ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر میں کورونا وائرس کے دو نئے کیس پازیٹو، متاثرہ افراد کی کل تعداد 49 ہوئی

مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیس ٹوپے کا بیان سامنے آیا ہے جس میں انہوں نے ممبئی میں دو نئے مریض کورونا وائرس سے پازیٹو ہونے کی تصدیق کی ہے۔ جس میں ایک خاتون ہے جو لندن سے آئی ہے۔ دوسرا مرد جو کہ دبئی سے آیا ہےاس کا تعلق احمد نگر سے ہے اور وہ سینئر سٹیزن ہے۔ ممبئی میں دو افراد وینٹی لیٹر پر ہیں۔ قابل غور ہے کہ ملک میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں دن بہ دن اضافہ ہورہا ہے۔ اب تک ایک 177 سے زیادہ معاملوں کی تصدیق ہوچکی ہے۔

  • Share this:

مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیس ٹوپے کا بیان سامنے آیا ہے جس میں انہوں نے ممبئی میں دو نئے مریض کورونا وائرس سے پازیٹو ہونے کی تصدیق کی ہے۔ جس میں ایک خاتون ہے جو لندن سے آئی ہے۔ دوسرا مرد جو کہ دبئی سے آیا ہےاس کا تعلق احمد نگر سے ہے اور وہ سینئر سٹیزن ہے۔ ممبئی میں دو افراد وینٹی لیٹر پر ہیں۔


مہاراشٹرا میں کوروناوائرس  کے دو نئے کیس سامنے آئے ہیں جس کے بعد ریاست میں متاثرہ افراد کی کل تعداد 49 ہوگئی ہے۔ اسی کے ساتھ ہی  پورے ملک میں کل  177 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہیں۔ قابل غور ہے کہ ملک میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں دن بہ دن اضافہ ہورہا ہے۔ اب تک ایک 177 سے زیادہ معاملوں کی تصدیق ہوچکی ہے۔


وہیں ممبئی میں تقریبا 5 ہزار ڈبے والے 2 لاکھ لوگوں کو کھانا پہنچاتے ہیں۔ بتادیں کہ ڈبہ والوں نے کل سے اپنی خدمات کو 31 مارچ تک معطل رکھنے کا فیصلہ لیاہے۔ آپ کو بتادیں کہ ممبئی اور مضافات میں دفتروں میں کام کاج کرنے والوں کو اب گھر کا بنا کھانا نہیں مل سکے گا۔ کورونا وائرس کے پیش نظر ڈبے والوں نے خدمات معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ڈبے والوں کی میٹنگ میں یہ فیصلہ لیا گیا ہے۔ ممبئی میں پانچ ہزار ڈبے والے ہیں جو تقریبًا دو لاکھ لوگوں تک کھانے کے ڈبے پہنچاتے ہیں۔ اکتیس مارچ تک خدمات معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وہیں تلنگانہ میں سات نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ یہ ساتوں انڈونیشیائی شہری ہیں۔ ان سات نئے معاملوں کے ساتھ تلنگانہ میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد بڑھ کر تیرہ ہوگئی ہے۔ ادھر ملک کی مختلف ریاستوں میں بھی کوروناوائرس کے نئے معاملوں کی تصدیق ہوئی ہے۔ مہاراشٹر میں کوروناوائرس متاثرین کی تعداد بڑ ھ 49تک پہنچ گئی ہے۔ کیرل ، کرناٹک ، دہلی اور اترپردیش سے بھی نئے معاملے روشنی میں آرہے ہیں۔
First published: Mar 19, 2020 03:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading