ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کووڈ-19: یوپی میں 14 اپریل کے بعد لاک ڈاون کھلنےکا امکان کم، تبلیغی جماعت پر حکومت سخت

کورونا وائرس: اونیش اوستھی نے کہا کہ جس طرح سے تبلیغی جماعت میں شامل لوگوں میں کورونا وائرس مثبت آرہا ہے، اس سے ریاست میں مریضوں کی تعداد میں اچانک اضافہ ہوا ہے۔ اگر ایسا ہی رہا تو 14 اپریل کے بعد لاک ڈاون کھولنا ممکن نہیں ہوگا۔

  • Share this:
کووڈ-19: یوپی میں 14 اپریل کے بعد لاک ڈاون کھلنےکا امکان کم، تبلیغی جماعت پر حکومت سخت
ایڈیشنل چیف سکریٹری اونیش اوستھی۔ تصویر: اے این آئی

لکھنو: اترپردیش (Uttar Pradesh) میں مسلسل اضافہ ہورہے کورونا وائرس (Coronavirus) متاثرین مریضوں کی تعداد کے مد نظر یوگی حکومت لاک ڈاون پیریڈ کو 14 اپریل سے آگےبڑھا سکتی ہے۔ ایڈیشنل چیف سکریٹری اونیش اوستھی (Avnish Awasthi) نے پیرکو اس کا اشارہ دیا۔ اونیش اوستھی نے پریس کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئےکہا کہ جس طرح سے تبلیغی جماعت میں شامل لوگوں میں کورونا وائرس کی تصدیق ہورہی ہے۔ اس سے ریاست میں مریضوں کی تعداد میں اچانک اضافہ ہوا ہے۔ اگر ایسا ہی رہا تو 14 اپریل کے بعد لاک ڈاون کھولنا ممکن نہیں ہوگا۔


تبلیغی جماعت کے 105 افراد متاثر


اونیش اوستھی نے بتایا کہ شام 4 بجے تک یوپی میں کورونا وائرس کے متاثرہ مریضوں کی تعداد 305 ہے۔ ان میں سے 105 لوگ وہ ہیں، جنہوں نے دہلی کے مرکز نظام الدین میں ہوئی تقریب میں شرکت کی تھی۔ انہوں نےکہا کہ جس طرح سے تبلیغی جماعت سے منسلک لوگوں میں کورونا کی تصدیق ہو رہی ہے۔ اس سےلاک ڈاون 14 اپریل کے بعد ہٹانا ممکن نہیں ہوگا۔ انہوں نےکہا کہ اب تبلیغی جماعت سے منسلک جن لوگوں میں انفیکشن پایا گیا ہے، ان کے رابطے میں جو بھی آیا ہے ان کو ٹریس کیا جارہا ہے۔


یوپی حکومت نے بتایا ہے کہ کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 305 ہے۔ ان میں 105 جماعت سے وابستہ ہیں۔
یوپی حکومت نے بتایا ہے کہ کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 305 ہے۔ ان میں 105 جماعت سے وابستہ ہیں۔


لاک ڈاون کھولنا ممکن نہیں نظر آرہا ہے

ایڈیشنل چیف سکریٹری نےکہا کہ اگر ایک بھی شخص متاثر ہےتو ایسی حالت میں لاک ڈاون کھولنا ممکن نہیں ہوگا۔ ابھی معاملہ حساس ہے اور احتیاط برتی جارہی ہے۔ انہوں نےکہا کہ تبلیغی جماعت سے منسلک لوگوں کی وجہ سے ہی کئی اضلاع میں انفیکشن پھیلا ہے۔ سب سے زیادہ متاثر مریض آگرہ میں ملے ہیں۔ اس کے بعد میرٹھ، سہارنپور، اعظم گڑھ، لکھنو، بارہ بنکی، شاملی، غازی آباد وغیرہ اضلاع ہیں۔ حکومت اپنی طرف سے سبھی کو ٹریس کررہی ہے۔

اونیش اوستھی نے بتایا کہ تبلیغی جماعت میں شامل ہوئےلوگ آگے آکرخود کا جانچ کروائیں، اس کےلئے وزیراعلیٰ نے اتوار کو سبھی اضلاع کے مذہبی رہنماوں سے بھی بات کی۔ اس بات چیت میں سبھی کا اتفاق تھا کہ انسان کی زندگی زیادہ اہم ہے۔ سبھی لوگوں نے اس میں اپنا تعاون دینے کی بات کہی ہے۔
First published: Apr 06, 2020 09:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading