ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کوووڈ-19کا قہر: Zee Media کے 28 ملازمین نکلےکوروناپازیٹو ، آفس، اسٹوڈیو ہواسیل

زی نیوز کی جانب سے بتایا گیا کہ سب سے پہلے جمعہ کو ایک ملازم کا کوروناوائرس ٹیسٹ (coronavirus test) پازیٹو نکلا۔ جس کے بعد وہاں کام کرنے والے سبھی لوگوں کی ٹیسٹنگ شرور کی گئی۔ دیکھا گیا کہ کون۔کون لوگ کوروناپازیٹو (Coronavirus Positive) شخص کے رابطے میں آئے ہیں۔ اس ٹیسٹنگ کے بعد کل 28 لوگ کوروناپازیٹو پائے گئے۔

  • Share this:
کوووڈ-19کا قہر: Zee Media کے 28 ملازمین نکلےکوروناپازیٹو ، آفس، اسٹوڈیو ہواسیل
علامتی تصویر

نئی دہلی۔ ملک میں گزشتہ دو دن میں کورونا وائرس (كووڈ -19) کے 10 ہزار سے زائد کیسز سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد ایک لاکھ سے زائد ہو گئی ہے جن میں سے ایک تہائی سے زیادہ کیسز اکیلے مہاراشٹر کے ہیں۔ ہندوستان ایک لاکھ کا ہندسہ پار کرنے والا دنیا کا 11 واں ملک ہو گیا ہے۔ وزارت صحت کی جانب سے منگل کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں 4،970 نئے کیسز سامنے آئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد 101139 تک پہنچ گئی ہے۔خیال رہے ملک میں ایک دن پہلے ہی 5،242 کیسز سامنے آئے تھے۔

کوروناوائرس کا قہر اب میڈیا میں بھی پہچ چکا ہے۔ بتادیں کہ میڈیا کمپنی زی میڈیا (ZEE MEDIA) کا نوئیڈا میں واقع دفتر کووڈ-19 (Covid-19 pandemic) کی زد میں آچکا ہے۔ یہاں کوروناوائرس کے کئی معاملے سامنے آئے ہیں۔ جس کے بعد پوری عمارت کو خالی کرالیا گیا ہے۔ کمپنی کی جانب سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ سبھی ضروری احتیاط برتی جارہی ہیں۔ فی الحال پورا سیٹ اپ کمپنی کی دوسری عمارت میں شفٹ کردیا گیا ہے۔ زی نیوز کی جانب سے بتایا گیا کہ سب سے پہلے جمعہ کو ایک ملازم کا کوروناوائرس ٹیسٹ (coronavirus test) پازیٹو نکلا۔ جس کے بعد وہاں کام کرنے والے سبھی لوگوں کی ٹیسٹنگ شروع کی گئی۔ دیکھا گیا کہ کون۔کون لوگ کوروناپازیٹو (Coronavirus Positive) شخص کے رابطے میں آئے ہیں۔ اس ٹیسٹنگ کے بعد کل 28 لوگ کوروناپازیٹو پائے گئے۔

ان میں سے زیادہ تر لوگوں میں کوئی علامات نہیں پائی گئی تھیں۔ اس کے علاوہ کسی کو کوئی بھی صحت سے متعلق کوئی بھی پرشیانی نہیں تھی۔ کمپنی کا کہنا ہے کہ وقت رہتے ٹیسٹنگ کرنے سے ایسا ہوا ہے۔ اب ہیلتھ آفیسر کی دیکھ،ریکھ اور ان کی رائے مشورہ لیتے ہوئے قدم اٹھائے جارہے ہیں۔

زی نیوز (ZEE NEWS) کا اسٹوڈیو سیل۔۔

اتنی تعداد میں کوروناپازیٹو ملازمین کے ملنے کے بعد زی نیوز (ZEE NEWS) نے اپنا اسٹوڈیو اور پورا نیوز روم سیل کردیا ہے۔ فی الحال پورے آف کو سینیٹائز کیا جارہا ہے۔ جب تک آفس پوری طرح سے سینیٹائز نہیں ہوجاتا ہے تب تک باقی کے ملازمین دوسرے آفس سے کام کریں گے۔

