உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دہلی پولیس،کورونا وائرس کی وباء پھیلانے کی دے رہی ہے دھمکی : مسلم خواتین کا الزام

    ۔ علامتی تصویر

    ۔ علامتی تصویر

    سب سے بڑی بات یہ  ہے کہ خواتین الزام لگاتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ دہلی پولیس نوجوانوں کو کو دھمکانے کے لیے کرونا وائرس پھیلانے کی دھمکی دے رہی ہے

    • Share this:
    شمال مشرقی دہلی میں گزشتہ دنوں ہوئے فساد کا درد جھیل رہے مصطفی آباد کی تکلیف اب تک ختم نہیں ہوئی ہے ۔اس علاقے میں ابھی راحت رسانی کا کام چل ہی رہا تھا کہ کورونا وائرس کی وباء کی وجہ سے لاک ڈاؤن کردیاگیا۔لوگوں کو  الگ الگ جگہوں پر پناہ لینی پڑی ،لیکن یہ علاقہ اب دہلی پولیس کی جانچ کے راڈارپر ہے ۔کئی لوگوں کی گرفتاریاں ہو رہی  ہیں اس دوران مصطفی آباد کی کچھ مسلم خواتین نے ایک ویڈیو جاری کر دہلی پولیس پر سنسنی خیز الزام عائد کیا ہے ۔

    مسلم خواتین نے مطالبہ کیاہے کہ وزیراعظم اس معاملے میں مداخلت کریں اور ہمارے بچوں کی گرفتاریوں پر روک لگائی  جائے  ۔اس پورے معاملے کی جانکاری ریاستی کانگریس کمیٹی کے نائب صدر علی مہندی نے دی ہے ۔ جو مصطفی آباد علاقے سے امیدوار بھی رہ چکے  ہیں اور انتخاب لڑ چکے ہیں۔ انہوں نے بھی اس ویڈیو کو ٹویٹ کیا ہے۔


    مسلم خواتین نے ویڈیو بیان میں کہا ہے مسلم نوجوانوں کی گرفتاری کے نام پرخواتین کو ہراساں کیاجارہاہے۔ سب سے بڑی بات یہ  ہے کہ خواتین الزام لگاتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ دہلی پولیس نوجوانوں کو کو دھمکانے کے لیے کرونا وائرس پھیلانے کی دھمکی دے رہی ہے اور کرونا وائرس کی وبا کو تفتیش کے دوران ٹول کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔ خواتین نے کہا ہے وزیراعظم نے جس لاک ڈاؤن کا اعلان کیا ہے وہ سب پر نافذ ہوتا ہے ۔ اسی لاک ڈاؤن کے دورا ن اگر اس طرح سے گرفتاری ہوگی تو وہ لاک ڈاؤن نہیں رہے گا ہم اپنے گھروں سے نکل کر وزیراعظم سے درخواست کرنے آئے ہیں۔
    Published by:Mirzaghani Baig
    First published: