ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

کورونا کی وبائی بیماری میں والدین کی سرپرستی سے محروم بے سہارا بچوں کا سہارا بنے گی شیوراج حکومت

کتنی ماؤں کی گود سونی ہوگئی تو کتنے بچے کورونا کی وبائی بیماری میں والدین کی سرپرستی سے محروم ہوگئے۔ ایسے مشکل اور نازک دور میں مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ Shivraj Singh Chouhan حکومت نے صرف ایسے بچوں کی سرپرستی کا فیصلہ کیا ہے ۔

  • Share this:
کورونا کی وبائی بیماری میں والدین کی سرپرستی سے محروم  بے سہارا بچوں کا سہارا بنے گی شیوراج حکومت
کتنی ماؤں کی گود سونی ہوگئی تو کتنے بچے کورونا کی وبائی بیماری میں والدین کی سرپرستی سے محروم ہوگئے۔ ایسے مشکل اور نازک دور میں مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ Shivraj Singh Chouhan حکومت نے صرف ایسے بچوں کی سرپرستی کا فیصلہ کیا ہے ۔

کورونا قہر میں عام انسانوں کی زندگی کتنی متاثر ہوئی ہے اس کا بیان بھی لفظوں میں ممکن نہیں ہے۔ کتنے آباد گھر ویرا ن ہوگئے ۔ کتنی ماؤں کی گود سونی ہوگئی تو کتنے بچے کورونا کی وبائی بیماری میں والدین کی سرپرستی سے محروم ہوگئے۔ ایسے مشکل اور نازک دور میں مدھیہ پردیش کی شیوراج سنگھ Shivraj Singh Chouhan حکومت نے نہ صرف ایسے بچوں کی سرپرستی کا فیصلہ کیا ہے بلکہ کورونا قہر میں بے سہارا ہوئے بچوں کے لئے ماہانہ پیشن ،مفت راشن کے ساتھ شیوراج سنگھ حکومت نے ان کی مفت تعلیم کا بھی فیصلہ کیا ہے۔

وزیر اعلی شیوراج سنگھ کہتے ہیں کہ مشکل کی اس گھڑی میں ہم عوام کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ کورونا قہر میں جو بچے اپنوں کی سرپرستی سے محروم ہوئے ہیں حکومت نے ان کی سرپرستی کرنے کا فیصلہ کیاگیا ہے۔ بے سہارا بچوں کے سہارا کے لئے حکومت انہیں ماہانہ پانچ ہزار کی پینشن ،مفت راشن اور مفت تعلیم کا بندو بست کریگی ۔ یہ کوئی اپکار نہیں ہے بلکہ بچوں کا حق ہے اور ہم اس فرض کو ادا کرینگے ۔




ایسے بچوں کی فہرست تیار کرنے کے لئے ضلع انتظامیہ اور چائلڈ لائن کو ہدایت دی گئی ہے۔ کورونا قہر میں گزشتہ ایک سال میں صرف مدھیہ پردیش ہی نہیں بلکہ ملک کی دوسری ریاستوں میں بھی بہت سے بچے والدین کی سرپرستی سے محروم ہوئے ہیں لیکن اس معاملے میں سنجیدگی سے غورکرکے اہم قدم اٹھانے والی شیوراج سنگھ سرکار ملک کی پہلی ایسی حکومت بن گئی ہے جس نے کورونا قہر میں بے سہارا بچوں کا سہارا بننے کا فیصلہ کیا ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: May 14, 2021 10:48 AM IST