உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پنجاب میں یکم دسمبر سے نائٹ کرفیو کا اعلان ، کورونا ضوابط کی خلاف ورزی پر لگے گا 1000 روپے کا جرمانہ

    پنجاب میں یکم دسمبر سے نائٹ کرفیو کا اعلان ، کورونا ضوابط کی خلاف ورزی پر لگے گا 1000 روپے کا جرمانہ

    پنجاب میں یکم دسمبر سے نائٹ کرفیو کا اعلان ، کورونا ضوابط کی خلاف ورزی پر لگے گا 1000 روپے کا جرمانہ

    وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ (Captain Amarinder Singh) نے کہا کہ کورونا وائرس سے لڑنے کیلئے پنجاب میں یکم دسمبر سے کرفیو لگایا جائے گا ۔

    • Share this:
      دہلی این سی آر میں سنگین حالات اور پنجاب میں کورونا کی دوسری لہر کے خطرے کے پیش نظر وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے بدھ کو ریاست میں کئی نئی پابندیاں لگانے کی ہدایت دی ۔ ان پابندیوں میں یکم دسمبر سے سبھی قصبوں اور شہروں میں رات کا کرفیو لگانا بھی شامل ہے ۔ ساتھ ہی ماسک نہ پہننے یا سماجی فاصلہ کے ضابطہ پر عمل نہیں کرنے کیلئے جرمانہ کی رقم دوگنی کردی گئی ہے ۔

      حکم میں کہا گیا ہے کہ سبھی ہوٹل ، ریستوراں اور میرج پیلیس کے کھلنے کا وقت بھی ساڑھے نو بجے تک ہوگا ۔ کرفیو رات دس بجے سے صبح پانچ بجے تک رہے گا ۔ وزیر اعلی نے لوگوں کو کسی بھی حالت میں ان ضوابط کی خلاف ورزی نہیں کرنے کیلئے متنبہ کیا ۔ ترجمان نے کہا کہ کورونا کے ضوابط پر عمل نہ کرنے پر جرمانہ فی الحال پانچ سو روپے سے بڑھا کر ایک ہزار روپے کیا جارہا ہے ۔



      پنجاب میں علاج کیلئے دہلی سے مریضوں کی آمد کے پیش نظر ریاست کے پرائیویٹ اسپتالوں میں بیڈ کی دستیابی کا جائزہ لینے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے ۔ وزیر اعلی نے چیف سکریٹری کو متعلقہ محکموں کے ساتھ مل کر کام کرنے کیلئے کہا ہے ۔

      ساتھ ہی آکسیجن اور آئی سی یو بیڈ کی دستیابی کو مزید مضبوط کرنے کیلئے کیپٹن امریندر نے ان اضلاع کی مسلسل نگرانی کرکے ایل سکینڈ اور ایل تھرڈ کو مضبوط کرنے کی ہدایت دی ، جو سہولیات سے لیس نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ماہرین کے گروپ سے موصول ہوئی رپورٹ کی سفارشات کے پیش نظر جی ایم سی ایچ اور سول اسپتالوں میں مینجمنٹ سسٹم کی بھی جانچ کی جانی چاہئے ۔

      وزیر اعلی نے ہیلتھ اینڈ میڈیکل ایجوکیشن محکمہ کے ماہرین ، سپر اسپیشلیٹی ، نرس اور پیرامیڈکس کی ایمرجنسی تقرریاں کرنے کی بھی ہدایت دی ہے ۔ محکموں کو مستقبل میں ضرورت پڑنے پر چوتھے اور پانچویں سال کے ایم بی بی ایس طلبہ کو بیک اپ کے طور پر تیار کرنے پر غور کرنے کیلئے بھی کہا گیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: