உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jabs for Kids: بیرون ملک سفر کرنے والوں کیلئے ویکسین، آج NTAGI کی میٹنگ طئے

    کچھ ماہرین کا خیال ہے کہ اس فرق کو کم کیا جا سکتا ہے۔

    کچھ ماہرین کا خیال ہے کہ اس فرق کو کم کیا جا سکتا ہے۔

    وزیر اعظم نریندر مودی نے گزشتہ ہفتے نوٹ کیا کہ جیسے جیسے کیسز بڑھتے ہیں اور آف لائن اسکول دوبارہ شروع ہوتے ہیں تو تمام اہل بچوں کو جلد از جلد ٹیکے لگانا حکومت کی ترجیح ہے اور اس مقصد کو پورا کرنے کے لیے اسکولوں میں خصوصی پروگراموں کا انعقاد کرنا وقت کی ضرورت ہے۔

    • Share this:
      ہندوستان میں ایک بار پھر عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے کیسوں میں اضافہ ہورہا ہے۔ اسی ضمن میں قومی ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ آن امیونائزیشن (NTAGI) کا کووڈ۔19 ورکنگ گروپ کے ممبران بدھ کے روز دوپہر کو ملاقات کریں گے۔ تاکہ بیرون ملک سفر کرنے والے لوگوں اور خاص کر 5 سال سے لے کر 12 سال کی عمر کے بچوں کو ویکسینیشن کے لیے دوسری خوراک اور احتیاطی خوراک کے درمیان فرق کو کم کرنے پر تبادلہ خیال کیا جا سکے۔

      گزشتہ ہفتے ہندوستان کے ڈرگ ریگولیٹر DCGI نے پانچ سے 12 سال کی عمر کے بچوں کے لیے بائیولیجیکل ای (Biological E) کی ویکسین Corbevax اور چھ سے 12 سال کی عمر کے بچوں کے لیے بھارت بائیوٹیک کے Covaxin کے ہنگامی استعمال کی اجازت دی ہے۔ اس کے بعد مرکزی وزیر صحت منسکھ منڈاویہ نے بتایا کہ فیصلہ (5 سے 12 سال کی عمر کے بچوں کے لیے ویکسینیشن پر) ایک ماہر کمیٹی کی سفارش کی بنیاد پر لیا جائے گا۔

      تاہم جمعہ کو ہونے والی NTAGI کی میٹنگ ایس او پی کو مضبوط بنانے اور ویکسینیشن کے لیے تفصیلی رہنما خطوط کے بارے میں بے نتیجہ رہی۔ اگر نیشنل ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ آن امیونائزیشن کو ڈیٹا تسلی بخش معلوم ہوتا ہے، تو یہ قومی حفاظتی ٹیکوں کے مشن میں چھوٹے بچوں کو شامل کرنے کی راہ ہموار کر سکتا ہے۔

      ہندوستان نے اب تک 12 تا 14 سال کی عمر کے 29.1 ملین بچوں اور 15 تا 17 سال کی عمر کے 101 ملین بچوں کو ٹیکے لگائے ہیں۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے گزشتہ ہفتے نوٹ کیا کہ جیسے جیسے کیسز بڑھتے ہیں اور آف لائن اسکول دوبارہ شروع ہوتے ہیں تو تمام اہل بچوں کو جلد از جلد ٹیکے لگانا حکومت کی ترجیح ہے اور اس مقصد کو پورا کرنے کے لیے اسکولوں میں خصوصی پروگراموں کا انعقاد کرنا وقت کی ضرورت ہے۔

      مزید پڑھیں: راج ٹھاکرے کی مشکلات میں ہوگا اضافہ؟ پہلے سے ہی جاری ہے غیر ضمانتی وارنٹ

      ۔ News18.com نے پہلے اطلاع دی تھی کہ نیشنل ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ آن امیونائزیشن 5 تا 12 سال کی عمر کے لوگوں کو Covid-19 کے لیے ویکسین دینا شروع کرنے کا حتمی فیصلہ کرنے سے پہلے اینٹی باڈی کی سطح کو جانچنے کے لیے بچوں میں سیرو سروے کرانے کی سفارش کر سکتا ہے۔

      مزید پڑھیں: عید پر Rani chatterjee نے پیلی ڈریس میں لوٹی محفل، دیکھیں تصاویر





       

      قومی ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ آن امیونائزیشن کے ایک رکن نے News18.com کو بتایا، "اس بات پر اراکین میں کافی غیر یقینی صورتحال پائی جاتی ہے کہ آیا 5 تا 6 سال کی عمر کے بچوں میں ویکسینیشن مہم کو شروع کرنا درست ہے۔ مگر اومی کرون (Omicron) کی وجہ سے کیسوں میں تازہ اضافے کے ساتھ اراکین نے بچوں میں اینٹی باڈی کی سطح کو جانچنے کے لیے ایک سروے کرنے کی سفارش کی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: