ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

کوروناکاقہر:وزیراعظم نریندرمودی، صورتحال کا لیں گے جائزہ، 3اعلیٰ سطحیٰ اجلاس کاہوگاانعقاد

وزیراعظم نریندر مودی (Narendra Modi ) نے ٹوئٹ کرکے لکھا ہے کہ ’’آج کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے اعلی سطح کے اجلاس کی صدارت کروں گا۔ اس وجہ سے میں مغربی بنگال نہیں جاؤں گا‘‘۔

  • Share this:
کوروناکاقہر:وزیراعظم نریندرمودی، صورتحال کا لیں گے جائزہ، 3اعلیٰ سطحیٰ اجلاس کاہوگاانعقاد
وزیراعظم نریندرمودی (تصویر:فائل)

وزیراعظم نریندر مودی (Narendra Modi) نے مغربی بنگال میں آج یعنی 23 اپریل کو ہونے والی اپنی انتخابی ریلیاں منسوخ کردیں کیونکہ ملک میں کورونا کے معاملات خطرناک حد تک بڑھ رہے ہیں۔ وہ ملک بھر میں کورونا وائرس کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے 3 اعلی سطحیٰ کے اجلاس کی صدارت کریں گے۔وزیراعظم نریندر مودی نے ٹوئٹ کرکے لکھا ہے کہ ’’آج کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے اعلی سطح کے اجلاس کی صدارت کروں گا۔ اس وجہ سے میں مغربی بنگال نہیں جاؤں گا‘‘۔



مغربی بنگال بی جے پی کے سربراہ دلیپ گھوش (Dilip Ghosh ) کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم مودی 4 اضلاع اور 56 اسمبلی حلقوں میں 4 ریلیوں سے خطاب کرنے والے تھے۔انھوں نے کہا کہ وہ اب جمعہ کی شام 5 بجے مالدہ(Malda)، مرشد آباد(Murshidabad)، بیر بھم (Birbhum)اور کولکتہ (Kolkata) کے عوام سے ورچوئیل طور پر خطاب کریں گے۔اس کے بعد وزیراعظم کے مزید سیاسی پروگرام مغربی بنگال میں طے نہیں کیے گئے، اس طرح ریاست میں ان کی انتخابی مہم کو موثر انداز میں ختم کیا گیا۔


بی جے پی کی جانب سے کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسوں کے پیش نظر تمام بڑی سیاسی میٹنگیں اور ریلیاں نکالنے اور ریاست میں زیادہ سے زیادہ 500 افراد تک اپنی مہم محدود رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسوں کے وقت اپوزیشن لیڈر اپنے قائدین کی بڑی ریلیوں کے لئے بی جے پی کو تنقید کا نشانہ بنارہے ہیں۔

اس سے قبل ہی وزیر اعظم نے ملک بھر میں آکسیجن سپلائی کا جائزہ لینے کے لئے ایک اعلی سطحی اجلاس کی صدارت کی، جہاں انہوں نے اعلی عہدیداروں سے کہا کہ وہ اس کی پیداوار کو بڑھانے۔ تقسیم کی رفتار کو بڑھانے اور آکسیجن معاونت فراہم کرنے کے جدید طریقوں کے استعمال پر تیزی سے کام کریں۔

وزیر اعظم نے یہ بھی کہا کہ ریاستوں کو آکسیجن کی کسی بھی ذخیرہ اندوزی کے خلاف کارروائی کرنی چاہئے اور عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ یہ یقینی بنائے کہ مختلف ریاستوں کو آکسیجن کی فراہمی غیرجانبدارانہ انداز میں ہو اور رکاوٹ کی صورت میں مقامی انتظامیہ کے ساتھ ذمہ داری طے کرنے پر زور دیا جائے۔

اس میٹنگ میں متعدد ریاستوں کے مطالبات کے درمیان آکسیجن کی دستیابی کو بڑھانے کے طریقوں اور ذرائع پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ مودی کو بتایا گیا کہ ریاستوں کو زندگی بچانے والی گیس کی فراہمی میں مسلسل اضافہ ہوتا جارہا ہے۔وزارت میں جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق 24 گھنٹوں کے عرصہ میں ہندوستان میں کورونا وائرس کے کیسوں کی تعداد روزانہ بڑھتی جارہی ہے، جب کہ 24 گھنٹوں کے عرصے میں 3.14 لاکھ سے زیادہ نئے انفیکشن کی اطلاع ملی ہے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 23, 2021 09:54 AM IST