پاکستان میں سری لنکا کی ٹیم پر پھر ہوسکتا ہے دہشت گردانہ حملہ ، دورہ پر لٹکی تلوار ! ۔

سری لنکا کرکٹ بورڈ نے انکشاف کیا ہے کہ اسے وارننگ ملی تھی کہ اس کی قومی ٹیم پر پاکستان دورے کے دوران دہشت گردانہ حملہ کئے جانے کا خدشہ ہے۔

Sep 12, 2019 08:55 PM IST | Updated on: Sep 12, 2019 08:55 PM IST
پاکستان میں سری لنکا کی ٹیم پر پھر ہوسکتا ہے دہشت گردانہ حملہ ، دورہ پر لٹکی تلوار ! ۔

پاکستان میں سری لنکا کی ٹیم پر پھر ہوسکتا ہے دہشت گردانہ حملہ ، دورہ پر لٹکی تلوار ! ۔

سری لنکا کرکٹ بورڈ نے انکشاف کیا ہے کہ اسے وارننگ ملی تھی کہ اس کی قومی ٹیم پر پاکستان دورے کے دوران دہشت گردانہ حملہ کئے جانے کا خدشہ ہے۔ سری لنکا کرکٹ (ایس ایل سی ) کا کہنا ہے کہ سری لنکا کے وزیر اعظم کے دفتر کو قابل اعتماد ذرائع سے یہ اطلاع ملی تھی کہ پاکستان میں چھ میچوں کی سیریز کے دوران مہمان ٹیم دہشت گردانہ حملے کا شکار ہو سکتی ہے۔ ایس ایل سی نے پاکستان میں محدود اوور سریز کا اعلان کیا ہے، لیکن ساتھ ہی کہا ہے کہ سری لنکا کی حکومت اور انتظامیہ اس دورے سے پہلے سیکورٹی حالات کا پاکستان میں ایک بار پھر جائزہ لے گی۔

قابل ذکر ہے کہ سری لنکا کے سینئر کھلاڑیوں نے سیکورٹی خدشات کی وجہ سے پاکستان میں کھیلنے سے انکار کر دیا تھا ، جن میں لست ملنگا ، دمتھ كرونارتنے ، انجیلو میتھیوز ، نروشن ڈكویلا ، کشل پریرا ، دھننجے سلوا ، تشارا پریرا ، اكيلا دھننجے ، سرنگا لکمل اور دنیش چنڈیمل شامل ہیں ۔ سری لنکا کرکٹ ( ایس ایل سی ) نے اس واقعہ کے بعد نئے اور نوجوان کھلاڑیوں کی ٹیمیں پاکستان بھیجنے کا فیصلہ کیا اور لاهرو ترمانے کو ون ڈے ٹیم اور داسن شناكا ٹوئنٹی -20 ٹیم کی قیادت سپرد کی ہے ۔ سری لنکا بورڈ نے پاکستان کے دورے پر ہونے والی ون ڈے اور ٹی 20 سیریز کے لئے بدھ کو ٹیموں کا اعلان کیا تھا۔

Loading...

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے اگرچہ کہا ہے کہ اسے سری لنکا کی ٹیم کی حفاظت سے متعلق ایسی کوئی جانکاری نہیں ملی ہے، اور بارہا یقین دہانی کی کہ وہ مہمان ٹیم کو مکمل تحفظ فراہم کرنے کے لیے پرعزم ہیں ۔ پی سی بی نے ٹویٹر پر کہا کہ ہم نے ایس ایل سی کے بیان کو دیکھا ہے کہ انہیں ٹیم کی حفاظت کو لے کر وارننگ ملی ہے ، لیکن ہمارے پاس ایسی کوئی جانکاری نہیں ہے ۔

غور طلب ہے کہ سری لنکا کی کرکٹ ٹیم کی بس پر سال 2009 میں قذافی اسٹیڈیم کے باہر دہشت گردانہ حملہ ہوا تھا ، جس میں اس کے کھلاڑیوں کو چوٹیں آئی تھیں جبکہ ان کی حفاظت میں تعینات چھ پاکستانی پولیس اہلکار مارے گئے تھے ۔ اس بعد سے ہی وہاں سری لنکا کی ٹیم سمیت دیگر کسی بڑی بین الاقوامی ٹیم نے دورہ نہیں کیا ہے ۔

Loading...