کمنی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ ٹسٹنگ مسلسل جاری ہے۔ باقی کے سبھی ملازمین کا بھی ٹیسٹ کیا جارہا ہے۔ زی میڈیا کارپوریشن لمیٹیڈ میں 2500 ملازمین کام کرتے ہیں۔ کمہنی نے کہا یہ چیلنج سے بھرا وقت ہے اور اپنے ملازمین کی جلد ہی صحت یاب ہونے کی دعا اور امید ظاہر کی ہے۔
واضح رہے کہ ملک میں اس وبا سے گزشتہ 24 گھنٹوں میں 134افراد کی موت ہونے سے ہلاکتوں کی تعداد 3163 ہو گئی۔اس درمیان ایک مثبت پہلو یہ بھی ہے کہ اس بیماری سے شفایاب ہونے والوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہو رہا ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں 2350 افراد صحت مند ہوئے ہیں اور اس کے ساتھ ہی صحت مند ہوئے والوں کی کل تعداد 39174 ہو گئی ہے۔ ملک میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر مہاراشٹر ہوا ہے اور یہاں کے حالات مسلسل بگڑ ر ہے ہیں۔ مہاراشٹر میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 2005 نئے کیسز سامنے آئے ہیں، جس کے بعد یہاں متاثرین کی مجموعی تعداد 35،058 ہو گئی ہے اور ہلاک شدگان کی تعداد 1249 تک جاپہنچی ہے جبکہ 8437 افراد اس وبا سے ٹھیک بھی ہوئے ہیں۔
کورونا وائرس سے متاثر ہونے کے معاملے میں ریاست گجرات دوسرے نمبر پر ہے۔ گجرات میں اب تک 11745 افراد اس وباسے متاثر ہوئے ہیں اور 694 ہلاکتیں ہوئی ہیں جبکہ 4804 لوگوں کے علاج کے بعد مختلف اسپتالوں سے چھٹی مل چکی ہے۔ کورونا وائرس وبا کے کیسز میں پانچ عدد(فائیو فیگر) کی فہرست میں تمل ناڈو تیسرے نمبر پر ہے۔ یہاں متاثرین کی مجموعی تعداد 11،760 ہو گئی ہے اور اس کے انفیکشن سے 81 لوگوں کی موت ہو چکی ہے۔ اس کے علاوہ 4406 لوگ اس بیماری سے شفایایب بھی ہوئے ہیں۔ قومی دارالحکومت دہلی کی بھی پوزیشن اس جان لیوا وائرس کی وجہ سے تشویشناک بنی ہوئی ہے اور یہاں بھی متاثرین کی تعداد پانچ عدد کے پار پہنچ گئی ہے۔ دہلی میں اگرچہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں کوروناوائرس کے نئے کیس سامنے نہیں آئے ہیں تاہم آٹھ متاثرین کی موت ہوئی ہے۔ یہاں اب تک 10،054 لوگ متاثر ہوئے ہیں اور مرنے والوں کی تعداد 168 تک پہنچ گئی ہے جبکہ 4485 لوگوں کو علاج کے بعد اسپتالوں سے چھٹی دے دی گئی ہے۔


راجستھان میں بھی کورونا وائرس تیزی سے پھیلتا جارہا ہے. یہاں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 5507 اور 138 افراد کی موت ہو چکی ہے، جبکہ 3218 لوگ مکمل طور ٹھیک ہوئے ہیں۔ ملک کی سب سے بڑے ریاست اتر پردیش میں اب تک 4605 لوگ اس کی زد میں آئے ہیں اور اس کی زد میں آکر ہلاک ہونے والوں کی تعداد 118 ہو گئی ہے اور 2783 لوگ اب تک اس سے ٹھیک ہوئے ہیں۔ مغربی بنگال میں 2825 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں اور 244 افراد کی موت ہو چکی ہے اور اب تک 1006 لوگ ٹھیک ہوئے ہیں۔ تلنگانہ میں اب تک کورونا وائرس سے 1597 لوگ متاثر ہوئے ہیں۔ ریاست میں جہاں کورونا وائرس سے 36 افراد کی جان گئی ہے، وہیں 1000 لوگ اب تک ٹھیک بھی ہوئے ہیں۔
جنوبی ہندوستان کی ریاست آندھرا پردیش میں 2474 اور کرناٹک میں 1246 لوگ متاثر ہیں اور ان ریاستوں میں اس سے مرنے والوں کی تعداد بالترتیب 50 اور 37 ہو گئی ہے۔ وہیں مرکزکے زیر انتظام خطے جموں و کشمیر میں متاثرین کی تعداد بڑھ کر 1289 ہو گئی ہے اور 15 ہلاکتیں ہوئی ہیں۔ پنجاب میں 37، ہریانہ میں 14، بہار میں نو، کیرالہ اور اڑیسہ میں چار چار، جھارکھنڈ، چنڈی گڑھ، اور ہماچل پردیش میں تین تین، آسام میں دو اور میگھالیہ، پڈو چیری اور اتراکھنڈ میں ایک ایک شخص کی اس وبا سے موت ہوئی ہے۔
First published: May 19, 2020 11:43 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading