ہوم » نیوز » امراوتی

سرحد پرتناومیں اضافہ، ایل اوسی پر55 مقامات پرپاکستانی فوج کی گولہ باری

ہندوستانی فضائیہ کی بڑی کارروائی کے بعد گزشتہ روزشام کو پاکستانی فوجیوں نے جموں وکشمیرمیں ایل اوسی پر50 مقامات پربمباری کی تھی۔

  • Share this:
سرحد پرتناومیں اضافہ، ایل اوسی پر55 مقامات پرپاکستانی فوج کی گولہ باری
سرحد پرتناو، حالات کشیدہ

پاکستان کے بالا کوٹ پرمنگل صبح 3:30 بجے ایئراسٹرائیک کے بعد شام کو پاکستان نے ایل اوسی پرزبردست فائرنگ شروع کردی ہے۔ آرمی کے ذرائع کے مطابق 26 فروری کی شام سے پاکستانی فوجیوں نے جموں وکشمیرمیں ایل اوسی پر50 مقامات پربمباری کی تھی۔ یوں توگزشتہ تین دنوں سے مسلسل پاکستانی فوج بارڈرپرگولی باری کررہی ہے، لیکن منگل کی شام اس میں زبردست اضافہ ہوگیا تھا۔ ہندوستانی فوج کا کہنا ہے کہ وہ اس کا منہ توڑجواب دیں گے۔


اس سے قبل ہندوستانی فضائیہ کے 12 میر -2000 لڑاکو طیاروں نے منگل کی صبح لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پارکرکے پاکستان کے بالا کوٹ میں جیش محمد کے دہشت گردانہ کیمپ کوتباہ کردیا۔ جموں وکشمیرکے پلوامہ میں سی آرپی ایف کے قافلے پرہوئے دہشت گردانہ حملے کے تقریباً دوہفتے بعد کئے گئے ہندوستانی فضائیہ کے اس حملے کوسرجیکل اسٹرائیک -2 کا نام دیا جارہا ہے۔


دہشت گردانہ کیمپ پرہندوستانی فضائیہ کے اس حملے کولے کرخارجہ سکریٹری وجے گوکھلے نے کہا 'اس حملے میں جیش کے کئی دہشت گرد، ٹرینرس اورسینئرکمانڈرمارے گئے ہیں۔ اس کیمپ کو جیش محمد سرغنہ مسعود اظہرکا سالا مولانا یوسف اظہرچلا رہا تھا'۔ انہوں نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ اس ایئراسٹرائیک میں بڑی تعداد میں دہشت گرد، ٹرینرس، ٹاپ کمانڈراورجہادی مارے گئے ہیں۔ اس مہم میں مارے گئے دہشت گردوں میں جیش محمد سربراہ مسعود اظہرکا سالا یوسف اظہربھی شامل ہے۔


گوکھلے نے ساتھ ہی یہ بھی کہا کہ ہندوستانی حکومت دہشت گردی کوجڑسے ختم کرنے کے لئے پابند عہد ہے۔ خارجہ سکریٹری نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ قابل اعتماد خفیہ اطلاع ملی تھی کہ 12 دن پہلے پلوامہ حملے کوانجام دینے کے بعد جیش محمد ہندوستان میں ایک اورخودکش دہشت گردانہ حملہ کرنے کی سازش چل رہا تھا۔
First published: Feb 27, 2019 09:13 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading