وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے دیا پاکستان سرحد پر 1400 نئے بنکر بنانے کا حکم

مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نےآج کہاکہ پاکستان سرحدسےمتصل علاقوں میں رہنےوالےلوگ عام شہری نہیں ہیں۔وہ اسٹریٹیجک نطقۂ نظرسےبہت اہم ہیں اور انہیں اپنی حفاظت کے لئے 1400 نئے بنکر بنانے کا حکم دیا گیا ہے۔

May 31, 2018 03:25 PM IST | Updated on: May 31, 2018 03:25 PM IST
وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے دیا پاکستان سرحد پر 1400 نئے بنکر بنانے کا حکم

مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ: فائل فوٹو۔

بھوپال۔ مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نےآج کہاکہ پاکستان سرحدسےمتصل علاقوں میں رہنےوالےلوگ عام شہری نہیں ہیں۔وہ اسٹریٹیجک نقطۂ نظرسےبہت اہم ہیں اور انہیں اپنی حفاظت کے لئے 1400 نئے بنکر بنانے کا حکم دیا گیا ہے۔سنگھ نے یہاں پریس کانفرنس میں ایک سوال کے جواب میں یہ بات کہی۔ان سے سرحد پارسےہونےوالی گولےباری میں سرحدپر رہنے والےہندوستانی شہریوں کےمتاثرہونے کے بارے میں پوچھا گیا تھا۔ سنگھ نے کہا کہ یقینا یہ عام شہری نہیں ہیں۔یہ تمام شہری اسٹریٹیجک نقطۂ نظرسےبہت اہم ہیں۔ان کی حفاظت کے لئے پاکستان کے سرحدی علاقوں میں 1400 نئے بنکر بنانے کے لئے احکامات دیےگئےہیں۔

بے گھر کشمیری پنڈتوں کی بحالی کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت اس کے لئے پرعزم ہے۔مرکزی حکومت نے اس کےلئےبجٹ کا بھی التزام کیاہے۔اب جموں و کشمیر حکومت کو زمین کی تخصیص کرنا ہے۔وہاں کی حکومت کو ایسا کرنے لےلے کہا گیا ہے۔زمین ملنے کے بعد اسےفوراً کیا جائے گا۔

ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان تعلقات ایک حساس مسئلہ ہے۔ہندوستان یقینی طور پر تعلقات کومعمول پرلاناچاہتا ہے۔ لیکن اس کے لئےسب سے پہلے پڑوسی ملک کودہشت گردوں کی حمایت سےگریز کرناہوگا۔پاکستان کو اپنے ملک میں بھی دہشت گردی پر کنٹرول کرنا ہوگا۔اگر وہ اس سلسلے میں ہندوستان کا تعاون چاہتاہےتواسےبھی بحسن وخوبی انجام دیا جاسکتا ہے۔

Loading...

Loading...