ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

لاک ڈاؤن:تلنگانہ میں غریب عوام کوآج بھی1500روپئےکاانتظار،کب پوراہوگاکے سی آرکاوعدہ 

وزیراعلی ٰکے چندرا شیکھر راؤ نے سفید ریشن کارڈس کے تحت کوور ہونے والے تمام دو کروڑ اسی لا کھ افراد کو فی فرد مفت بارہ کلو چاول اور فی فرد پندرہ سو روپئے بطور کووڈ ریلیف دینے کا اعلان کیا تھا ۔

  • Share this:
لاک ڈاؤن:تلنگانہ میں غریب عوام کوآج بھی1500روپئےکاانتظار،کب پوراہوگاکے سی آرکاوعدہ 
لاک ڈاؤن کے 19دن : چاول ملے ، روپئے نہیں

ریاست تلنگانہ نے کل87 لاکھ 54 ہزار خاندانوں کو سفید ریشن کارڈز کا اجرا کیا ہے ۔جس کے تحت دو کروڑ 80 لاکھ افراد کوور ہوتے ہیں انہیں ہر ماہ فی فرد 6 کلو چاول 1 روپیہ فی کلو کے حساب سے فراہم کیا جاتا ہے۔ جس کے لئے پوری ریاست میں70 ہزار فیر پرایس شاپس قائم کیے گئے ہیں ۔لیکن گذشتہ ماہ لاک ڈاؤن کے اعلان کے بعد عوام کی مشکلات کو مد نظر رکھتے ہوئے وزیراعلی ٰکے چندرا شیکھر راؤ نے سفید ریشن کارڈس کے تحت کوور ہونے والے تمام دو کروڑ اسی لا کھ افراد کو فی فرد مفت 12 کلو چاول اور فی فرد پندرہ سو روپئے بطور کووڈ ریلیف دینے کا اعلان کیا تھا ۔وزیراعلیٰ کے چندرا شیکھر راؤ کے اعلان کے مطابق یکم اپریل سے پوری ریاست میں سفید ریشن کارڈ ہولڈرز کو مفت چاول کی تقسیم کا آغاز ہو چکا ہے۔تاہم راشن پہنچے والے شہریوں کو اس وقت مایوسی ہوئی جب دکانداروں نے انہیں بتایا کہ یہاں انہیں صرف چاول ہی دیئے جائیں گے۔جبکہ 1500روپئے اکاؤنٹ میں ٹراسنفرکیے جائیں گے۔تاہم آج لاک ڈاؤن کے 19 دن ختم ہوگئے ہیں۔ لیکن اب تک غریب عوام کو 1500روپئے نہیں ملے ہیں۔ شہرحیدرآباد سمیت تلنگانہ کے دیگر اضلاع مںی راشن شاپس پر عوام کا ہجوم دیکھا جارہاہے۔لیکن انہیں گھنٹوں انتظار کے بعد بھی چاول نہیں مل رہے ہیں۔ زیادہ ترراشن شاپس پر ہرروزصرف 100صارفین کو ہی چاول دیئے جارہے ہیں۔ جس کی وجہ کئی خاندانوں کو آج تک چاول بھی نصیب نہیں ہوئے ہیں۔حیدرآباد کے کوکٹ ہلی میں واقع علاقہ ایلماں بنڈہ کے رہنے والے شیوا نے نیوز18 اردو کو بتایا کہ وہ ہرروز راشن شاپ پر آرہاہے لیکن انہیں چاول نہیں دیئے جارہے ہیں شیوا کا کہناہے کہ ان کے گھر میں چھ افراد ہے اوروہ لوگوں سے مانگ کرگزارا کررہے ہیں۔ شیوا کا کہناہے کہ لاک ڈاؤن کے سبب عبادتیں گاہ بھی بند ہے نہیں تو وہ مندر، مسجد کے پاس بھیک مانگ کر پیسے جمع کرلیتے اور گھروالوں کو ہو ٹائم کا کھانا نصیب ہوتا۔


حکومت تلنگانہ نے چند عرصۂ پہلے ایسے سفید کارڈ ہولڈرز کو منسوخ کرنا شروع کردیا تھا جو لگاتار تین ماہ سے اپنا ریشن حاصل نہیں کر رہے ہیں لیکن حکومت نے کارڈس کی منسوخی کے عمل کو ملتوی کرتے ہوئے تمام سفید ریشن کارڈ ہولڈرز کو کووڈ ریلیف کا مستحق قرار دیا ہے ۔اس اعلان کے بعد ہزاروں کی تعداد میں سفید ریشن کارڈ رکھنے والے لوگ فائر پرائس شاپس کا رخ کرنے لگے ان میں سے اکثر لوگوں کو یہ امید تھی کہ انہیں مفت چاول کے ساتھ ہی ساتھ نغدی بھی اسی جگہ سے فراہم کی جائے گی لیکن فیر پرائیس شاپس سے انھیں صرف چاول حاصل ہے رہے ہیں جس پر عوام قدرے مایوس ہیں ۔حکام اس ماہ کی ابتدا ہی سے عوام کو یہ یقین دلا رہے ہیں کہ دو تین دن میں رقم فنڈ ٹرانسفر کے ذریعہ انکے اکاونٹس میں جمع کروا دی جائے گی لیکن ایک ہفتہ بعد بھی پیسہ عوام کے اکا ونٹ میں نہیں آیا ۔


کووڈ ریلیف کے تحت تلنگانہ میں سفید ریشن کارڈ ہولڈرز کے علاوہ دوسری ریاست سے یہاں مقیم مزدوروں کیلئے بھی فی فرد بارہ کلو چاول یا گیہوں کا آٹا اور فی فرد پانچ سو روپئے دینے کا اعلان کیا گیا ہے لیکن ان میں بھی چاول یا آٹے کی تقسیم عمل میں لائی جا رہی ہے ان میں نغدی کی تقسیم کب اور کس طرح کی جائے گی یہ ابھی واضح نہیں ہو سکا ۔

First published: Apr 08, 2020 11:04 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading