آئی پی ایل 2019 : سن رائزرس حیدرآباد نے درج کی اپنی سب سے بڑی جیت ، بنگلورو کو 118 رنوں سے روندا

سلامی بلے باز جانی بیرسٹو (114) اور ڈیوڈ وارنر (100) کی شاندار سنچریوں اور ان کے درمیان 185 رنز کی اوپننگ شراکت کے دم پر سن رائزرس حیدرآباد نے رائل چیلنجرز بنگلور کو آئی پی ایل -12 کے مقابلے میں اتوار کو 118 رن کی بڑے فرق سے ہرا دیا۔

Mar 31, 2019 10:27 PM IST | Updated on: Mar 31, 2019 10:27 PM IST
آئی پی ایل 2019 : سن رائزرس حیدرآباد نے درج کی اپنی سب سے بڑی جیت ، بنگلورو کو 118 رنوں سے روندا

فوٹو کریڈٹ : آئی پی ایل ٹی 20 ڈاٹ کام ۔

سلامی بلے باز جانی بیرسٹو (114) اور ڈیوڈ وارنر (100) کی شاندار سنچریوں اور ان کے درمیان 185 رنز کی اوپننگ شراکت کے دم پر سن رائزرس حیدرآباد نے رائل چیلنجرز بنگلور کو آئی پی ایل -12 کے مقابلے میں اتوار کو 118 رن کی بڑے فرق سے ہرا دیا۔حیدرآباد نے 20 اوور میں دو وکٹ پر 231 رن کا بڑا اسکور بنایا جس کے جواب میں ہندستانی کپتان وراٹ کوہلی کی ٹیم اپنے چھ وکٹ صرف 35 رن پر گنوانے کے بعد دم توڑ گئی اور 19.5 اوور میں 113 رن ہی بنا سکی۔ حیدرآباد کی تین میچوں میں یہ دوسری جیت رہی جبکہ بنگلور کو مسلسل تیسری شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

بیرسٹو نے 56 گیندوں پر 12 چوکوں اور سات چھکوں کی مدد سے 114 رن بنائے جبکہ وارنر نے شاندار فارم برقرار رکھتے ہوئے 55 گیندوں پر 100 رنز میں پانچ چوکے اور پانچ چھکے لگائے۔ دونوں کے درمیان 185 رنز کی اوپننگ شراکت 162 گیندوں میں بنی۔

حیدرآباد کے 231 رنز بنگلور کے خلاف آئی پی ایل میں کسی ٹیم کا دوسرا سب سے زیادہ اسکور ہے۔ کنگز الیون پنجاب نے 2011 میں بنگلور کے خلاف 232 رن بنائے تھے۔

ٹوینٹی -20 کرکٹ میں یہ چوتھا موقع ہے جب دو بلے بازوں نے ایک ہی میچ میں سنچری بنائی ہیں جبکہ آئی پی ایل میں اس طرح کے کارناموں کا یہ دوسرا موقع ہے۔ بنگلور کے کپتان وراٹ کوہلی اور اے بی ڈی ویلیئرز نے 2016 میں گجرات لائنس کے خلاف یہ کارنامہ کیا تھا۔

Loading...

وارنر کی آئی پی ایل میں یہ چوتھی سنچری ہے اور وہ آئی پی ایل میں سب سے زیادہ سنچری بنانے کے معاملے میں وراٹ اور شین واٹسن کی مشترکہ برابری پر آ گئے ہیں۔ آئی پی ایل میں سب سے زیادہ چھ سنچری بنانے کا ریکارڈ کرس گیل کے نام ہے۔ وارنر کے ابھی ٹورنامنٹ میں تین میچوں میں ہی 254 رنز ہو گئے ہیں۔

ہدف نے پہلے ہی بنگلور کی کمر توڑ ڈی تھی اور رہی سہی کسر ٹاپ آرڈر کی ناکامی نے پوری کر دی۔ پارتھیو پٹیل 11، شمرن هتمائر 9، کپتان وراٹ کوہلی 3، اے بی ڈی ویلیئرز 1، معین علی 2 اور شوم دوبے 5 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ کولن ڈی گرینڈهوم نے 32 گیندوں میں تین چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے 37، برمن نے 19 اور امیش یادو نے 14 رن بنا کربنگلور کو 100 کے پار پہنچایا اور ٹیم کو کسی حد تک بڑی شرمندگی سے بچا لیا۔

حیدرآباد کی جانب سے افغانستان کے 34 سالہ آف اسپنر محمد نبی نے چار اوور محض 11 رن دے کر چار وکٹ لئے۔ سندیپ شرما نے 19 رن دے کر تین وکٹ لئے۔ بنگلور کے تین بلے باز رن آؤٹ ہوئے۔بنگلور کو اس طرح آئی پی ایل میں اپنی دوسری سب بڑی شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ بنگلور کے 113 رن آئی پی ایل میں تیسرا موقع ہے جب پوری ٹیم کا اسکور مخالف ٹیم کے ایک بلے باز کے اسکور سے کم ہے۔ بیرسٹو کو ان کے 114 رن کے لئے پلیئر آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا۔

Loading...