جھارکھنڈ: ریلوے اسٹیشن پر نکسلیوں کا حملہ ، ڈیڑھ گھنٹے تک ٹرین پر کیا قبضہ

جمشید پور: جھارکھنڈ میں ٹاٹا- گھڑگ پور ریل روٹ پر واقع كوكپاڑا اسٹیشن پر دھنباد - جھاڑگرام پیسنجر ٹرین پر نکسلیوں نے حملہ کر دیا ۔

May 20, 2016 08:22 AM IST | Updated on: May 20, 2016 08:25 AM IST
جھارکھنڈ: ریلوے اسٹیشن پر نکسلیوں کا حملہ ، ڈیڑھ گھنٹے تک ٹرین پر کیا قبضہ

جمشید پور: جھارکھنڈ میں ٹاٹا- گھڑگ پور ریل روٹ پر واقع كوكپاڑا اسٹیشن پر دھنباد - جھاڑگرام پیسنجر ٹرین پر نکسلیوں نے حملہ کر دیا ۔ یہ حملہ جمعرات کی رات تقریبا 9.45 بجے کیا گیا ۔ اس حملے میں شامل نکسلیوں کی تعداد 4 - 5 بتائی جا رہی ہے ۔ بتایا جا رہا ہے کہ نکسلیوں نے تقریبا ایک سے ڈیڑھ گھنٹے تک ٹرین کو اپنے قبضے میں رکھا ۔ اس واقعہ کی وجہ سے دیر رات تک ٹاٹا- كھڑگ پور روٹ پر ٹرینوں کی آمد رفت متاثر رہی ۔

ذرائع کے مطابق نکسلیوں نے پہلے اسٹیشن پر فائرنگ کی اور بعد میں اسٹیشن ماسٹر، ٹرین کے گارڈ اور ڈرائیور کے ساتھ مار پیٹ بھی کی ۔ واقعہ کے بعد مسافروں میں افرا تفری پھیل گئی اور ادھر ادھر بھاگنے لگے۔  تاہم اس واقعہ میں نکسلیوں کی طرف سے کسی کو اغوا کئے جانے کی کوئی خبر نہیں ہے۔

Loading...

میڈیا کی خبروں کے مطابق اسٹیشن پر فائرنگ کرنے کے بعد نکسلی براہ راست اسٹیشن ماسٹر کے کمرے میں گھس گئے اور اس کے بعد گارڈ اور ڈرائیور کو بھی اسٹیشن پر بلا کر پٹائی کی ۔ بتایا جا رہا ہے ڈیڑھ گھنٹے تک ٹرین کو اپنے قبضے میں رکھنے کے بعد وہ مٹوركھام کے راستے سے اندھاريا چھپاتا ہوتے ہوئے چاكليا کی طرف پیدل ہی چلے گئے ۔ سی آر پی ایف کی ایک ٹکڑی  كپاڑا اسٹیشن پر رات کے 11.30 بجے پہنچی ۔

Loading...