وارانسی نے گرمجوشی سے کیا وزیر اعظم مودی کا استقبال، دیکھیں تصویریں

Mar 04, 2017 02:59 PM IST
1 of 8
  • اترپردیش اسمبلی انتخابات کے آخری مرحلے میں اپنے پارلیمانی حلقہ وارانسی پہنچے وزیر اعظم نریندر مودی کا استقبال گرم جوشی سے کیا گیا۔ انتخابی مہم کے سلسلے میں تین روز یہاں گزارنے کا پروگرام بنا کر آئے مسٹر مودی خصوصی طیارے سے بابت پور واقع لال بہادر شاستری کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پہنچے جہاں سے وہ فوج کے ہیلی کاپٹر سے بی ایچ یو کے ہیلی پیڈ پہنچے۔ ہیلی پیڈ پر بی جے پی صدر امت شاہ سمیت کچھ دیگر رہنماؤں نے ان کا استقبال کیا۔

    اترپردیش اسمبلی انتخابات کے آخری مرحلے میں اپنے پارلیمانی حلقہ وارانسی پہنچے وزیر اعظم نریندر مودی کا استقبال گرم جوشی سے کیا گیا۔ انتخابی مہم کے سلسلے میں تین روز یہاں گزارنے کا پروگرام بنا کر آئے مسٹر مودی خصوصی طیارے سے بابت پور واقع لال بہادر شاستری کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پہنچے جہاں سے وہ فوج کے ہیلی کاپٹر سے بی ایچ یو کے ہیلی پیڈ پہنچے۔ ہیلی پیڈ پر بی جے پی صدر امت شاہ سمیت کچھ دیگر رہنماؤں نے ان کا استقبال کیا۔

  • یہ روڈ شو مقررہ وقت سے تقریباً ایک گھنٹے تاخیر سے شروع ہوا۔ روڈ شو سے پہلے مسٹر مودی نے لنکا واقع کاشی ہندو یونیورسٹی (بی ایچ یو) کے مرکزی دروازے پر بھارت رتن مهامنا پنڈت مدن موہن مالویہ کے مجسمے پر گلہائے عقیدت پیش کئے۔شام تقریباً دو بجے تک مسٹر مودی کا یہ روڈ شو جاری رہے گا۔

    یہ روڈ شو مقررہ وقت سے تقریباً ایک گھنٹے تاخیر سے شروع ہوا۔ روڈ شو سے پہلے مسٹر مودی نے لنکا واقع کاشی ہندو یونیورسٹی (بی ایچ یو) کے مرکزی دروازے پر بھارت رتن مهامنا پنڈت مدن موہن مالویہ کے مجسمے پر گلہائے عقیدت پیش کئے۔شام تقریباً دو بجے تک مسٹر مودی کا یہ روڈ شو جاری رہے گا۔

  • اسسی گھاٹ کے کنارے واقع اسسی محلے میں اسکول کےطلبہ نے مسٹر مودی کا استقبال کیا۔ منڈیروں ، چھتوں پر کھڑی عورتوں نے وزیر اعظم پر پھولوں کی بارش کی۔ گلیوں اور چوراہوں پر تل رکھنے کی جگہ نہیں تھی۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے لوگ اپنے رکن پارلیمنٹ کی ایک جھلک پانے کے لئے بیتاب نظر آئے۔

    اسسی گھاٹ کے کنارے واقع اسسی محلے میں اسکول کےطلبہ نے مسٹر مودی کا استقبال کیا۔ منڈیروں ، چھتوں پر کھڑی عورتوں نے وزیر اعظم پر پھولوں کی بارش کی۔ گلیوں اور چوراہوں پر تل رکھنے کی جگہ نہیں تھی۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے لوگ اپنے رکن پارلیمنٹ کی ایک جھلک پانے کے لئے بیتاب نظر آئے۔

  • غیر ملکی سیاحوں پر بھی مسٹر مودی کا جادو سر چڑھ کر بولا۔غیر ملکی سیاح بھی بی جے پی کے پرچم لہرا رہے تھے اور سر پر بھگوا ٹوپی لگائے ہوئے تھے۔

    غیر ملکی سیاحوں پر بھی مسٹر مودی کا جادو سر چڑھ کر بولا۔غیر ملکی سیاح بھی بی جے پی کے پرچم لہرا رہے تھے اور سر پر بھگوا ٹوپی لگائے ہوئے تھے۔

  •  اس دوران نوجوان تصویریں لینے میں مصروف تھے۔ ڈھول نگاڑوں کے درمیان مسٹر مودی کے نام کے نعرے لگ رہے تھے۔ استقبال سے خوش مسٹر مودی ہاتھ ہلا کر بھیڑ کا سلام قبول کر رہے تھے۔

    اس دوران نوجوان تصویریں لینے میں مصروف تھے۔ ڈھول نگاڑوں کے درمیان مسٹر مودی کے نام کے نعرے لگ رہے تھے۔ استقبال سے خوش مسٹر مودی ہاتھ ہلا کر بھیڑ کا سلام قبول کر رہے تھے۔

  • سات کلومیٹر سے زیادہ فاصلہ طے کرنے والے اس روڈ شو کے دوران سیکورٹی کے چاق و چوبند انتظامات کئے گئے ہیں۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے جوانوں کے علاوہ چھتوں پر بھی سیکورٹی فورس کی تعیناتی کی گئی ہے۔

    سات کلومیٹر سے زیادہ فاصلہ طے کرنے والے اس روڈ شو کے دوران سیکورٹی کے چاق و چوبند انتظامات کئے گئے ہیں۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے جوانوں کے علاوہ چھتوں پر بھی سیکورٹی فورس کی تعیناتی کی گئی ہے۔

  • روڈ شو کی وجہ سے وارانسی کے ٹریفک کا نظام مفلوج نظر آیا۔ دفتر جانے والوں کو خاصی دقت کا سامنا کرنا پڑا۔

    روڈ شو کی وجہ سے وارانسی کے ٹریفک کا نظام مفلوج نظر آیا۔ دفتر جانے والوں کو خاصی دقت کا سامنا کرنا پڑا۔

  • لنکا واقع سنگھ دروازے پر ہزاروں بی جے پی کارکن موجود تھے.۔کارکن ہاتھوں میں پارٹی کے پرچم اور اسی کے رنگ والے غبارے لئے ہوئے تھے۔ سنگھ دروازے پر موجود ہزاروں لوگوں نے مسٹر مودی کا پھولوں کی مالاؤں سے استقبال کیا۔ انہوں نے ہاتھ ہلا کر لوگوں کا سلام قبول کیا۔

    لنکا واقع سنگھ دروازے پر ہزاروں بی جے پی کارکن موجود تھے.۔کارکن ہاتھوں میں پارٹی کے پرچم اور اسی کے رنگ والے غبارے لئے ہوئے تھے۔ سنگھ دروازے پر موجود ہزاروں لوگوں نے مسٹر مودی کا پھولوں کی مالاؤں سے استقبال کیا۔ انہوں نے ہاتھ ہلا کر لوگوں کا سلام قبول کیا۔

  • یہ روڈ شو مقررہ وقت سے تقریباً ایک گھنٹے تاخیر سے شروع ہوا۔ روڈ شو سے پہلے مسٹر مودی نے لنکا واقع کاشی ہندو یونیورسٹی (بی ایچ یو) کے مرکزی دروازے پر بھارت رتن مهامنا پنڈت مدن موہن مالویہ کے مجسمے پر گلہائے عقیدت پیش کئے۔شام تقریباً دو بجے تک مسٹر مودی کا یہ روڈ شو جاری رہے گا۔
  • اسسی گھاٹ کے کنارے واقع اسسی محلے میں اسکول کےطلبہ نے مسٹر مودی کا استقبال کیا۔ منڈیروں ، چھتوں پر کھڑی عورتوں نے وزیر اعظم پر پھولوں کی بارش کی۔ گلیوں اور چوراہوں پر تل رکھنے کی جگہ نہیں تھی۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے لوگ اپنے رکن پارلیمنٹ کی ایک جھلک پانے کے لئے بیتاب نظر آئے۔
  • غیر ملکی سیاحوں پر بھی مسٹر مودی کا جادو سر چڑھ کر بولا۔غیر ملکی سیاح بھی بی جے پی کے پرچم لہرا رہے تھے اور سر پر بھگوا ٹوپی لگائے ہوئے تھے۔
  •  اس دوران نوجوان تصویریں لینے میں مصروف تھے۔ ڈھول نگاڑوں کے درمیان مسٹر مودی کے نام کے نعرے لگ رہے تھے۔ استقبال سے خوش مسٹر مودی ہاتھ ہلا کر بھیڑ کا سلام قبول کر رہے تھے۔
  • سات کلومیٹر سے زیادہ فاصلہ طے کرنے والے اس روڈ شو کے دوران سیکورٹی کے چاق و چوبند انتظامات کئے گئے ہیں۔ سڑک کے دونوں جانب کھڑے جوانوں کے علاوہ چھتوں پر بھی سیکورٹی فورس کی تعیناتی کی گئی ہے۔
  • روڈ شو کی وجہ سے وارانسی کے ٹریفک کا نظام مفلوج نظر آیا۔ دفتر جانے والوں کو خاصی دقت کا سامنا کرنا پڑا۔
  • لنکا واقع سنگھ دروازے پر ہزاروں بی جے پی کارکن موجود تھے.۔کارکن ہاتھوں میں پارٹی کے پرچم اور اسی کے رنگ والے غبارے لئے ہوئے تھے۔ سنگھ دروازے پر موجود ہزاروں لوگوں نے مسٹر مودی کا پھولوں کی مالاؤں سے استقبال کیا۔ انہوں نے ہاتھ ہلا کر لوگوں کا سلام قبول کیا۔

تازہ ترین تصاویر