ہوم » نیوز » معیشت

لاک ڈاؤن میں ستا رہا ہے نوکری جانے کا ڈر! تو جانئے حکومت نے کمپنیوں سے کیا کہا

مرکزی حکومت نے تمام ریاستوں کو ایک ایڈوائزری جاری کی ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس یا کووڈ ۔19 کی وجہ سے ملازمین کو نوکری سے نہیں ہٹایا جائے اور نہ ہی ان کی تنخواہ میں کٹوتی کی جائے۔

  • Share this:
لاک ڈاؤن میں ستا رہا ہے نوکری جانے کا ڈر! تو جانئے حکومت نے کمپنیوں سے کیا کہا
لاک ڈاون میں ستا رہا ہے نوکری جانے کا ڈر! تو جانئے حکومت نے کمپنیوں سے کیا کہا

نئی دہلی۔ ہندوستان میں کورونا وائرس کی وجہ سے  لاک ڈاؤن جاری ہے۔ اسی وجہ سے کئی نجی کمپنیوں اور سرکاری اداروں کے ملازمین اپنے اپنے دفاتر نہیں جا پا رہے ہیں۔ ایسی صورتحال میں انہیں نوکری جانے کا ڈر بھی ستا رہا ہے۔ اس معاملے کے پیش نظر وزارت محنت نے کمپنیوں کے لئے ایڈوائزری جاری کی ہے۔ ای پی ایف او اکاؤنٹ ہولڈرز اور کمپنیوں کو وزارت محنت سے متعلق معلومات ایس ایم ایس کے ذریعے بھیج رہا ہے۔




آپ کو بتادیں کہ ای پی ایف او نے ای پی ایس پنشنرز کی پنشن بروقت دینے کی ہدایت دی ہے۔ کورونا وائرس کے وبا کو دیکھتے ہوئے ایمپلائز پروویڈنٹ فنڈ آرگنائزیشن (ای پی ایف او) نے 65 لاکھ پنشنرز کو ای پی ایس (ایمپلائز پنشن اسکیم) کے تحت ماہانہ پنشن وقت پر ادا کرنے کی ہدایت دی ہے۔


کیا ہے حکومت کی ایڈوائزری؟

مرکزی حکومت نے تمام ریاستوں کو ایک ایڈوائزری جاری کی ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس یا کووڈ ۔19 کی وجہ سے ملازمین کو نوکری سے نہیں ہٹایا جائے اور نہ ہی ان کی تنخواہ میں کٹوتی کی جائے۔ یہ ایڈوائزری وزارت محنت و روزگار کے سکریٹری نے جاری کی ہے۔

اگر کوئی ملازم کرونا وائرس کی وجہ سے چھٹی لیتا ہے تو بھی اس کے ڈیوٹی پر آنے جیسا ہی مانا جائے اور اس کے تحت اس کی تنخواہ نہ کاٹی جائے۔
First published: Apr 04, 2020 12:11 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading