ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

زندہ شخص کو ڈیتھ سرٹیفکیٹ لینے کے حوالے سے میونسپل کارپوریشن سے آئی کال، جانیں کیا ہے معاملہ

جب شہر کے رہائشی چندرشیکر جوشی (Chandrashekar Joshi) ٹی ایم سی آفس گئے تو انھیں مبینہ طور پر ایک عہدیدار نے بتایا کہ انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ (Indian Council of Medical Research) سے موصولہ اعداد و شمار کے مطابق وہ 22 اپریل 2021 کو ہی مر گئے۔

  • Share this:
زندہ شخص کو ڈیتھ سرٹیفکیٹ لینے کے حوالے سے میونسپل کارپوریشن سے آئی کال، جانیں کیا ہے معاملہ
جب شہر کے رہائشی چندرشیکر جوشی (Chandrashekar Joshi) ٹی ایم سی آفس گئے تو انھیں مبینہ طور پر ایک عہدیدار نے بتایا کہ انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ (Indian Council of Medical Research) سے موصولہ اعداد و شمار کے مطابق وہ 22 اپریل 2021 کو ہی مر گئے۔

تھانہ: 55 سالہ اسکول ٹیچر کو اس وقت شدید صدمہ پہنچا جب انھیں رواں ہفتے تھانہ میونسپل کارپوریشن (Thane Municipal Corporation) کا فون آیا کہ اس کا ڈیتھ سرٹیفکیٹ تیار ہے اور وہ اسے لے جائے۔ جب شہر کے رہائشی چندرشیکر جوشی (Chandrashekar Joshi) ٹی ایم سی آفس گئے تو انھیں مبینہ طور پر ایک عہدیدار نے بتایا کہ انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ (Indian Council of Medical Research) سے موصولہ اعداد و شمار کے مطابق وہ 22 اپریل 2021 کو ہی مر گئے۔ جس کے بعد سے ہی ان کا شمار مردوں میں ہورہا ہے۔ جب کہ اس خبر کے بعد مذکورہ شخص چکرا گئے۔


ڈیتھ سرٹیفکیٹ میں یہ بتایا گیا ہے کہ وہ دس ماہ قبل کووڈ مریض تھے۔ جس کی وجہ سے ان کی موت واقع ہوئی! حیرت زدہ جوشی نے جمعرات کو نامہ نگاروں کو بتایا کہ اکتوبر 2020 میں انہیں واقعی وائرل انفیکشن مثبت ہوا تھا، لیکن وہ خود کو الگ تھلگ کرکے صحتیاب ہوگئے۔


شہری عہدیدار متعدد کالوں کے باوجود اس مذاق پر تبصرہ کرنے کے لئے دستیاب نہیں تھے اور انھوں نے کوئی رد عمل کا اظہار نہیں کیا ہے۔

Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Jul 02, 2021 01:04 PM IST