سترہ سال کی نوکری، 10 ضلع اور 19 ٹرانسفر... کیوں کہ میں ’خان‘ ہوں

مدھیہ پردیش میں ایک افسر کے سوشل میڈیا پوسٹ سے ہنگامہ مچ گیا ہے

Jan 10, 2019 11:57 PM IST | Updated on: Jan 11, 2019 12:05 AM IST
سترہ سال کی نوکری، 10 ضلع اور 19 ٹرانسفر... کیوں کہ میں ’خان‘ ہوں

مدھیہ پردیش میں ایک افسر کے سوشل میڈیا پوسٹ سے ہنگامہ مچ گیا ہے۔ پی ایچ ای محکمہ کے ڈپٹی سکریٹری نیاز احمد خان نے اپنے ہی محکمہ کے پرنسپل سیکرٹری وویک اگروال کے ذریعہ میٹنگ سے باہر نکالے جانے پر ہِراساں کرنے کا الزام لگایا ہے۔ نیاز احمد نے اس سلسلہ میں چیف سیکرٹری سے تحریری شکایت بھی کی ہے۔

نیاز احمد نے کہا ہے کہ خان سرنیم کی وجہ سے ان کے ساتھ امتیازی سلوک کیا جاتا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ 17 سال کی ملازمت میں ان کا 10 اضلاع میں 19 بار تبادلہ کیا جا چکا ہے۔ احمد نے الزام لگایا ہے کہ انہیں ایک خاص مذہب میں عقیدہ رکھنے کی بنیاد پر امتیازی سلوک کا شکار ہونا پڑا۔ ان کے خلاف کوئی جانچ نہیں ہے، اس کے باوجود انہیں مواقع سے محروم کیا جا رہا ہے۔

Loading...

نیاز نے کہا کہ جیسے ہی آپ کے نام کے ساتھ خان جڑ جاتا ہے تو آپ کئی مواقع کے لئے ڈسکوالیفائی کر دئے جاتے ہیں۔ نیاز احمد پی ایچ ای محکمہ کے ڈپٹی سکریٹری ہیں۔ ان کا 17 سال کی ملازمت میں 10 اضلع میں 19 بار تبادلہ ہو چکا ہے۔ نیاز احمد خان اب تک 5 ناول لکھ چکے ہیں۔ علاوہ ازیں وہ تین طلاق پر بھی کتاب لکھ چکے ہیں، جس کی انہیں مخالفت بھی جھیلنی پڑی تھی۔

niyaz

 

Loading...