سنہستھ : سادھوؤں میں خونیں جھڑپ ، جم کر گولیاں اور تلواریں چلیں

اجین : مدھیہ پردیش کی مذہبی نگری اجین میں آہوان اکھاڑے کے انتخابات کے دوران گولیاں چلنے سے چھ سادھو سنت زخمی ہو گئے ہیں۔

May 12, 2016 05:17 PM IST | Updated on: May 12, 2016 05:17 PM IST
سنہستھ : سادھوؤں میں خونیں جھڑپ ، جم کر گولیاں اور تلواریں چلیں

اجین : مدھیہ پردیش کی مذہبی نگری اجین میں آہوان اکھاڑے کے انتخابات کے دوران گولیاں چلنے سے چھ سادھو سنت زخمی ہو گئے ہیں۔ اکھاڑے کے چار منی مہنتوں کے الیکشن کے نتائج آنے کے بعد ہوئے اس تنازعہ کے دوران دھاردار ہتھیاروں کا بھی کھلم کھلا استعمال کیا گیا ۔تمام زخمیوں کو مختلف اسپتالوں میں داخل کرادیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق سادھوؤں کے درمیان یہ تنازع دت اکھاڑا زون میں ہوا، جہاں جمعرات کو الیکشن کے دوران تقریبا 400 سادھو سنت آہوان اکھاڑے میں جمع تھے۔

بتایا جاتا ہے کہ اکھاڑے میں چار منی مهنتوں کے انتخابات کے نتائج کو لے کر سادھوؤں کا ایک گروپ احتجاج کررہا تھا ۔ تاہم دوسرے گروپ نے احتجاج کرنے والے سادھوں کو سمجھاکر اکھاڑے سے واپس بھیج دیا ، مگر تھوڑی دیر بعد سادھو ں کا دوسرا گروپ تقریبا 50 ساتھیوں کے ساتھ وہاں پہنچ گیا اور اس نے مبینہ طور پر دوسرے گروپ پر حملہ بول دیا۔

اسی درمیان کسی سادھو کے ذریعہ گولی چلنے سے افراتفری مچ گئی اور پھردیکھتے ہی دیکھتے سادھو سنتوں میں جم کر مار پیٹ ہوگئی، جس میں دھاردار ہتھیاروں کا بھی کھل کر استعمال کیا گیا۔

Loading...

خونیں جھڑپ کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے جائے واقعہ پر پہنچ کر صورتحال کو قابو میں کیا اور زخمیوں کو علاج کے لئے اسپتال بھیجا۔گولی لگنے سے زخمی اوم پوری اور دھاردار ہتھیار سے زخمی راجندر پوری کو مادھو شہراسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔

زخمی سنتوں میں راہل پوری (25)، راجیش پوری (62)، ناگ بابا، بھولاپوري (70)، سناتن پوری (30)، ناگیندر پوری (40)، راگھو پوری (35) شامل ہیں۔

Loading...