ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

ایکسکلوزیو: مدھیہ پردیش میں پولیو کی طرز پر کورونا کے خاتمہ کے لئے چلائی جائے گی مہم

صوبہ میں کورونا مریضوں کی بڑھتی تعداد کو دیکھتے ہوئے مدھیہ پردیش حکومت نے پولیو کی طرز پر تحریک چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔

  • Share this:
ایکسکلوزیو: مدھیہ پردیش میں پولیو کی طرز پر کورونا کے خاتمہ کے لئے چلائی جائے گی مہم
ایکسکلوزیو: مدھیہ پردیش میں پولیو کی طرز پر کورونا کے خاتمہ کے لئے چلائی جائے گی مہم

بھوپال۔ مدھیہ پردیش میں کورونا کے مریضوں میں اضافہ کا سلسلہ جاری ہے۔ صوبہ کے سبھی باون اضلاع میں کورونا وائرس جہاں دستک دے چکاہے وہیں اندور،بھوپال اور اجین میں کورونا کے معاملے میں حالات اب بھی تشویشناک بنے ہوئے ہیں۔ مدھیہ پردیش میں کورونا کے معاملے میں اندور ،بھوپال اور اجین میں سب سے زیادہ حالات تشویشناک ہیں۔ اجین میں کورونا مریضوں کی تعداد چار ہزار چار سو ستائیس ہوچکی ہے۔ کورونا سے ابتک دوسو تین لوگوں کی موت ہوچکی ہے وہیں کورونا بیماری سے تین ہزار دو سوپینتس مریض صحتیاب ہوکر اسپتال سے اپنے گھر بھی جا چکے ہیں ۔وہیں راجدھانی بھوپال کی بات کریں تو کورونا مریضوں کی تعداد دوہزار پانچ سو ستائیس ہوچکی ہے جبکہ کورونا سے راجدھانی میں ابتک پچاسی لوگوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ ایک ہزار سات سو نواسی مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔


اندور، بھوپال کے بعد کورونا کے سب سے زیادہ مریض اجین میں ہیں۔ اجین میں کورونا مریضوں کی تعداد آٹھ سو چوالیس ہوچکی ہے۔جبکہ کورونا سے انہتر لوگوں کی موت ہوچکی ہے  اور چھ سو ستاسی مریض صحتیاب ہوچکے ہیں ۔ مدھیہ پردیش میں کورونا مریضوں کی مجموعی تعداد بڑھ کر بارہ ہزار ایک سو ساٹھ ہو چکی ہے۔ صوبہ میں کورونا سے ابتک پانچ سو اکیس لوگوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ کورونا کی وبائی بیماری سے نو ہزار دو سو پندرہ لوگ صحتیاب ہوچکے ہیں۔ صوبہ میں کورونا مریضوں کی بڑھتی تعداد کو دیکھتے ہوئے مدھیہ پردیش حکومت نے پولیو کی طرز پر تحریک چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔


مدھیہ پردیش میں کورونا کے مریضوں میں اضافہ کا سلسلہ جاری


مدھیہ پردیش کے وزیر صحت ڈاکٹر نروتم مشرا کہتے ہیں کہ کورونا کنٹرول کرنے کے معاملے میں ہم تیزی سے آگے بڑھ رہے ہیں۔ کورونا کو کنٹرول کرنے کا ہمارا گروتھ ریٹ تیزی سے بڑھ رہا ہے۔ آج وزیر اعلی شیوراج سنگھ نے غورکیا ہے کہ وہ اضلاع جہاں پر کورونا کے معاملے زیادہ ہیں جیسے اندور،بھوپال اور اجین جہاں پر کبھی تیس ،کبھی چالیس ،کبھی دس مریض سامنے آجاتے ہیں ایسے مقامات پر کورونا کے خاتمہ کے لئے خاص مہم اسی انداز میں چلائی جائے جیسے پولیو کے خاتمہ کے لئے چلائی گئی تھی۔ اس کا آغاز بھوپال سے کیا جائے گا ۔مہم عوام کے تعاون سے چلائی جائے گی اور ڈور ٹو ڈور سروے کرکے مدھیہ پردیش سے کورونا کا خاتمہ کیا جائے گا۔

وہیں کانگریس کا کہنا ہے کہ یہ باتیں تو بہت کرتے ہیں لیکن اپنی باتوں پر عمل کب کرتے ہیں۔ مدھیہ پردیش کانگریس کے سینئر لیڈر وسابق وزیر پی سی شرما کا کہنا ہے کہ سرکار کا پورا فوکس الیکشن پر ہے کورونا کے خاتمہ پر نہیں ہے۔ ہم شروع سے کہہ رہے ہیں کہ کورونا کو ختم کرنے کے لئے ٹیسٹنگ کو بڑھایا جائے لیکن ٹیسٹنگ بڑھانا تو دور جو ٹیسٹ کئے جا رہے ہیں وہ فیل ہو رہے ہیں۔ بھوپال میں چودہ سو اور اندور میں پانچ سے زیادہ کورونا کے ٹیسٹ فیل ہوچکے ہیں ۔ ٹیسٹ فیل ہونا خود ثابت کرتا ہے کہ سرکار اور اس کا عملہ کام کو لیکر کتنا سنجیدہ ہے۔ دو دن پہلے بھی انہوں نے بھوپال میں پانچ سو ٹیموں کے ساتھ ہیلتھ سروے کرنے کا اعلان کیا تھا اور جب بستیوں میں محکمہ صحت کی ٹیم پہنچی تو وہاں پر ان کا ایپ ہی نہیں چل رہا تھا۔ اب سرکار سے اپیل ہے کہ وہ اقتدار کے نشے سے باہر نکلے اور عوام کی صحت کی فکر کرتے ہوئے ٹیسٹنگ کو بڑھائے ،مریضوں کو اچھی سہولیات دے تو خود بخود کورونا ختم ہو جائے گا۔اگر ایسا نہیں کیا گیا تو بارش میں کورونا کے معاملے اور بڑھ جائیں گے اور پھر یہ کنٹرول سے باہر ہو سکتا ہے۔

واضح رہے کہ مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال اور اس سے متصل  اضلاع ہوشنگ آباد اور دوسرے اضلاع جبلپور، ستنا، ریوا ،امریا، سیدھی میں ریکارڈ بارش درج کی گئی ہے۔ زیادہ بارش ہونے کے سبب نچلی بستیوں میں جہاں پانی داخل ہوگیا ہے وہیں محکمہ صحت کی ٹیم کے وہاں پہنچنے میں بھی مشکلات کا سامنا ہے۔ محکمہ موسمیات نے صوبہ کے اکیس اضَلاع میں تیز بارش کا امکان ظاہر کیا ہے۔
First published: Jun 23, 2020 12:00 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading