ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

کشمیر:ماں کی ممتانے کوروناکودی شکست،2کمسن بچیوں کوگلدستے دےکر،تالیوں کی کونج میں،اسپتال سے کیاگیاوداع

اسپتال میں جذباتی مناظر دیکھنے کو ملے۔اسپتال کے اسٹاف نے ان دو بچیوں کو گلدستے دے کر رخصت کیا۔ ان بچیوں کی صحت یابی کے پیچھے جہاں ڈاکٹروں کا رول رہا

  • Share this:
کشمیر:ماں کی ممتانے کوروناکودی شکست،2کمسن بچیوں کوگلدستے دےکر،تالیوں کی کونج میں،اسپتال سے کیاگیاوداع
اسپتال میں جذباتی مناظر دیکھنے کو ملے۔اسپتال کے اسٹاف نے ان دو بچیوں کو گلدستے دے کر رخصت کیا۔ ان بچیوں کی صحت یابی کے پیچھے جہاں ڈاکٹروں کا رول رہا

سری نگر کے جواہر لال نہرو میموریل اسپتال میں پیر کے روزالگ گہما گہمی تھی۔ کوویڈ۔19 کے رنج اور تھکان بھرےماحول کے بیچ یہاں خوشی اور شادمانی کا ماحول تھا۔ تالیوں کی کونج میں دو کمسن بچیاں اپنی امی کے ساتھ اسپتال سے رخصت کی جارہی تھیں ۔ 25 مارچ کو سرینگر کے نٹی پورہ علاقہ کی یہ دوبچیاں کوروناپازیٹیو قراردی گئی تھی۔ان کو یہ وائرس انکےدادا سے ترسیل ہوا۔جو24مارچ کویڈمارچ کو کورونا پازیٹیو پائے گئےتھے۔اسپتال کے کوویڈ وارڈ میں 18دن ایک خوفناک وائرس کے ساتھ گذارنا شاید ہی ان بچیوں کے لیے ممکن ہوپاتااگر ان کی ماں اپنی جان کی پرواہ کیے بغیر انکے ساتھ رہنے کا فیصلہ نہ کرتی ۔



مجھے سوچنے کی ضرورت ہی نہیں پڑی ۔ ایک ماں بچوں کے لئےموت سے لڑسکتی ہے۔اس ماں کے آنکھوں سے آنسو رواں تھے۔ لیکن یہ خوشی کے آنسو تھے۔ اسپتال میں پہلے کچھ دن تو کوئی انتظام نہیں تھا۔ ملازمین نزدیک آنے سے کتراتے تھے،کھانے اور پینے کی نام پر جو ملتاتھا ۔وہ کھانے کے قابل ہی نہیں تھا۔ لیکن آج کی خوشی کے سامنے وہ تمام مشکلیں کچھ نہیں ۔اسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر آرٹی کسانا بھی اس ماں کی قربانی اورہمت کی داد دیتے ہیں۔

ہم نے ان کو حفاظتی سامان فراہم کیاتھا لیکن ایسا صرف ماں ہی کرسکتی ہے۔ اس ماں کو مبارک اور سلام ، ان دو بچیوں کو اسپتال سے چھٹی مل گئی لیکن کشمیر میں تقریباً 1درجن کووڈمریض بچے ابھی اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں ۔ معالجین کہناہے کہ یہ تمام بچے اچھی حالت میں ہیں۔ جموں وکشمیر میں کل 270 افراد کووڈ۔19 پازیٹیو پائے گئے تھے۔ جن میں سے 16 صحت یاب ہوئے اور چار مریض فوت ہوئے ہیں
First published: Apr 14, 2020 12:47 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading