بھوپال شیلٹر ہوم ریپ معاملہ : آپریٹر کی درندگی سے تین بچیوں کی ہوئی موت

پولیس نے شکایت کے بعد معاملے کی جانچ کرتے ہوئے تین ایف آئی آر درج کی ہیں۔

Sep 15, 2018 11:10 AM IST | Updated on: Sep 15, 2018 02:22 PM IST
بھوپال شیلٹر ہوم ریپ معاملہ : آپریٹر کی درندگی سے تین بچیوں کی ہوئی موت

ملزم کو لے جاتی پولیس

مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال میں دوسرے شیلٹر ہوم ریپ معاملے میں پولیس نے ہاسٹل آپریٹر ایم پی اوستھی کو گرفتار کر لیا ہے۔ وہیں اس معاملے میں ایک اور انکشاف ہوا ہے۔ جس میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ ہاسٹل کے آپریٹر بچوں پر بری طرح ظلم کرتا تھا۔ اس کے اس کی اسی درندگی کے چلتے قریب 8 سال پہلے تین بچوں کی موت بھی ہو چکی ہے۔

در اصل سننے اور بولنے سے معذور طلبا نے عدالت میں شکایت کی تھی۔ اس شکایت کے بعد کانگریس نے معاملے کو اٹھایا تھا۔ بھوپال کے تمام تھانوں میں کانگریس نے شکایت بھی کی تھی۔

پولیس نے شکایت کے بعد معاملے کی جانچ کرتے ہوئے تین ایف آئی آر درج کی ہیں۔ دو ایف آئی آر ٹی ٹی نگر تھانے میں درج کی ہے۔ جس کی کیس ڈائری ہوشنگ آباد ضلع اور بھوپال کے کھجوری تھانے کو بھیجی گئی ہے۔ اس کے علاوہ تیسری ایف آئی آر کھجوری تھانے میں درج ہوئی ہے۔ یہ ایف آئی آر 10 سننے بولنے سے معذور طلبا کی شکایت پر درج کی گئی ہے۔

Loading...

اس ایف آئی آر میں ہاسٹل آپریٹر اوستھی کے ساتھ اس کے بھائی اور کیئر ٹیکر کے شوہر پر ایف آئی درج کی گئی ہے۔ پولیس معاملے کی جانچ کر رہی ہے۔ معاملے میں طالبات کے بیان کے بعد اور کئی بڑے انکشافات ہونے کا امکان ہے۔

آٹھ سال پہلے زیادتی سے 3 بچوں کی موت

ایک بچی کا جنسی استحصال کے بعد جسم سے خون بہنے سے اس کی موت ہو گئی۔

دوسری کو گیلے کپڑے میں شدید ٹھنڈ میں کھلے میدان میں کھڑا کر دیا تھا۔

تیسرے بچے کا سر دیوار میں مار دیا جس سے اس کی موت ہو گئی۔

Loading...