ہوم » نیوز » وطن نامہ

لاک ڈاؤن بڑھا تو پورے ضلع میں کام پرنہیں لگے گی پابندی! حکومت کا یہ ہے پلان: جانیں یہاں

لاک ڈاؤن کو بڑھانے کو لیکر حکومت نے ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں لیا ہے لیکن اس بات کی امید ظاہر کی جارہی ہے کہ اگر اسے بڑھایاجاتا ہے تو پھر کیا پہلے کے مقابلے زیادہ چھوٹ ملے گی۔ ایسے اشارے مل رہے ہیں کہ ملک می اقتصای سرگرمیوں میں تیزی لانے کیلئے حکومت نئے۔نئے قدم اٹھاسکتی ہے۔

  • Share this:
لاک ڈاؤن بڑھا تو پورے ضلع میں کام پرنہیں لگے گی پابندی! حکومت کا یہ ہے پلان: جانیں یہاں
لاک ڈاؤن کو بڑھانے کو لیکر حکومت نے ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں لیا ہے لیکن اس بات کی امید ظاہر کی جارہی ہے کہ اگر اسے بڑھایاجاتا ہے تو پھر کیا پہلے کے مقابلے زیادہ چھوٹ ملے گی۔ ایسے اشارے مل رہے ہیں کہ ملک می اقتصای سرگرمیوں میں تیزی لانے کیلئے حکومت نئے۔نئے قدم اٹھاسکتی ہے۔

کوروناوائرس(Corornavirus) کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے ان دنوں ملک بھر میں لاک ڈاؤن(Lockdown) نافذ ہے۔ لاک ڈاؤن کا تیسرا فیز17 مئی کو ختم ہو رہا ہے۔ لاک ڈاؤن کو بڑھانے کو لیکر حکومت نے ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں لیا ہے لیکن اس بات کی امید ظاہر کی جارہی ہے کہ اگر اسے بڑھایاجاتا ہے تو پھر کیا پہلے کے مقابلے زیادہ چھوٹ ملے گی۔ ایسے اشارے مل رہے ہیں کہ ملک می اقتصای سرگرمیوں میں تیزی لانے کیلئے حکومت نئے۔نئے قدم اٹھاسکتی ہے۔

یہ ہے پورا پلان۔۔۔

دا ٹائمس آف انڈیا کے مطابق اگر لاک ڈاؤن کو بڑھایا جاتا ہے تو پھر اس مرتبہ کئی تبدیلیاں دیکھنے کو مل سکتی ہیں۔ لاک ڈاؤن کے موجودہ فیز میں کسی بھی علاقے میں کوروناوائرس کے زیادہ کیس آنے کے چلتے پورے ضلع کو ریڈ زون میں ڈال دیا جاتا ہے۔ لیکن اس مرتبہ ایسی منصوبہ بندی کی جارہی ہے کہ پورے ضلع کو ریڈ زون قرار نہ دیکر صرف ان علاقوں کو اس دائرے میں رکھا جائے گا جہاں کوروناوائرس کے مریض ہیں۔ کہا جارہا ہے کہ کوروناوائرس Covid-19 pandemic کے چلتے پیدا ہوئے اقتصادی بحران کو کم کرنے کیلئ کنٹینمینٹ زون کے باہر اقتصادی سرگرمیوں کو منظوری دی جاسکتی ہے۔


لاک ڈاؤن کے تیسرے مرحلے میں حکومت نے گرین زون والے عاقے  میں کئی چھوٹ دی ہیں۔ اس کے باوجود  کوئی بھی تعمیراتی کام میں نہیں آرہا ہے۔ در حقیقت مہاجر مزدوروں کی کثرت سے واپسی کی وجہ سے ان شعبوں کو کافی پریشانی کا سامنا کرنا پڑرہاہے۔ اس کے علاوہ  مینوفیکچرنگ کی کمی کی وجہ سے  سامان کی نقل و حرکت میں کوئی اضافہ نہیں ہوا ہے۔


لاک ڈاؤن کے تیسرے مرحلے میں ، حکومت نے ریڈ ، اورینج اور گرین زون میں مختلف سرگرمیوں کی اجازت دی۔ گرین زون میں بس سروسز اور صنعتیں شروع کرنے کے احکامات بھی دیئے گئے تھے۔ لیکن بہت سی ریاستوں نے کورونا انفیکشن کے پھیلاؤ کے خوف سے دستبردار ہونے پر اتفاق نہیں کیا ہے۔ اب مرکزی حکومت نئی ہدایات کے تحت صرف کنٹینمنٹ زون میں ہی پابندی برقرار رکھ سکتی ہے۔ اس سے باہر ضروری احتیاطی تدابیر کے ساتھ زندگی کو معمول کی طرف بڑھایا جاسکتا ہے۔

First published: May 10, 2020 03:20 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading