پورن دکھا کر سننے اور بولنے سے معذورلڑکیوں کی کرتا تھا عصمت دری

تین سننے وبولنے سے معذور (گونگی و بہری) لڑکیوں نے سائن لینگویج یعنی اشارۃً زبان (اشارے ) کے ذریعے یہ الزام لگائے ہیں۔ ان لڑکیوں نے ایک دیگر لڑکی کے ساتھ بھی جنسی استحصال ہونے کی بات پولیس کو بتائی ہے۔

Aug 11, 2018 04:59 PM IST | Updated on: Aug 11, 2018 05:48 PM IST
پورن دکھا کر سننے اور بولنے سے معذورلڑکیوں کی کرتا تھا عصمت دری

ملزم اشون شرما

مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال کے ایک پرائیویٹ ہاسٹل میں میں سنے و بولنے سے معذور (گونگی اور بہری) لڑکیوں سے ہوئے ریپ کے معاملے میں ایک اور سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے۔ پولیس کے مطابق پوچھ گچھ کے دوران پتہ چلا کہ ملزم اشونی شرما (پورن)  فحش ویڈیو دکھاکر لڑکیوں  کے ساتھ زیادتی کرتا تھا۔ اس طرح وہ کئی لڑکیوں کو اپنی حوس کا شکار بنا چکا ہے۔ اب تک سامنے آچکی تین سننے ،بولنے سے معذور (گونگی و بہری) لڑکیوں نے سائن لینگویج  یعنی اشارۃً زبان (اشارے ) کے ذریعے یہ الزام لگائے ہیں۔

ان لڑکیوں نے ایک دیگر لڑکی کے ساتھ بھی جنسی استحصال ہونے کی بات پولیس کو بتائی ہے۔ بھوپال کے اودھ پوری میں جس ہاسٹل میں یہ واقعہ سامنے آیا ہے وہ سرکاری مدد پر چلتا تھا ۔ اسی ہاسٹل کی دو لڑکیوں نے بھوپال میں اودھپوری تھانے کے بعد اندور کے ہیرا نگر تھانے میں بھی ایف آئی آر درج کرائی ہے۔ یہ دونوں سگی بہنیں ہیں۔

Loading...

شکایت کے مطابق ملزم ہاسٹل مینجمینٹ اشونی شرما نے ان دونوں کا جنسی استحصال کیا۔ ان دونوں بہنوں نے یہ بھی انکشاف کیا کہ اشونی شرما نے ہاسٹل کی ایک دیگر طالبہ کے ساتھ بھی زیادتی کی تھی اور پھر اس کا اسقاط حمل کرا دیا تھا۔ وہ طالبہ اب لاپتہ ہے اس کی تلاش جاری ہے۔

اس سے پہلے ریپ معاملے کے ملزم اشونی شرما کے دو دن کی پولیس ریمانڈ پر بھیج دیا گیا ہے۔ پولیس نے اسے جمعہ کو عدالت میں پیش کیا۔ عدالت نے اسے دو دن کی ریمانڈ پر پولیس کو سونپ دیا۔ ملزم ہاسٹل مینجمینٹ پر تین ایف آئی آر درج چکی ہے۔ پولیس نے بتایا کہ پوچھ گچھ میں اور بھی خلاصے ہو سکتے ہیں۔

غور طلب ہے کہ بھوپال میں ہوئے اس معاملے کا انکشاف جمعرات کو ہوا ہے۔ سی ایم شوراج سنگھ چوہان نے اس واقعے پر افسوس ظاہر کرتے ہوئے جمعے کی صبح سچو اور ڈی جی پی کے ساتھ میٹنگ کی تھی۔ انہوں نے افسروں کو ہدایت دی تھی کہ ملزموں کو سزا دلانے کیلئے ضروری قانونی کارروائی وقت پر ہو۔

Loading...