ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

کورونا وائرس کے حوالے سے جانچ رپورٹ جاری کرنے میں ایک سنگین غلطی کا ہوا انکشاف، جان کر آپ ہو جائیں گے حیران

ایک ساٹھ سالہ خاتون کو 4 جون کو جاری کئے گئے رپورٹ میں نگیٹیو دکھایا گیا اور بعد میں 5 جون کو جاری کئے گئے رپورٹ میں اسی خاتون کو پازیٹیو دکھایا گیا۔ اس واقعے سے مزکورہ خاتون کے رشتہ داروں نے شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے پورے جانچ عمل پر سوالیہ نشان کھڑ کردیا

  • Share this:
کورونا وائرس کے حوالے سے جانچ رپورٹ جاری کرنے میں ایک سنگین غلطی کا ہوا انکشاف، جان کر آپ ہو جائیں گے حیران
علامتی تصویر

کشمیر میں کورونا واِئرس کے حوالے سے جانچ کرنے اور بعد میں رپورٹ جاری کرنے کے حوالے سے اُس وقت ایک سنگین غلطی کا خلاصہ ہوا جب بانڈی پورہ کے خیار علاقے سے تعلق رکھنے والی ایک ساٹھ سالہ خاتون کو 4 جون کو جاری کئے گئے رپورٹ میں نگیٹیو (coronavirus negative)دکھایا گیا اور بعد میں 5 جون کو جاری کئے گئے رپورٹ میں اسی خاتون کو پازیٹیو (Coronavirus Positive)  دکھایا گیا۔ اس واقعے سے مزکورہ خاتون کے رشتہ داروں نے شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے پورے جانچ عمل پر سوالیہ نشان کھڑ کردیا۔


تفصیلات کے مطابق  خاتون سے جانچ کے لئے نمونے 30 مئی کو حاصل کئے گئے تھے اور خاتون کو اس دوران بانڈی پورہ کے پتوشے علاقے میں ایک ڈگری کالج میں قائم کئے گئے کوارنٹین مرکز میں دیگر درجنوں لوگوں کے ساتھ رکھا گیا تھا 4  جون کو جب خاتون کی رپورٹ نگیٹیو آئی تو اسے  کوارنٹین مرکز میں ہی رکھا گیا تھا اور یوں وہاں رکھے گئے لوگ بنا کسی خوف کے اس خاتون کی رابطے میں آئے تاہم جب 5 جون کو اسی خاتون کو بنا نیا سیمپل لئے پازیٹیو دکھایا گیا تو اس رپورٹ سے نہ صرف بانڈی پورہ میں محکمہ صحت سکتہ میں آگیا بلکہ کوارنٹین مرکز میں رکھے گئے لوگوں پر بھی یہ خبر بجلی بن کر گر پڑی۔


واضح رہے 5 جون کو خاتون کو کورونا وائرس پازیٹیو دکھانے کے بعد اگرچہ محکمہ صحت نے اُسے فوری طور پر آئیسولیشن ہسپتال منتقل تو کردیا تاہم تب تک کوارنٹین سینٹر میں رکھے گئے دیگر لوگوں کے لئے خطرے کی گھنٹی بج چکی تھی ادھر اس معاملے پر بانڈی پورہ میں محکمہ صحت کے افسران کا کہنا تھا کہ دونوں جانچ رپورٹ انھیں سرینگر کے سی ڈی ہسپتال سے موصول ہوئیں اور اس غلطی میں ان کا کوئی رول نہیں ہے واضح رہے معاملہ سامنے آنے کے بعد لوگوں میں کافی تشویش پائی جارہی ہے اور لوگوں نے پورے جانچ عمل پر سوالات کھڑے کر دئیے ہیں ۔

First published: Jun 06, 2020 03:34 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading