کشمیر میں جنگجو اور شہری ہلاکتوں کے خلاف مکمل ہڑتال، سری نگر میں پابندیاں نافذ

Aug 02, 2017 04:13 PM IST
1 of 8
  • وادی کشمیر اور جموں خطہ کے بانہال میں بدھ کے روز لشکر طیبہ کے ڈویژنل کمانڈر یا کشمیر چیف ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں اور 2 عام نوجوانوں کی ہلاکت کے خلاف مکمل ہڑتال کی وجہ سے معمول کی زندگی مفلوج ہوکر رہ گئی۔ انتظامیہ نے جنگجوؤں اور شہری ہلاکتوں کے خلاف احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر گرمائی دارالحکومت سری نگر کے سات پولیس تھانوں کے تحت آنے والے علاقوں میں کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کردی ہیں۔

    وادی کشمیر اور جموں خطہ کے بانہال میں بدھ کے روز لشکر طیبہ کے ڈویژنل کمانڈر یا کشمیر چیف ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں اور 2 عام نوجوانوں کی ہلاکت کے خلاف مکمل ہڑتال کی وجہ سے معمول کی زندگی مفلوج ہوکر رہ گئی۔ انتظامیہ نے جنگجوؤں اور شہری ہلاکتوں کے خلاف احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر گرمائی دارالحکومت سری نگر کے سات پولیس تھانوں کے تحت آنے والے علاقوں میں کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کردی ہیں۔

  •  وادی میں منگل کو صورتحال اُس وقت کشیدہ رخ اختیار کرگئی جب جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے ہاکری پورہ میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں لشکر طیبہ کے چیف کمانڈر ابو دوجانہ اور ان کے ساتھی عارف نبی ڈار عروف رحمان کی ہلاکت کی خبر وادی کے اطراف وکناف میں جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی۔

    وادی میں منگل کو صورتحال اُس وقت کشیدہ رخ اختیار کرگئی جب جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے ہاکری پورہ میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں لشکر طیبہ کے چیف کمانڈر ابو دوجانہ اور ان کے ساتھی عارف نبی ڈار عروف رحمان کی ہلاکت کی خبر وادی کے اطراف وکناف میں جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی۔

  • منگل کو وادی کے قریب ایک درجن مقامات پر ہونے والے احتجاجی مظاہروں کے دوران سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک عام نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔ ہاکری پورہ میں تصادم آرائی کے مقام پر فردوس احمد خان نامی ایک عام نوجوان اس وقت جاں بحق ہوگیا جب سیکورٹی فورسز نے آزادی حامی احتجاجی مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے اور مبینہ طور پر چھرے والی بندوقوں کا شدید استعمال کیا۔

    منگل کو وادی کے قریب ایک درجن مقامات پر ہونے والے احتجاجی مظاہروں کے دوران سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک عام نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔ ہاکری پورہ میں تصادم آرائی کے مقام پر فردوس احمد خان نامی ایک عام نوجوان اس وقت جاں بحق ہوگیا جب سیکورٹی فورسز نے آزادی حامی احتجاجی مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے اور مبینہ طور پر چھرے والی بندوقوں کا شدید استعمال کیا۔

  • سیکورٹی فورسز کی احتجاجی مظاہرین پر فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والے نوجوانوں میں ایک اور زخمی نوجوان عقیل احمد بٹ بدھ کی صبح شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں دم توڑ گیا ۔ مہلوک نوجوان ضلع پلوامہ کے گبرپورہ ہال کا رہنے والا تھا۔ گبرپورہ میں بدھ کو عقیل احمد کی تدفین کے بعد احتجاجی نوجوانوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین شدید جھڑپیں ہوئیں جس کے دوران سیکورٹی فورسز نے آنسو گیس کے گولوں کا استعمال کیا۔ کشمیری علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے جنوبی کشمیر میں مسلح تصادم کے بعد احتجاجی مظاہروں کے دوران عام شہریوں کو ہلاک جبکہ درجنوں دیگر کو زخمی کرنے کے خلاف آج پورے کشمیر میں ہمہ گیر احتجاجی ہڑتال کی کال دی تھی۔ تاہم انتظامیہ نے ہڑتال کے دوران احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر سری نگر کے سات پولیس تھانوں میں کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کردیں۔

    سیکورٹی فورسز کی احتجاجی مظاہرین پر فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والے نوجوانوں میں ایک اور زخمی نوجوان عقیل احمد بٹ بدھ کی صبح شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں دم توڑ گیا ۔ مہلوک نوجوان ضلع پلوامہ کے گبرپورہ ہال کا رہنے والا تھا۔ گبرپورہ میں بدھ کو عقیل احمد کی تدفین کے بعد احتجاجی نوجوانوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین شدید جھڑپیں ہوئیں جس کے دوران سیکورٹی فورسز نے آنسو گیس کے گولوں کا استعمال کیا۔ کشمیری علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے جنوبی کشمیر میں مسلح تصادم کے بعد احتجاجی مظاہروں کے دوران عام شہریوں کو ہلاک جبکہ درجنوں دیگر کو زخمی کرنے کے خلاف آج پورے کشمیر میں ہمہ گیر احتجاجی ہڑتال کی کال دی تھی۔ تاہم انتظامیہ نے ہڑتال کے دوران احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر سری نگر کے سات پولیس تھانوں میں کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کردیں۔

  • اس کے علاوہ وادی کے تمام تعلیمی اداروں میں آج تعطیل کا اعلان کیا گیا۔ صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمد خان نے کہا ’وادی میں تمام کالجوں اور اسکولوں کو آج احتیاطی طور پر بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے‘۔ اس کے علاوہ کشمیر یونیورسٹی اور اسلامک یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے آج لئے جانے والے تمام امتحانات کردیے۔ وادی میں منگل کو متعدد مقامات پر طالب علموں نے اسکولوں اور کالجوں سے باہر آکر شدید آزادی حامی نعرے بازی کی جن کی بعدازاں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپیں ہوئیں۔

    اس کے علاوہ وادی کے تمام تعلیمی اداروں میں آج تعطیل کا اعلان کیا گیا۔ صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمد خان نے کہا ’وادی میں تمام کالجوں اور اسکولوں کو آج احتیاطی طور پر بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے‘۔ اس کے علاوہ کشمیر یونیورسٹی اور اسلامک یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے آج لئے جانے والے تمام امتحانات کردیے۔ وادی میں منگل کو متعدد مقامات پر طالب علموں نے اسکولوں اور کالجوں سے باہر آکر شدید آزادی حامی نعرے بازی کی جن کی بعدازاں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپیں ہوئیں۔

  • سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا ’امن وامان کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر ضلع سری نگر کے سات پولیس تھانوں بشمول خانیار، نوہٹہ، صفا کدل، ایم آر گنج، رعناواری، کرال کڈھ اور مائسمہ میں دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت پابندیاں نافذ کی گئی ہیں۔ یہ پابندیاں اگلے احکامات تک جاری رہیں گی‘۔ سری نگر کے پابندی والے علاقوں میں سینکڑوں کی تعداد میں ریاستی پولیس اور پیرا ملٹری فورسز کے اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ تمام راستوں بشمول نالہ مار روڑ کو خانیار سے لیکر چھتہ بل تک خاردار تاروں سے سیل کردیا گیا ہے۔

    سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا ’امن وامان کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر ضلع سری نگر کے سات پولیس تھانوں بشمول خانیار، نوہٹہ، صفا کدل، ایم آر گنج، رعناواری، کرال کڈھ اور مائسمہ میں دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت پابندیاں نافذ کی گئی ہیں۔ یہ پابندیاں اگلے احکامات تک جاری رہیں گی‘۔ سری نگر کے پابندی والے علاقوں میں سینکڑوں کی تعداد میں ریاستی پولیس اور پیرا ملٹری فورسز کے اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ تمام راستوں بشمول نالہ مار روڑ کو خانیار سے لیکر چھتہ بل تک خاردار تاروں سے سیل کردیا گیا ہے۔

  • نالہ مار روڑ کے دونوں اطراف رہائش پذیر لوگوں نے بتایا کہ انہیں اپنے گھروں سے باہر آنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔ پائین شہر میں واقع تاریخی جامع مسجد کے اردگرد سینکڑوں کی تعداد میں سیکورٹی فورس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ ادھر سیول لائنز میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ (جے کے ایل ایف) کے گڑھ مانے جانے والے مائسمہ کی طرف جانے والے تمام راستوں کو خاردار تار سے سیل کردیا گیا ہے۔ مائسمہ میں امن وامان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لئے سیکورٹی فورسزکی بھاری جمعیت تعینات کردی گئی ہے۔

    نالہ مار روڑ کے دونوں اطراف رہائش پذیر لوگوں نے بتایا کہ انہیں اپنے گھروں سے باہر آنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔ پائین شہر میں واقع تاریخی جامع مسجد کے اردگرد سینکڑوں کی تعداد میں سیکورٹی فورس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ ادھر سیول لائنز میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ (جے کے ایل ایف) کے گڑھ مانے جانے والے مائسمہ کی طرف جانے والے تمام راستوں کو خاردار تار سے سیل کردیا گیا ہے۔ مائسمہ میں امن وامان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لئے سیکورٹی فورسزکی بھاری جمعیت تعینات کردی گئی ہے۔

  • دریں اثنا وادی اور جموں خطہ کے بانہال میں بدھ کے روز ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں اور 2 عام نوجوانوں کی ہلاکت کے خلاف علیحدگی پسند قیادت کی اپیل پر مکمل ہڑتال رہی۔ سری نگر کے جن علاقوں کو پابندیوں سے مستثنیٰ رکھا گیا ہے، میں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ اور اسٹیٹ روڑ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی گاڑیاں سڑکوں سے غائب رہیں۔

    دریں اثنا وادی اور جموں خطہ کے بانہال میں بدھ کے روز ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں اور 2 عام نوجوانوں کی ہلاکت کے خلاف علیحدگی پسند قیادت کی اپیل پر مکمل ہڑتال رہی۔ سری نگر کے جن علاقوں کو پابندیوں سے مستثنیٰ رکھا گیا ہے، میں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ اور اسٹیٹ روڑ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی گاڑیاں سڑکوں سے غائب رہیں۔

  •  وادی میں منگل کو صورتحال اُس وقت کشیدہ رخ اختیار کرگئی جب جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے ہاکری پورہ میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں لشکر طیبہ کے چیف کمانڈر ابو دوجانہ اور ان کے ساتھی عارف نبی ڈار عروف رحمان کی ہلاکت کی خبر وادی کے اطراف وکناف میں جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی۔
  • منگل کو وادی کے قریب ایک درجن مقامات پر ہونے والے احتجاجی مظاہروں کے دوران سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ایک عام نوجوان ہلاک جبکہ درجنوں دیگر زخمی ہوگئے۔ ہاکری پورہ میں تصادم آرائی کے مقام پر فردوس احمد خان نامی ایک عام نوجوان اس وقت جاں بحق ہوگیا جب سیکورٹی فورسز نے آزادی حامی احتجاجی مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے اور مبینہ طور پر چھرے والی بندوقوں کا شدید استعمال کیا۔
  • سیکورٹی فورسز کی احتجاجی مظاہرین پر فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والے نوجوانوں میں ایک اور زخمی نوجوان عقیل احمد بٹ بدھ کی صبح شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں دم توڑ گیا ۔ مہلوک نوجوان ضلع پلوامہ کے گبرپورہ ہال کا رہنے والا تھا۔ گبرپورہ میں بدھ کو عقیل احمد کی تدفین کے بعد احتجاجی نوجوانوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین شدید جھڑپیں ہوئیں جس کے دوران سیکورٹی فورسز نے آنسو گیس کے گولوں کا استعمال کیا۔ کشمیری علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے جنوبی کشمیر میں مسلح تصادم کے بعد احتجاجی مظاہروں کے دوران عام شہریوں کو ہلاک جبکہ درجنوں دیگر کو زخمی کرنے کے خلاف آج پورے کشمیر میں ہمہ گیر احتجاجی ہڑتال کی کال دی تھی۔ تاہم انتظامیہ نے ہڑتال کے دوران احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر سری نگر کے سات پولیس تھانوں میں کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کردیں۔
  • اس کے علاوہ وادی کے تمام تعلیمی اداروں میں آج تعطیل کا اعلان کیا گیا۔ صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمد خان نے کہا ’وادی میں تمام کالجوں اور اسکولوں کو آج احتیاطی طور پر بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے‘۔ اس کے علاوہ کشمیر یونیورسٹی اور اسلامک یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے آج لئے جانے والے تمام امتحانات کردیے۔ وادی میں منگل کو متعدد مقامات پر طالب علموں نے اسکولوں اور کالجوں سے باہر آکر شدید آزادی حامی نعرے بازی کی جن کی بعدازاں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپیں ہوئیں۔
  • سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا ’امن وامان کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر ضلع سری نگر کے سات پولیس تھانوں بشمول خانیار، نوہٹہ، صفا کدل، ایم آر گنج، رعناواری، کرال کڈھ اور مائسمہ میں دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت پابندیاں نافذ کی گئی ہیں۔ یہ پابندیاں اگلے احکامات تک جاری رہیں گی‘۔ سری نگر کے پابندی والے علاقوں میں سینکڑوں کی تعداد میں ریاستی پولیس اور پیرا ملٹری فورسز کے اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ تمام راستوں بشمول نالہ مار روڑ کو خانیار سے لیکر چھتہ بل تک خاردار تاروں سے سیل کردیا گیا ہے۔
  • نالہ مار روڑ کے دونوں اطراف رہائش پذیر لوگوں نے بتایا کہ انہیں اپنے گھروں سے باہر آنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔ پائین شہر میں واقع تاریخی جامع مسجد کے اردگرد سینکڑوں کی تعداد میں سیکورٹی فورس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ ادھر سیول لائنز میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ (جے کے ایل ایف) کے گڑھ مانے جانے والے مائسمہ کی طرف جانے والے تمام راستوں کو خاردار تار سے سیل کردیا گیا ہے۔ مائسمہ میں امن وامان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لئے سیکورٹی فورسزکی بھاری جمعیت تعینات کردی گئی ہے۔
  • دریں اثنا وادی اور جموں خطہ کے بانہال میں بدھ کے روز ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں اور 2 عام نوجوانوں کی ہلاکت کے خلاف علیحدگی پسند قیادت کی اپیل پر مکمل ہڑتال رہی۔ سری نگر کے جن علاقوں کو پابندیوں سے مستثنیٰ رکھا گیا ہے، میں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ اور اسٹیٹ روڑ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی گاڑیاں سڑکوں سے غائب رہیں۔

تازہ ترین تصاویر