مالیگاوں کی ٹوپیاں ریاست میں ہی نہیں بلکہ بیرون ریاست بھی ہیں مشہور ، دیکھیں سال رواں کیسا ہے بازار

Jun 23, 2017 04:32 PM IST
1 of 7
  • جیسے جیسے عید کا دن قریب آ رہا ہے، مالیگاؤں کی غریب مسلم خواتین کے ہاتھوں کی رفتار بڑھتی جا رہی ہے اور ان کے گھر میں رنگین ٹوپیوں کا ڈھیر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ا ن کی آنکھوں کی چمک بھی بڑھتی جا رہی ہے ۔ یہاں کی ٹوپیاں نہ صرف مہاراشٹر بلکہ دیگر ریاستوں میں بھی کافی پسند کی جاتی ہیں ۔

    جیسے جیسے عید کا دن قریب آ رہا ہے، مالیگاؤں کی غریب مسلم خواتین کے ہاتھوں کی رفتار بڑھتی جا رہی ہے اور ان کے گھر میں رنگین ٹوپیوں کا ڈھیر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ا ن کی آنکھوں کی چمک بھی بڑھتی جا رہی ہے ۔ یہاں کی ٹوپیاں نہ صرف مہاراشٹر بلکہ دیگر ریاستوں میں بھی کافی پسند کی جاتی ہیں ۔

  • مالیگاؤں شہر جہاں کی 75 فیصد آبادی مسلمانوں کی ہے ۔ رمضان کے مبارک مہینےمیں لوگ سال بھر کی عبادت کی چیزیں خریدتے ہیں ۔ جس میں قرآن شریف سے لے کر مصلے اور ٹوپی بھی شامل ہے ۔

    مالیگاؤں شہر جہاں کی 75 فیصد آبادی مسلمانوں کی ہے ۔ رمضان کے مبارک مہینےمیں لوگ سال بھر کی عبادت کی چیزیں خریدتے ہیں ۔ جس میں قرآن شریف سے لے کر مصلے اور ٹوپی بھی شامل ہے ۔

  • مالیگائوں شہر میں خاص قسم کی ٹوپیاں تیار کی جاتی ہیں۔ ان ٹوپیوں کو خواتین اپنے ہاتھوں سے بناتی ہیں، جن کی قیمت 100 روپے سے لیکر 350 تک ہوتی ہے ۔

    مالیگائوں شہر میں خاص قسم کی ٹوپیاں تیار کی جاتی ہیں۔ ان ٹوپیوں کو خواتین اپنے ہاتھوں سے بناتی ہیں، جن کی قیمت 100 روپے سے لیکر 350 تک ہوتی ہے ۔

  •  شہر میں آس پاس کے علاقوں سے لوگ ٹوپیاں خریدنے کے لئے آتے ہیں ۔

    شہر میں آس پاس کے علاقوں سے لوگ ٹوپیاں خریدنے کے لئے آتے ہیں ۔

  •  جو لوگ ہمیشہ ٹوپی پہنتے ہیں ، ان لوگوں کے لئے مالیگاؤں ٹوپیوں کا مرکز ہے ۔

    جو لوگ ہمیشہ ٹوپی پہنتے ہیں ، ان لوگوں کے لئے مالیگاؤں ٹوپیوں کا مرکز ہے ۔

  • یہاں ہر قسم اور ہرسائز کی ٹوپیاں بآسانی دستیاب ہوجاتی ہیں ۔

    یہاں ہر قسم اور ہرسائز کی ٹوپیاں بآسانی دستیاب ہوجاتی ہیں ۔

  •  ٹوپیوں سے شہرکی غریب خواتین کو روزگار بھی مہیا ہوجاتا ہے ۔

    ٹوپیوں سے شہرکی غریب خواتین کو روزگار بھی مہیا ہوجاتا ہے ۔

  • مالیگاؤں شہر جہاں کی 75 فیصد آبادی مسلمانوں کی ہے ۔ رمضان کے مبارک مہینےمیں لوگ سال بھر کی عبادت کی چیزیں خریدتے ہیں ۔ جس میں قرآن شریف سے لے کر مصلے اور ٹوپی بھی شامل ہے ۔
  • مالیگائوں شہر میں خاص قسم کی ٹوپیاں تیار کی جاتی ہیں۔ ان ٹوپیوں کو خواتین اپنے ہاتھوں سے بناتی ہیں، جن کی قیمت 100 روپے سے لیکر 350 تک ہوتی ہے ۔
  •  شہر میں آس پاس کے علاقوں سے لوگ ٹوپیاں خریدنے کے لئے آتے ہیں ۔
  •  جو لوگ ہمیشہ ٹوپی پہنتے ہیں ، ان لوگوں کے لئے مالیگاؤں ٹوپیوں کا مرکز ہے ۔
  • یہاں ہر قسم اور ہرسائز کی ٹوپیاں بآسانی دستیاب ہوجاتی ہیں ۔
  •  ٹوپیوں سے شہرکی غریب خواتین کو روزگار بھی مہیا ہوجاتا ہے ۔

تازہ ترین تصاویر