ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر میں دفعہ 144 نافذ، شروع ہوگی بریک دا چین مہم، سبھی غیر ضروری کام بند

سی ایم نے کبریک دا چین مہم کا آغاز شروع کرتے ہوئے کہا، میں لاک ڈاؤن کی بات نہیں کر رہا ہوں لیکن کچھ پابندیاں ضروری ہیں۔ روزی۔روٹی ضروری ہے۔ جان بچانا بھی ضروری ہے۔ جان بچانا آج سب سے بڑا مسئلہ ہے۔

  • Share this:
مہاراشٹر میں دفعہ 144 نافذ، شروع ہوگی بریک دا چین مہم، سبھی غیر ضروری کام بند
سی ایم نے کبریک دا چین مہم کا آغاز شروع کرتے ہوئے کہا، میں لاک ڈاؤن کی بات نہیں کر رہا ہوں لیکن کچھ پابندیاں ضروری ہیں۔ روزی۔روٹی ضروری ہے۔ جان بچانا بھی ضروری ہے۔ جان بچانا آج سب سے بڑا مسئلہ ہے۔

ممبئی: مہاراشٹر میں کورونا وائرس کے معاملے کافی تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ ریاست کے وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے (Uddhav Thackeray) وائرس کو لیکر مہاراشٹر کے عوام سے خطاب کر رہے ہیں۔ ریاست میں ہفتے کے روز لاک ڈاؤن اور نائٹ کرفیو پہلے ہی نافذ ہے۔ اس کے باوجود ، ریاست میں روزانہ ریکارڈ سطح کے معاملات سامنے آرہے ہیں۔ ادھو ٹھاکرے نے کہا، اب سخت قدم اٹھانے کا وقت آگیا ہے۔  سی ایم نے کبریک دا چین مہم کا آغاز شروع کرتے ہوئے کہا، میں لاک ڈاؤن کی بات نہیں کر رہا ہوں لیکن کچھ پابندیاں ضروری ہیں۔ روزی۔روٹی ضروری ہے۔ جان بچانا بھی ضروری ہے۔ جان بچانا آج سب سے بڑا مسئلہ ہے۔ آج تک جو پابندیاں لگائی گئی تھیں اس ےاور بڑھا رہا ہوں۔ ریاست میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے۔ اگلے 15 دن تک  پوری ریاست میں غیر ضروری گھومنے پر مکمل پابندی ہے۔ کسی بھی شخص کو صرف اس صورت میں گھر سے ضروری کام سے ہی نکلنا ہوگا ۔ عوام کو یہ فیصلہ  آپ کرنا ہوگا کہ ہم یہ کریں گے اور وہ نہیں کریں گے۔ ادھو ٹھاکرے نے مزید کہا کہ ضروری خدمات کے علاوہ ریاست میں ہر چیز بند رہے گی۔ عوامی بس سروس بند نہیں کی جائے گی -


 




بتادیں کہ مہاراشٹرا میں کورونا وبا (Covid-19 pandemic) وبا کے پھیلاؤ کی وجہ سے مریضوں کو اسپتال میں جگہ نہیں مل پا رہی ہے۔ عالم یہ ہے کہ بعض اوقات مریض زمین پر بیٹھنے پر مجبور ہیں اور کبھی کرسی ٹیبل پر ہیں۔ ایسی صورتحال میں  مہاراشٹرا کی حکومت اور ریلوے نے مہاراشٹر کے نندوربار میں مریضوں کے لئے ٹرین میں آئیسولیشن وارڈ کی سہولت فراہم کی ہے۔

سی ایم ادھو ٹھاکرے نے کہا، ای ۔ کامرس اور پٹرول پمپ کھلے رہیں گے۔ بینک میں کام جاری رہے گا۔ ہوٹل ٹیک اوے اور ہوم ڈلیوری دیں گے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Apr 13, 2021 08:47 PM IST