ہوم » نیوز » عالمی منظر

آج مل جائے گی دنیا کو کووڈ19 ویکسین! آکسفورڈ یونیورسٹی کے محققین کا دعویٰ، پہلا ٹرائل کارگر، ویکسین محفوظ

آکسفورڈ یونیورسٹی (University of Oxford) کے ریسرچرس کے ذریعے 1،077 افراد پر کئے گئے ٹرائل سے پتہ چلا ہے کہ انجیکشن سے ان لوگوں کو اینٹی باڈی اور وہائٹ بلڈ سیلس (White blood cells) ملے ہیں جو کوروناوائرس سے لڑنے کی صلاحیت رکھتےہیں۔ لیکن ابھی یہ ٹرائل تھا جو کامیاب رہا ہے۔

  • Share this:
آج مل جائے گی دنیا کو کووڈ19 ویکسین! آکسفورڈ یونیورسٹی کے محققین کا دعویٰ، پہلا ٹرائل کارگر، ویکسین محفوظ
آکسفورڈ یونیورسٹی (University of Oxford) کے ریسرچرس کے ذریعے 1،077 افراد پر کئے گئے ٹرائل سے پتہ چلا ہے کہ انجیکشن سے ان لوگوں کو اینٹی باڈی اور وہائٹ بلڈ سیلس (White blood cells) ملے ہیں جو کوروناوائرس سے لڑنے کی صلاحیت رکھتےہیں۔ لیکن ابھی یہ ٹرائل تھا جو کامیاب رہا ہے۔

آکسفورڈ یونیورسٹی کے ذریعے ترقی یافتہ کوروناوائرس ویکسین (Coronavirus Vaccine) کو لیکر ایک اچھی خبر سامنے آئی ہے۔ بی بی سی کی ایک خبر کے مطابق آکسفورڈ کے ذریعہ دی گئی ویکسین بلکل محفوظ اورمدافعتی نظام (Immune System) کو بڑھاتی ہے۔ آکسفورڈ یونیورسٹی (University of Oxford) کے ریسرچرس کے ذریعے  1،077 افراد پر کئے گئے ٹرائل سے پتہ چلا ہے کہ انجیکشن سے ان لوگوں کو اینٹی باڈی اور وہائٹ بلڈ سیلس (White blood cells) ملے ہیں جو کوروناوائرس سے لڑنے کی صلاحیت رکھتےہیں۔ لیکن ابھی یہ ہی ٹرائل تھا جو کامیاب رہا ہے۔ اب اس کا دوسرا ٹرائل شروع ہوگا۔ بتادیں کہ برطانیہ نے اس ویکسین کی 100 ملین ڈوز سے بھی زیادہ کا آڈر دیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ پوری دنیا اس وقت سب سے زیادہ جس چیز کا انتظار کررہی ہے وہ کوروناوائرس ویکسین (Coronavirus Vaccine)ہے۔ دنیا میں 6 لاکھ سے زیادہ افراد کی جان لے چکی کووڈ19 وبا کے خاتمے کیلئے ہر کوئی ویکسین کا بے صبری سے انتظار کررہا ہے۔ طبی شعبے کی دنیا کا سب سے بااثر رسالہ ’دی لینسیٹ‘ کے ایڈیٹر کی جانب سے اتوار کے روز کیے گئے ٹویٹ کے بارے میں زبردست بحث ہوئی۔ انہوں نے اتوار کے روز کہا کہ کل (یعنی آج پیر کو) کورونا ویکسین کے نتیجے کا اعلان کیا جائے گا۔



رچرڈ ہارٹن نے ٹویٹ کیا ، 'کل۔ ویکسین۔بس کہہ رہا ہوں. اس ٹویٹ پر کل سے لے کر آج تک کافی چرچا ہعرہی ہے۔ مانا جارہا تھا کہ آکسفورڈ یونیورسٹی کے تیار کردہ ویکسین کے نتائج کے بارے میں آج ایک بڑا اعلان کیا جاسکتا ہے اور ایسا ہی ہوا۔ ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (World Health Organization) اس وقت پوری دنیا میں 140 امیدواروں کی ویکسنوں کی نگرانی کر رہی ہے۔ اس میں سے قریب دو درجن انسانی جانچ (testing) کے مختلف مراحل میں پہنچ چکے ہیں۔

چینی کمپنی بھی ٹرائل کے تیسرے فیز میں جانے کو تیار
چینی کمپنی سینوویک بائیوٹیک برازیل میں ٹرایل کے تیسرے مرحلے میں جانے کو تیار ہے۔ دوسری طرف آکسفورڈ یونیورسٹی / ایسٹرا زینیکایوکے اور II / III ساؤتھ افریقہ۔ برازیل میں تیسرے مرحلے پر ہے۔ جرمنی کی کمپنی بنوٹیک فزر کے ساتھ مل کر ویکسین تیار کرنے کی تیاری کر رہی ہے۔ ہندوستان میں بھی دو ویکسینیں انسانی جانچ کے مرحلے میں ہیں۔
غور طلب ہے کہ اب تک دنیا میں 1 کروڑ 46 لاکھ افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوچکے ہیں۔ اب تک 6 لاکھ 9 ہزار افراد اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں جبکہ 87 لاکھ 46 ہزار 946 افراد نے اس وبا کو کو شکست دی ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jul 21, 2020 10:56 AM IST