے جاں بحق ہوا۔

    ہلاکت کا دوسرا واقعہ ضلع کے رٹھسن بیروہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں نثار احمد نامی ایک نوجوان ہلاک ہوا۔ ہلاکت کا تیسرا واقعہ ضلع کے دولت پورہ چاڈورہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک 24 سالہ نوجوان شبیر احمد ہلاک ہوا ۔ ضلع کے کاووسہ ناربل میں عادل فاروق نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں پیلٹ لگنے سے جاں بحق ہوا۔

  • ضلع بڈگام میں ہلاکت کا پانچواں واقعہ ژرمجرو خانصاحب میں پیش آیا یہاں عاقب احمد عروف عقیل احمد نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ہلاک ہوا۔

    ضلع بڈگام میں ہلاکت کا پانچواں واقعہ ژرمجرو خانصاحب میں پیش آیا یہاں عاقب احمد عروف عقیل احمد نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ہلاک ہوا۔

  • ایک غیرمصدقہ رپورٹ کے مطابق چرار شریف کے ایک گاؤں میں احتجاجی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے مابین جھڑپوں کے دوران ایک خاتون دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق ہوئی ہے۔

    ایک غیرمصدقہ رپورٹ کے مطابق چرار شریف کے ایک گاؤں میں احتجاجی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے مابین جھڑپوں کے دوران ایک خاتون دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق ہوئی ہے۔

  •  بڈگام کے متعدد دیگر علاقوں بشمول نصراللہ پورہ، چاڈورہ، چھون، گوندی پورہ، نارکرہ، گلوان پورہ، بتہ ہاراور وڈون سے بھی پُرتشدد جھڑپوں کی اطلاعات موصول ہوئیں۔

    بڈگام کے متعدد دیگر علاقوں بشمول نصراللہ پورہ، چاڈورہ، چھون، گوندی پورہ، نارکرہ، گلوان پورہ، بتہ ہاراور وڈون سے بھی پُرتشدد جھڑپوں کی اطلاعات موصول ہوئیں۔

  •  ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے انٹرنیٹ سروس کی معطلی پر ریاستی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ یہ پہلی دفعہ ہے کہ جب وادی میں پولنگ کے دن انٹرنیٹ سروس بند کی گئی۔

    ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے انٹرنیٹ سروس کی معطلی پر ریاستی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ یہ پہلی دفعہ ہے کہ جب وادی میں پولنگ کے دن انٹرنیٹ سروس بند کی گئی۔

  •  سری نگر کی پارلیمانی نشست کے لئے نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے نذیر احمد خان سمیت 9 امیدوار قسمت آزمائی کررہے ہیں۔

    سری نگر کی پارلیمانی نشست کے لئے نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے نذیر احمد خان سمیت 9 امیدوار قسمت آزمائی کررہے ہیں۔

  •  ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے اتوار کی صبح اپنے فرزند عمر عبداللہ کے ہمراہ سونہ وار علاقہ میں واقع برن ہال اسکول میں قائم پولنگ مرکز پر اپنے حق رائے دہی کا اظہار کیا۔

    ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے اتوار کی صبح اپنے فرزند عمر عبداللہ کے ہمراہ سونہ وار علاقہ میں واقع برن ہال اسکول میں قائم پولنگ مرکز پر اپنے حق رائے دہی کا اظہار کیا۔

  • فاروق عبداللہ نے ووٹ ڈالنے کے بعد نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے الزام لگایا کہ ریاستی حکومت لوگوں کو اپنے رائے دہی کا استعمال کرنے کے لئے پرامن ماحول فراہم کرنے میں ناکام ثابت ہوئی۔

    فاروق عبداللہ نے ووٹ ڈالنے کے بعد نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے الزام لگایا کہ ریاستی حکومت لوگوں کو اپنے رائے دہی کا استعمال کرنے کے لئے پرامن ماحول فراہم کرنے میں ناکام ثابت ہوئی۔

  • ضلع بڈگام کے علاوہ سری نگر اور گاندربل اضلاع میں بھی کم از کم ایک درجن مقامات پر آزادی حامی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئیں جن میں متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔
  • تاہم تشدد کے سب سے زیادہ واقعات ضلع بڈگام میں رونما ہوئے جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں کم از کم8 نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔
  • متعدد زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جارہی ہے۔ شدید زخمی نوجوان گولیاں، چھرے یا آنسو گیس کے شیل لگنے سے زخمی ہوئے ہیں۔
  • موصولہ اطلاعات کے مطابق ضلع بڈگام میں پولنگ کے آغاز کے ساتھ احتجاجی مظاہرین نے کم از کم ایک درجن مقامات پر سیکورٹی فورسز پر سنگبازی کرنا شروع کی۔
  • تاہم سیکورٹی فورسز کی جانب سے طاقت کے استعمال کے بعد جھڑپوں کا سلسلہ مزید علاقوں تک پھیل گیا اور عام شہریوں کے جاں بحق یا زخمی ہونے کی تعداد ہر گذرتے گھنٹے کے ساتھ بڑھتے گئی۔
  • ضلع بڈگام میں دو جواں سال نوجوانوں کے ہلاک ہونے کا پہلا واقعہ دلوان پورہ چرار شریف میں اُس وقت پیش آیا جب سیکورٹی فورسز نے پولنگ مرکز کی حفاظت پر مامور سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا اور انہوں نے ردعمل میں پہلے آنسو گیس کی شیلنگ اور پھر مبینہ طور پر براہ راست فائرنگ کی۔
  • مہلوک نوجوانوں کی شناخت 15 سالہ فیضان احمد اور 20 سالہ محمد عباس کے بطور کی گئی ہے۔
  • ہلاکت کا دوسرا واقعہ ضلع کے رٹھسن بیروہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں نثار احمد نامی ایک نوجوان ہلاک ہوا۔ ہلاکت کا تیسرا واقعہ ضلع کے دولت پورہ چاڈورہ میں پیش آیا جہاں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک 24 سالہ نوجوان شبیر احمد ہلاک ہوا ۔ ضلع کے کاووسہ ناربل میں عادل فاروق نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں پیلٹ لگنے سے جاں بحق ہوا۔
  • ضلع بڈگام میں ہلاکت کا پانچواں واقعہ ژرمجرو خانصاحب میں پیش آیا یہاں عاقب احمد عروف عقیل احمد نامی نوجوان سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ہلاک ہوا۔
  • ایک غیرمصدقہ رپورٹ کے مطابق چرار شریف کے ایک گاؤں میں احتجاجی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے مابین جھڑپوں کے دوران ایک خاتون دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق ہوئی ہے۔
  •  بڈگام کے متعدد دیگر علاقوں بشمول نصراللہ پورہ، چاڈورہ، چھون، گوندی پورہ، نارکرہ، گلوان پورہ، بتہ ہاراور وڈون سے بھی پُرتشدد جھڑپوں کی اطلاعات موصول ہوئیں۔
  •  ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے انٹرنیٹ سروس کی معطلی پر ریاستی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ یہ پہلی دفعہ ہے کہ جب وادی میں پولنگ کے دن انٹرنیٹ سروس بند کی گئی۔
  •  سری نگر کی پارلیمانی نشست کے لئے نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے نذیر احمد خان سمیت 9 امیدوار قسمت آزمائی کررہے ہیں۔
  •  ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے اتوار کی صبح اپنے فرزند عمر عبداللہ کے ہمراہ سونہ وار علاقہ میں واقع برن ہال اسکول میں قائم پولنگ مرکز پر اپنے حق رائے دہی کا اظہار کیا۔
  • فاروق عبداللہ نے ووٹ ڈالنے کے بعد نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے الزام لگایا کہ ریاستی حکومت لوگوں کو اپنے رائے دہی کا استعمال کرنے کے لئے پرامن ماحول فراہم کرنے میں ناکام ثابت ہوئی۔

تازہ ترین تصاویر