دولت اور شہرت کی چمک میں بھٹک گیا تھا ٹیم انڈیا کا یہ اسٹار کھلاڑی ، پھر ایسے آئی عقل

اسٹار کرکٹر اور ہندوستانی ٹیم کے سلامی بلے باز روہت شرما کے بچپن کے کوچ دنیش لاڈ کا کہنا ہے کہ 2011 ورلڈ کپ میں جگہ نہ مل پانے کے بعد روہت کھیل کو لے کر زیادہ سنجیدہ ہوئے ہیں ۔

Jun 20, 2019 01:35 PM IST | Updated on: Jun 20, 2019 01:35 PM IST
دولت اور شہرت کی چمک میں بھٹک گیا تھا ٹیم انڈیا کا یہ اسٹار کھلاڑی ، پھر ایسے آئی عقل

ٹیم انڈیا ۔ فوٹو : بی سی سی آئی ۔

اسٹار کرکٹر اور ہندوستانی ٹیم کے سلامی بلے باز روہت شرما کے بچپن کے کوچ دنیش لاڈ کا کہنا ہے کہ 2011 ورلڈ کپ میں جگہ نہ مل پانے کے بعد روہت کھیل کو لے کر زیادہ سنجیدہ ہوئے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ اس کی بلے بازی میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے ، لیکن اب وہ زیادہ سمجھدار ہوگیا ہے ۔ لاڈ نے بتایا کہ 2009 سے 2011 کے دوران روہت شرما پیسوں اور شہرت میں بھٹک گیا تھا ، جس کی وجہ سے کرکٹ پر اس کی توجہ کم ہوگئی تھی ، لیکن اب اس نے خود کو بہتر بنالیا ہے ۔

خیال رہے کہ انگلینڈ اینڈ ویلس میں جاری آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ 2019 میں تین میچوں میں روہت شرما اب تک دو سنچریاں اور ایک نصف سنچری بناچکے ہیں ۔ جن دونوں میچوں میں روہت شرما نے سنچریاں بنائی ہیں ، اس میں ہندوستان کو بڑی جیت ملی ہے ۔

Loading...

لاڈ نے ممبئی میں پی ٹی آئی سے کہا کہ میں نے اس کو بچپن سے ہی ایسے ہی بلے بازی کرتے ہوئے دیکھا ہے ، اس میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے ۔ اس میں صرف یہ تبدیلی آئی ہے کہ تجربہ کے ساتھ اس میں زیادہ پختگی آگئی ہے ۔ روہت نے 2007 سے 2009 تک اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور زمبابوے کے خلاف دو سنچریاں بنائیں ۔ 2009 سے 2011 تک شہرت اور زیادہ پیسوں کی وجہ سے اس کی توجہ بھٹک گئی ، جس کی وجہ سے اس نے کھیل پر دھیان دینا کم کردیا اور اسی وجہ سے وہ 2011 ورلڈ کپ ٹیم میں بھی جگہ نہیں بنا سکا ۔

روہت شرما ۔ فوٹو : اے پی ۔ روہت شرما ۔ فوٹو : اے پی ۔

لاڈ نے کہا کہ روہت کیلئے یہ کافی چونکانے والا تھا ۔ میں نے اس کو اپنے گھر بلایا اور کہا کہ آپ ابھی جہاں ہیں ، وہ صرف کرکٹ کی وجہ سے ہیں ، لیکن اب آپ کی توجہ کرکٹ پر نہیں ہے ، اس لئے میں آپ سے پریکٹس کرنے کی درخواست کررہا ہوں ۔ میں نے روہت سے کہا کہ وراٹ کوہلی آپ کے بعد آئے اور انہوں نے ورلڈ کپ کی ٹیم میں جگہ بنالی ۔ فرق دیکھو ، اب آپ کو اپنے کھیل پر توجہ دینی ہوگی ۔

لاڈ نے کہا کہ اس کے بعد روہت نے اپنے کھیل پر سنجیدگی سے توجہ دینی شروع کردی ، جو کہ اس کے کیریئر کیلئے کافی اہم ثابت ہوا ۔

Loading...