ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مال میں انٹری سے پہلے اب کیا جائے گا ایسا، کورونا کے بڑھتے معاملات کے پیش نظر بی ایم سی کا بڑا فیصلہ

حالا ت کے پیش نظر بی ایم سی نے یہ فیصلہ کیا ہے۔ تمام مالس کو اس گائیڈ لا ئن پر عمل کر نےکی ہدایت جاری کی ہے۔ مالس کو ٹیسٹ کا انتظام کرنا ہوگا۔

  • Share this:
مال میں انٹری سے پہلے اب کیا جائے گا ایسا، کورونا کے بڑھتے معاملات کے پیش نظر بی ایم سی کا بڑا فیصلہ
حالا ت کے پیش نظر بی ایم سی نے یہ فیصلہ کیا ہے۔ تمام مالس کو اس گائیڈ لا ئن پر عمل کر نےکی ہدایت جاری کی ہے۔ مالس کو ٹیسٹ کا انتظام کرنا ہوگا۔

مہاراشٹر سمیت ممبئی میں کورونا کے بڑھتے معاملات نے سرکاراور بی ایم سی  کی نیند اڑا دی ہے تو دوسری طرف ممبئی کے مالس میں جانے والوں کے لئے تیزی سے اینٹیجن ٹیسٹ کیا جائے گا۔  حالا ت کے پیش نظر بی ایم سی نے یہ فیصلہ کیا ہے۔ تمام مالس  کو اس گائیڈ لا ئن پر عمل کر  نےکی ہدایت جاری کی ہے۔ مالس کو ٹیسٹ کا انتظام کرنا ہوگا۔ نمونہ کلیکشن کی سہولت تیار کرنے کے لئے  بی ایم سی نے مالس کو 22 مارچ تک کا وقت دیا ہے۔ کورونا کے بڑھتے ہوئے معاملات کے پیش نظر اب مال میں جانے والوں کی کورونا جانچ کی جائے گی۔ بی ایم سی کے مطا بق ممبئی کے تمام مالس میں کورونا وائرس ٹیسٹ کے نمونے لینے کے لئے تیز رفتار اینٹیجن ٹیسٹ کی سہولت فراہم کی جائے گی.ایڈیشنل میونسپل کمشنر سریش کاکانی نے کہا کہ بی ایم سی نے یہ فیصلہ تیزی سے بڑھتے ہوئے  کورونا معاملے کی وجہ سے لیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ 22 مارچ سے تمام مالس کے لئے نمونہ جمع کرنے کی سہولت رکھنا لازمی ہوگا۔ اس کے لئے انٹری گیٹ پر ایک ٹیم تعینات کی جائے گی۔نگییٹیورپورٹ  دکھانےپر ٹیسٹ نہیں کیا جائے گا۔ بی ایم سی کے سینئر افسر نے بتایا علامات والے کسی بھی مریض کی شناخت کرنا مشکل ہے اور ایک بار جب کوئی شخص مال کی طرح کسی بھیڑ والی جگہ پر جاتا ہے تو یہ وائرس پھیل سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کو مال میں داخل ہونے سے پہلے یا تو اپنی منفی رپورٹ دکھانی ہوگی یا پھر ٹیسٹ کے لئے تیار رہنا ہوگا۔ وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے نے مال مالکان کے ساتھ میٹنگ کی۔بی ایم سی کا یہ بھی کہنا ہے کہ ممبئی میں لاک ڈاؤن یا نائٹ کرفیو کا کوئی امکان نہیں ہے۔


اس کے بجائے ، لوگوں کے بھیڑ بھاڑ والے مقامات جیسے بس اسٹاپس ،  پارکنگ .گلی محلے ، آؤٹ ڈور کھانے پینے  کی جگہ پر کڑی جانچ کی جائے گی۔18 مارچ کو ممبئی میں 2877 نئے کیس اور 8 اموات کی اطلاع ملی ہے۔ طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے اور آنے والے وقتوں میں کیسز میں اضافہ ہوسکتا ہے۔


وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے نے حال ہی میں مال مالکان سے ایک میٹنگ تھی اور کووڈ گائڈ لائن پر آخری بار عمل کرنے کا انتباہ دیا تھا۔ مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیش ٹوپے نے بھی کہا ہے کہ لاک ڈاؤن ریاست میں بڑھتے ہوئے معاملات کا حل نہیں ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Mar 19, 2021 03:41 PM IST