ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ: کورونا مثبت مریضوں کی اموات کی بڑھتی تعداد سے ضلع انتظامیہ اور محکمہ صحت پریشان

میرٹھ میں ایک دن میں پانچ کورونا پوزیٹو مریضوں کی موت سے ضلع انتظامیہ، محکمہ صحت اور میڈیکل کالج انتظامیہ کی بےچینی بڑھ گئی ہے۔ میرٹھ میں کورونا پوزیٹو مریضوں کی اموات کی تعداد میں اضافے کو ضلع انتظامیہ نے سنجیدگی سے لیتے ہوئے محکمہ صحت کو سخت ہدایات جاری کی ہے اور اس کی وجوہات کا جائزہ لینے کے بعد کارروائی کا حکم دیا ہے۔

  • Share this:
میرٹھ: کورونا مثبت مریضوں کی اموات کی بڑھتی تعداد سے ضلع انتظامیہ اور محکمہ صحت پریشان
میرٹھ: کورونا مریضوں کی اموات کی بڑھتی تعداد سے ضلع انتظامیہ اور محکمہ صحت پریشان

میرٹھ میں ایک دن میں پانچ کورونا پوزیٹو مریضوں کی موت سے ضلع انتظامیہ، محکمہ صحت اور میڈیکل کالج انتظامیہ کی بےچینی بڑھ گئی ہے۔ میرٹھ میں کورونا پوزیٹو مریضوں کی اموات کی تعداد میں اضافے کو ضلع انتظامیہ نے سنجیدگی سے لیتے ہوئے محکمہ صحت کو سخت ہدایات جاری کی ہے اور اس کی وجوہات کا جائزہ لینے کے بعد کارروائی کا حکم دیا ہے۔


اس معاملے میں شروعاتی جانکاری کے مطابق مریض کے کووڈ-19 ٹیسٹ کرانے  اور سنگین مریض کو وقت رہتے ریفر کرنے  میں پرائیویٹ نرسنگ ہوم اور ڈاکٹروں کی لاپرواہی سامنے آئی ہے جس کی وجہ سے اموات کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔

کچھ روز قبل ہی میرٹھ کے چیف میڈیکل افسر کا عہدہ سنبھالنے والے ڈاکٹر اکھلیش موہن کے سامنے یہ بڑا چیلنج تھا کہ کورونا پوزیٹو مریضوں کی اموات کے سلسلے کو کیسے روکا جائے۔


چیف میڈیکل افسر کے مطابق محکمہ صحت کی شروعاتی جانکاری کے مطابق کورونا پوزیٹو مریضوں کی موت کے معاملے میں نجی نرسنگ ہوم اور ڈاکٹروں کی لاپرواہی سامنے آ رہی ہے۔ جانکاری کے مطابق ایک تو مریض کو پہلے مرحلے میں ہی کُووڈ ٹیسٹ کرنے میں برتی گئی لاپرواہی اور مریض کو وقت رہتے میڈیکل ریفر کرنے میں ہونے والی تاخیر اس معاملے کی سب سے بڑی وجہ ثابت ہو رہی ہے۔

چیف میڈیکل افسر ڈاکٹر اکھلیش موہن کے مطابق سرکار اور ضلع انتظامیہ کی سطح پر بھی اموات کے معاملے کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے سخت کارروائی کی ہدایت جاری کی گئی ہے اور محکمہ صحت کی جانب سے جانچ کے بعد کارروائی کی یقین دہانی کرائی جا رہی ہے۔ چیف میڈیکل افسر کا یہ بھی کہنا ہے کہ لوگ بھی اس طرح کے حساس معاملوں کو سنجیدگی سے نہیں لیتے ہوئے لاپرواہی برت رہے ہیں جس کی وجہ سے کیس بگڑنے کے معاملے بھی سامنے آ رہے ہیں۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Dec 04, 2020 08:58 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading