உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کورونا وائرس کے 191 مریضوں نے دہلی حکومت کے اڑائے ہوش! یہ ہے وجہ

    فائل فوٹو

    فائل فوٹو

    دہلی حکومت کے افسران اس بات کا پتہ لگانے میں مصروف ہیں کہ آخر 191 لوگوں میں کورونا کیسے پھیل گیا۔ مسلسل ان مریضوں سے بات ہو رہی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی۔ دہلی میں کورونا وائرس کے انفیکشن کے معاملے مسلسل بڑھ رہے ہیں۔ یہاں کورونا مریضوں کی تعداد 1767 تک پہنچ گئی۔ حالانکہ ان میں سے 191 لوگ کورونا کی زد میں کیسے آ گئے، اس کا پتہ ابھی چل نہیں سکا ہے۔ سرکاری اعداد وشمار کے مطابق، 1707 میں سے 1080 مریض نظام الدین کے مرکز سے جڑے ہیں۔ مقامی سطح پر انفیکشن کے کل 353 معاملے ہیں۔ اس کے علاوہ 83 لوگ بیرون ملک سے سفر کر کے دہلی آئے تھے۔ لیکن 191 مریضوں کے بارے میں ابھی کچھ بھی پتہ نہیں چلا ہے۔

      انگریزی اخبار دی انڈین ایکسپریس کے مطابق، دہلی حکومت کے افسران اس بات کا پتہ لگانے میں مصروف ہیں کہ آخر 191 لوگوں میں کورونا کیسے پھیل گیا۔ مسلسل ان مریضوں سے بات ہو رہی ہے۔ ان سے پوچھا جا رہا ہے کہ ان کے رابطے میں آنے والے لوگوں میں کیا کورونا کی کوئی علامت نظر آ رہی ہے۔ ایک سینئر آفیسر نے بتایا کہ حالانکہ یہ تعداد بہت بڑی نہیں ہے، لگاتار ٹریک کئے جا رہے ہیں۔ کئی لوگ پوری جانکاری بھی نہیں دے رہے ہیں۔ اس کے علاوہ کئی لوگ یہ بھول بھی گئے ہیں کہ وہ بیمار ہونے سے پہلے کہاں گئے تھے۔


      میڈیکل اسٹاف کا کہنا ہے کہ کئی مریضوں نے اسپتال کو صحیح صحیح جانکاری بھی نہیں دی ہے۔ حالانکہ ایک آفیسر نے دعویٰ کیا کہ جلد ہی انہیں اس بات کی کامیابی مل جائے گی کہ آخر انہیں کس سے کورونا کا انفیکشن ہوا۔ ماہرین کا ماننا ہے کہ کورونا کے سورس کا پتہ لگانا بیحد ضروری ہے۔ تبھی اسے پھیلنے سے روکا جا سکتا ہے۔
      Published by:Nadeem Ahmad
      First published: