ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بڑی خبر : 2جنوری کو پورے ملک میں ایک ساتھ کورونا ویکسن کا ڈرائی رن

صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت نے جمعرات کو بتایا کہ مرکزی حکومت نے سبھی ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو کورونا ویکسن کے ڈرائی رن کی پوری تیار کرنے کی ہدایت دی ہے۔ صحت کے مرکزی سکریٹری راجیش بھوشن نے آج ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سبھی ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے پرنسیپل سکریٹریوں (صحت)اور دیگر طبی افسروں کے ساتھ اعلی سطحی میٹنگ کی اور کورونا ویکسن کے ڈرائی رن کےلئے نشاندہی کی گئی سبھی سائٹ پر کی گئی تیاریوں کا جائزہ لیا۔

  • Share this:
بڑی خبر : 2جنوری کو پورے ملک میں ایک ساتھ کورونا ویکسن کا ڈرائی رن
بڑی خبر : 2جنوری کو پورے ملک میں ایک ساتھ کورونا ویکسن کا ڈرائی رن

مرکزی حکومت نے ملک کے چار ریاستوں میں کئے گئے کورونا ویکسن کے ڈرائی رن کی کامیابی کے بعد اب فو جنوری کو ملک کی سبھی ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں ڈرائی رن کرنے کا فیصلہ کیا ہے صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت نے جمعرات کو بتایا کہ مرکزی حکومت نے سبھی ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو کورونا ویکسن کے ڈرائی رن کی پوری تیار کرنے کی ہدایت دی ہے۔ صحت کے مرکزی سکریٹری راجیش بھوشن نے آج ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ سبھی ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے پرنسیپل سکریٹریوں (صحت)اور دیگر طبی افسروں کے ساتھ اعلی سطحی میٹنگ کی اور کورونا ویکسن کے ڈرائی رن کےلئے نشاندہی کی گئی سبھی سائٹ پر کی گئی تیاریوں کا جائزہ لیا۔



ڈرائیور رن ٹیکاکاری سے جڑی پورے عمل کو اس طرح سے نافذ کیا جاتا ہے۔جیسے حقیقت میں ٹیکاکاری مہم چلائی جارہی ہو،اس سے کورونا ویکسن کے سلسلے میں بنایا گیا کو ون ایپ بیرونی ماحلو مینکس کی طرح کام کرتا ہے،یہ بھی پتہ چل پائےگا اور ٹیکاکاری کا پورا منصوبہ اور منصوبے کے عمل میں کیا رکاوٹیں آتی ہیں،ان کی پہچان کرکے،ان سے نمٹنے کے طریقے بھی بنائے جاسکیں گے۔اس سے مختلف سطح پر ٹیکاکاری مہم سے جڑنے والے لوگوں کا بھی حوصلہ بڑے گا۔


وزارت صحت نے بتایا کہ ڈرائی رن سبھی ریاستوں کے دارالحکومت میں کم از کم تین سائٹ پر ہوگا۔ کچھ ریاستیں ان علاقوں کو بھی ڈرائی رن میں شامل کریں گی،جو دوردراز ہوں اور جہاں سامان کی آمدورفت میں مشکل ہو۔ مہاراشٹر اور کیرالہ ممکن ہے کہ اپنی دارالحکومت کے علاوہ دیگربڑے شہریوں میں ڈرائی رن کریں گی
Published by: Mirzaghani Baig
First published: Dec 31, 2020 07:05 PM IST