உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کورونا کی ممکنہ تیسری لہر کو لیکر Doctors میں خوف، الہ آباد میڈیکل کالج کے جونیئر ڈاکٹروں نے کی ہڑتال

    جونیئر ڈاکٹروں کی دلیل ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں کام کو لیکر ان پرشدید دباؤ کا سامنا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ کام کے بوجھ کی وجہ سے جونیئر ڈاکٹرس پہلے سے ہی صحت کے مسائل سے جوجھ رہے ہیں۔

    جونیئر ڈاکٹروں کی دلیل ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں کام کو لیکر ان پرشدید دباؤ کا سامنا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ کام کے بوجھ کی وجہ سے جونیئر ڈاکٹرس پہلے سے ہی صحت کے مسائل سے جوجھ رہے ہیں۔

    جونیئر ڈاکٹروں کی دلیل ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں کام کو لیکر ان پرشدید دباؤ کا سامنا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ کام کے بوجھ کی وجہ سے جونیئر ڈاکٹرس پہلے سے ہی صحت کے مسائل سے جوجھ رہے ہیں۔

    • Share this:
    الہ آباد:  کورونا وباء کی ممکنہ تیسری لہر کی تباہ کاریوں کے خطرات نے جونیئر ڈاکٹروں   کو خوف میں مبتلا کر دیا ہے۔ جونیئر ڈاکٹروں نے موجودہ صورت حال پر سرکاری اسپتالوں میں کام کرنے سے انکار کر دیا ہے ۔ جونیئر ڈاکٹروں کی دلیل ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں کام کو لیکر ان پرشدید دباؤ کا سامنا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ کام کے بوجھ کی وجہ سے جونیئر ڈاکٹرس پہلے سے ہی صحت کے مسائل سے جوجھ رہے ہیں۔ ایسے میں اب جونیئر ڈاکٹر اپنے آپ کو کسی مزید خطرے میں نہیں ڈالنا چاہتے ۔ اس مسئلے کو لیکر الہ آباد کے سب سے بڑے سرکاری میڈیکل کالج کے جونیئر ڈاکٹروں   Junior doctors of Allahabad Medical College نے ہڑتال strike  شروع کر دی ہے ۔ جوینئر ڈاکٹروں نے الزام لگایا ہے کہ ریاستی حکومت کورونا کی تیسری لہر کے خطرے کو جان بوجھ کر نظر انداز کر رہی ہے ۔

    جونیئر ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ کورونا کی ممکنہ تیسری لہر سے نمٹنے کے لیے حکومت نے سرکاری اسپتالوں میں ہنگامی تیاریاں ابھی تک شروع نہیں کی ہیں ۔ موتی لال نہرو میڈیکل کالج کے جونیئر ڈاکٹروں کاالزام لگایا ہے حکومت ضابطے کے خلاف دباؤ ڈال کر ان سے کروانے کی کوشش کرہی ہے ۔

    ہڑتال پر بیٹھے جونیئر ڈاکٹر آشیش کمار کا کہنا ہے کہ میڈیکل کالج کی نگرانی میں چلنے والے اسپتالوں میں ان سے ضابطے کے خلاف کام لیا جا رہا ہے ۔ڈاکٹروں کا مطالبہ ہے کہ نیٹ میں کامیاب ہونے والے امیدواروں کی کونسلنگ جلد شروع کی جائے  تاکہ سرکاری اسپتالوں میں جونیئر ڈاکٹروں کی کمی کو پورا کیا جا سکے۔ ڈاکٹروں کی کمی کی وجہ سے سرکاری اسپتالوں میں کام کرنے والے جونیئڑ ڈاکٹر شدید ذہنی اور نفسیاتی دباؤ کا شکار ہیں۔

    ڈاکٹروں نے یہ بھی مطالبہ کیا ہے کہ جونیئر ڈاکٹروں سے متعلق قانونی تنازعات کو فاسٹ ٹریک کورٹ کے حوالے کیا جائے ۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: