آئی پی ایل میں 6 سال بعد ہوا یہ "حادثہ" ، دہلی کا یہ چمپئن کھلاڑی بنا شکار ، پھر بھی جیت گئی ٹیم

آئی پی ایل 12 کے ایلیمنیٹر مقابلے میں دہلی کیپٹلس نے سن رائزرس حیدرآباد کو دو وکٹ سے ہرا کر کوالیفائر 2 میں جگہ بنالی ہے ۔

May 09, 2019 04:59 PM IST | Updated on: May 09, 2019 04:59 PM IST
آئی پی ایل میں 6 سال بعد ہوا یہ

(photo-ipl)

آئی پی ایل 12 کے ایلیمنیٹر مقابلے میں دہلی کیپٹلس نے سن رائزرس حیدرآباد کو دو وکٹ سے ہرا کر کوالیفائر 2 میں جگہ بنالی ہے ۔ اس میچ میں دہلی کے کپتان سریش ائیر نے ٹاس جیت کر پہلے حیدرآباد کو بلے بازی کرنے کیلئے کہا ۔ حیدرآباد کی ٹیم 162 رن ہی بناسکی جبکہ دہلی نے 163 رن بناکر اس میچ کو جیت لیا ۔

تاہم اس میچ میں دہلی کی جیت کے علاوہ امت مشرا کافی سرخیوں میں رہے ۔ ریشبھ پنت کے آوٹ ہونے کے بعد امت مشرا میدان پر آئے ۔ اس وقت دہلی کو چھ گیندوں پر پانچ رن کی ضرورت تھی ، لیکن وہ دو گیندوں پر ایک رن بناکر آبسٹرکٹنگ دی فیلڈ کی وجہ سے آوٹ ہوگئے ۔ وہ اس طرح آوٹ ہونے والے اس سیزن کے پہلے کھلاڑی ہیں ۔

Loading...

آپ کو بتادیں کہ سن رائزرس حیدرآباد کے تیز گیند باز خلیل احمد نے اپنے چوتھے اوور اور اننگز کے 20 ویں اوور کی چوتھی گیند امت مشرا کو پھینکی ۔ مشرا اس لینتھ بال کو کھیل نہیں سکے اور وہ وکٹ کیپر ردھمان ساہا کے پاس چلی گئی ، ساتھ ہی ساتھ ان کا تھرو بھی اسٹمپس پر نہیں لگا ۔ اس کے بعد خلیل نے گیند کو پکڑ کر نان اسٹرائیکر اینڈ پر مارا ، لیکن امت مشرا کے درمیان میں آنے کی وجہ سے وہ نشانے پر نہیں لگا ۔

اس کے بعد حیدآباد کے کھلاڑیوں نے امپائر سے آبسٹرکٹنگ دی فیلڈ کی اپیل کی اور حیدرآباد کو وکٹ مل گیا ۔ حالانکہ اگلی گیند پر کیمو پال نے چوکا جڑ کر نہ صرف اپنی ٹیم کو جیت دلائی بلکہ حیدرآباد کی ٹیم کے جشن کو بھی غم میں بدل دیا ۔

Loading...